Categories
پاکستان

دیوالیہ پن کا خطرہ ٹل گیا!!!! وزیراعظم شہباز شریف نے مشکل وقت میں مدد کرنے پر دوست ملک کی تعریف کر دی

لاہور: (ویب ڈیسک) وزیراعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ ملک کو بحرانوں سے نکالنا اولین ترجیح ہے، دیوالیہ پن کا خطرہ ٹل گیا، مشکل وقت میں ڈیپازٹ پر چین کے شکرگزار ہیں ہیں۔ وزیر اعظم کی سینئر تجزیہ کار سلمان غنی کے گھر جوہر ٹاؤن آمد ہوئی، شہباز شریف نے سلمان غنی سے انکے بھائی کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا۔

مرحوم کے درجات کی بلندی، لواحقین کے لئے صبر جمیل کی دعا کی۔ اس موقع پر سینئر صحافی سجاد میر، مجیب الرحمٰن شامی اور دیگر بھی موجود تھے۔ وزیراعظم شہباز شریف نے نجی ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دن رات محنت کر کے ملک کو قائداعظم کا پاکستان بنائیں گے، ہم مشکل وقت سے نکل آئے ہیں، ہمیں چین کا ہمیشہ شکر گزار رہنا چاہیے، ڈیپازٹ جمع کرانے پر چین کے شکر گزار ہیں، دیوالیہ پن سے ہم نکل آئے ہیں،قوم پریشان نہ ہو۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ حکومت نے پاکستان کی معیشت کر برباد کر دیا ہے، پی ٹی آئی حکومت نے آئی ایم ایف معاہدے کی دھجیاں اڑائیں، بجلی کی لوڈشیڈنگ کو آج کل میں خود مانیٹر کر رہا ہوں، گیس کے بر وقت سودے نہ ہونے کہ وجہ سے لوڈشیڈنگ ہو رہی ہے، جب گیس سستی تھی 3 ڈالر تک آگئی تھی تو پی ٹی آئی حکومت نے مجرمانہ غفلت سے کام لیا، منصوبوں کی تاخیر سے ملکی زراعت، صنعت اور ایکسپورٹس کو نقصان پہنچا، نواز شریف دور کےمنصوبے جو زیر تکمیل تھے ان میں تاخیر کی گئی، منصوبوں کی تاخیر سے ملکی زراعت، صنعت اور ایکسپورٹس کو نقصان پہنچا۔ وزیراعظم شہباز شریف نے کوئٹہ جانے والی بس کے نالے میں گرنے سے 19 افراد کے جاں بحق ہونے پر کہا کہ گہرا دکھ اور رنج ہے، اللہ تعالی مرحومین کے درجات بلند کرے، میری تمام تر ہمدردیاں سوگواران کے ساتھ ہیں، زخمی افراد کو بہترین اور فوری طبی سہولیات کی فراہمی کے لیے ہدایات جاری کی ہیں۔

Categories
پاکستان

ن لیگ کو بڑے نقصان کا خطرہ!!! نواز شریف کس وجہ سے فکر مند ؟ نجم سیٹھی کی چڑیا اندر کی خبر لے آئی

اسلام آباد: (ویب ڈیسک) سینئر تجزیہ کار نجم سیٹھی نے کہا ہے کہ جہاں تک مجھے احساس ہے نواز شریف اس سے خوش نہیں ہیں جس طریقے کیساتھ حکومت تیزی سے غیر مقبول ہو رہی ہے، وہ فکرمند ہیں، اگر الیکشن کال ہو گئے تو مسلم لیگ (ن )کا بڑا نقصان ہوگا۔

ایک انٹر ویو میں انہوں نے کہا لندن اور اسلام آباد میں بیٹھے لوگوں میں اختلاف تھا، زرداری صاحب بھی کہہ رہے تھے کہ ہمیں اس حکومت کو آگے لے کر جانا چاہیے، مفتاح اسماعیل بھی کہہ رہے تھے کہ حالات مشکل ہوں گے، مگر ہم اس پر قابو پا لیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف اور اسحاق ڈار نے شہباز شریف اینڈ کمپنی کو سمجھایا تھا کہ ہم خطرناک موڑ پر آگئے ہیں، ہمیں حکومت زیادہ دیر کیلئے نہیں لینی چاہیے۔ مگر شہباز شریف کی خواہش تھی کہ وہ اب وزیراعظم نہ بنے تو پھر کبھی نہیں بن سکتے۔ دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کی منحرف رکن عظمیٰ کاردار نے پارٹی چیئرمین اور ان کی اہلیہ پر سنگین الزامات عائد کر دیئے۔نجی ٹی وی کے مطابق عظمیٰ کاردار کا کہناہے کہ علیم خان بشریٰ بی بی ، فرح خان کی کرپشن کی راہ میں رکاوٹ بنتے،علیم خان کو اس لئے وزیراعلیٰ نہیں بننے دیا گیا، منحرف رکن پی ٹی آئی کا مزید کہناتھا کہ عثمان بزدار کٹھ پتلی تھے، وزیراعلیٰ ہاﺅس کرپشن کا گڑھ تھا،ان کا کہناتھا کہ فرح گوگی، طاہر خورشید ، بشریٰ بی بی کی کرپشن کے وعدہ معاف گواہ بنیں گے۔ عظمیٰ کاردار کا کہناتھا کہ عمران خان نے وائٹ کالر کرائم کیا، منی لانڈرنگ سے پیسہ باہر بھجوایا،کرپشن کا70 فیصد عمران، بشریٰ بی بی،30 فیصد فرح گوگی کو جاتا رہا،ان کا کہناتھا کہ عمران خان ہنس ہنس کر بشریٰ بی بی کی فائلز پر دستخط کرتے رہے۔منحرف رکن پی ٹی آئی کا کہناتھا کہ عمران خان کا موبائل بھی بشریٰ بی بی کے پاس ہوتا ہے، بشریٰ بی بی فیصلہ کرتی عمران خان سے کس نے ملنا اور کس نے نہیں،جہانگیر ترین سے دوری کی وجہ بھی بشریٰ بی بی تھیں۔

Categories
پاکستان

کیا آپ کو پتا ہے کہ سنہ 1700 سے 1900 کے درمیان دنیا کی آبادی میں ایک چوتھائی اضافے کا سبب آلو تھا؟

لاہور: (ویب ڈیسک) آلو آج پوری دنیا میں سب سے مقبول سبزی ہے ، بہت سے لوگوں کیلئے تو آلو کے بغیر زندگی کا تصور ہی محال ہے، دنیا کا ہر ملک اور ہر قوم آلو کے محبوں میں شامل ہے، اگر آلو کی فصل نہ ہو تو دنیا کی بڑی آبادی کا ویسے ہی بھوک سے صفایا ہوجائے گا۔

لیکن آلو ہمیشہ سے اتنا مقبول نہیں تھا جتنا آج پسند کیا جاتا ہے بلکہ اس نے اپنی افادیت کے باعث آہستہ آہستہ شہرت پائی اور آج اس مقام تک پہنچ گیا کہ دنیا کی سب سے بڑی غذائی ضرورت بن گیا۔ آلو کا اصل وطن جنوبی امریکا کا خطہ انڈیز ہے جہاں اسے آٹھ ہزار برس سے بھی پہلے گھریلو استعمال میں لایا گیا تھا۔ آلو کو پہلی بار لیما سے جنوب مشرق میں ایک ہزار کلومیٹر کے فاصلے پر واقع انڈیز میں لیک ٹِیٹِیکاکا کے قریب گھریلو استعمال میں لایا گیا تھا۔ اس کے بعد یہ یہاں مقبول ہوتا چلا گیا اور مقامی لوگوں کی روز مرہ خوراک کا اہم جزو بن گیا۔ اس دور میں اسے خشک کرکے ایک خاص قسم کی غذا تیار کی جاتی تھی، جو کئی برس بلکہ دہائیوں تک محفوظ رہتی تھی۔آج کے آلو کے جدِ امجد کی 151 جنگلی اقسام اب بھی انڈیز میں پائی جاتی ہیں۔ سنہ 1253 میں اس خطے پر سپین نے یلغار کی اور مقامی حکومت کو ختم کردیا لیکن آلو کی کاشت کا سلسلہ جاری رہا۔ حملہ آور دیگر اجناس، مثلاً ٹماٹر، ناشپاتی اور مکئی کی طرح آلو کو بھی بحرِ اقیانوس کے پار لے آئے۔ مورخین اسے گریٹ کولمبین ایکسچینج یا عظیم کولمبیائی تبادلہ قرار دیتے ہیں۔ یہ پہلی بار تھا جب آلو نے برِ اعظم امریکا سے باہر سفر کیا تھا۔ آئرلینڈ میں آلو کو زیادہ سازگار موسم میسر آگیا، جہاں ٹھنڈے مگر کُہر سے خالی خزاں نے اسے پکنے کا موقع دیا۔یہاں آلو کی فصل 1580 کی دہائی میں سپین سے لائی گئی۔ آلو آئرلینڈ سے برطانیہ اور پھر شمالی یورپ پہنچا۔ سنہ 1650 میں یہ جرمنی، پروشیا، 1740 میں پولینڈ اور 1840 میں روس میں پایا جانے لگا۔ سنہ 1560 کے بعد یورپ میں شروع ہونے والی ہر عسکری مہم نے آلو کے زیرکاشت رقبے میں اضافہ کیا اور یہ سلسلہ جنگ عظیم دوئم تک جاری رہا۔ محققین کے مطابق سنہ 1700 سے 1900 کے درمیان دنیا اور شہروں کی آبادی میں ایک چوتھائی اضافے کا سبب آلو تھا۔

Categories
اسپیشل سٹوریز

دنیا کی مہنگی ترین لمبرگنی گاڑی ٹریکٹر کمپنی کے مالک کی بےعزتی کے وجہ سے وجود میں آئی!!! جانیے دلچسپ کہانی

لاہور: (ویب ڈیسک) ہر انسان کو آئے روز کسی نہ کسی طرح توہین، بے عزتی یا تذلیل کا سامنا کرنا پڑتا ہے، کچھ اپنی مجبوریوں کی وجہ سے خاموش ہوجاتے ہیں جب کہ کچھ طاقت نہ ہونے کی وجہ سے بدلہ نہیں لے پاتے لیکن طاقت ور لوگ نہ صرف بدلہ لیتے ہیں بلکہ بعض لوگوں نے تو ایسا بدلہ لیا ہے کہ تاریخ ہی رقم کردی ہے

آپ کو یہ جان کر حیرت ہوگی کہ آج دنیا میں سب سے لگژری ترین سمجھی جانے والی کار لیمبرگینی بھی اسی قسم کی توہین کے بدلے کا نتیجہ ہے۔ پاکستان میں مشہور ہے کہ بہاولپور کے نواب صادق عباسی کی رولز رائس کار کے شوروم پر توہین کی گئی تو انہوں نے بہاولپور میں رولز رائس کی گاڑیوں کو میونسپل کمیٹی کے حوالے کردیا اور انہیں کچرے والی گاڑی کے طور پر استعمال کرنا شروع کردیا، جس کے بعد کمپنی کو مجبور ہو کر ان سے معافی مانگنا پڑی۔ انڈیا میں یہی واقعہ الوار کے مہاراجہ جے سنگھ سے منسوب کیا جاتا ہے جب کہ کچھ لوگ اس واقعے کو پٹیالہ کے مہاراجہ بھوپندر سنگھ سے بھی منسوب کرتے ہیں، یہ واقعہ کیا ہے اور اس میں کتنی صداقت ہے اس بارے میں ہم کسی اور موقع پر بات کریں گے کیونکہ ہمارا آج کا موضوع لیمبر گینی کار سے متعلق ہے۔ لیمبرگینی دراصل اٹلی کی ایک ٹریکٹر کمپنی تھی جو کہ فوجی آلات سے ٹریکٹر بنا کر بیچتی تھی، اس کا مالک فیروچیو لیمبرگینی دوسری جنگ عظیم کے دوران ایئر فورس کی مکینکس کور کے ساتھ کام کرتا تھا جہاں وہ اپنی ذہانت اور جگاڑ کی وجہ سے مشہور تھا اور اسے چیزوں کو اپ گریڈ کرنے کے حوالے سے جادوگر کہا جاتا تھا، جنگ عظیم کے بعد فیروچیو لیمبرگینی نے شمالی اٹلی میں موٹر سائیکل اور کاروں کی مرمت کی ایک چھوٹی سی دکان بنائی ، یہاں اس نے بے کار فوجی مشینری خریدنا شروع کردی جن کو وہ ٹریکٹروں میں تبدیل کرکے فروخت کرتا تھا، یہ ایک زرعی علاقہ تھا اور یہاں ٹریکٹروں کی مانگ بہت زیادہ تھی، فیروچیو لیمبرگینی کو اس کا بہت فائدہ ہوا اور اس کے ٹریکٹر دھڑا دھڑ بکنے لگے، ابتدا میں وہ مہینے میں صرف ایک ہی ٹریکٹر بنا پاتا تھا ، اس کام سے اسے خوب منافع ہوا جس کے بعد اس نے تیل سے چلنے والے ہیٹر اور عمارتوں کیلئے ایئر کنڈیشنگ سسٹمز بنانا شروع کردیے اور خوب پیسہ کمایا۔ فیروچیو لیمبرگینی کو شروع سے ہی کاروں کا شوق تھا اسی لیے اس نے کاروں کی مرمت کی دکان کھولی تھی، جب پیسہ آیا تو اس نے بہت سی کاریں خریدیں ، اس کی کولیکشن میں فراری 250 جی ٹی سمیت بہت سی کاریں تھیں، ایک موقع پر وہ اپنی فراری کار کے کلچ میں ہونے والے مسائل سے تنگ آگیا اور فراری کمپنی کے مالک اینزو فراری سے ملنے پہنچ گیا، فراری نے لیمبرگنی سے کہا کہ مسئلہ میری کار میں نہیں بلکہ ڈرائیور میں ہے، بہتر ہوگا کہ تم اپنے ٹریکٹروں پر دھیان دو۔فیروچیو لیمبرگینی کیلئے یہ توہین ناقابل برداشت تھی، اس کے بعد اس نے فیصلہ کرلیا کہ وہ فراری سے بھی زیادہ اچھی کار بنائے گا ایک ایسی کار جو 150 میل فی گھنٹہ کی رفتار سے سڑکوں پر دوڑ سکے، اس دور میں یہ رفتار سوچ سے بھی بڑھ کر تھی۔

Categories
پاکستان

پنجاب میں ضمنی الیکشن!! پی ٹی آئی کو بڑا جھٹکا، اہم مذہبی جماعت کا ن لیگ کی حمایت کا اعلان

لاہور: (ویب ڈیسک) مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سربراہ سینیٹر پروفیسر ساجد میر نےسپریم کورٹ سے اپیل کی ہے کہ سود کے فیصلے کے خلاف نظر ثانی کی اپیلوں کو مسترد کر دے ،سودی نظام اللہ اور اس کے رسول ﷺ کے خلاف اعلان جنگ ہے ، وفاقی شرعی عدالت کے فیصلے کو عدالت عظمیٰ میں چیلنج کرنے والے بینک ہوش کے ناخن لیں اور اپیل واپس لیں ورنہ عوام کے شدید ردعمل کا سامنا کرنا پڑے گا۔

اس امرکا اظہار انہوں نے مرکز راوی روڈ میں مرکزی کابینہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے اعلان کیا کہ جمعیت اہل حدیث پاکستان پنجاب میں ہونے والے ضمنی انتخابات میں مسلم لیگ ن کے امیدواروں کی حمایت کر رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے معاشی نظام کو مغربی اصولوں پر نہیں بلکہ اسلامی اصولوں پر استوار دیکھنا چاہتے ہیں۔ اسی لیے دستور پاکستان نے سود سے پاک معیشت کو پاکستان کی معاشی منزل قرار دیتے ہوئے حکومت کو ہدایت دے رکھی ہے کہ وہ قومی معیشت کو جلد از جلد سودی اصول و قوانین سے نجات دلائے۔ ملک کو سودی نظام کی لعنت و نحوست سے پاک کرنے کا مرحلہ وار آغاز کیا جائے ۔ ان کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف کی غلامی سے نکلے بغیر پاکستان مسائل کی دلدل سے باہر نہیں نکل سکتا۔ مہنگائی نے عوام کی چیخیں نکال دی ہیں، حکومت عوام کے مسائل کے حل کے لیے روڈ میپ دے۔ ماضی کی حکومتوں نے آئی ایم ایف سے معاہدے کر کے ملک و قوم کو غلامی کی زنجیروں میں جکڑ دیا ہے۔موجودہ حکومت بھی مجبورا آئی ایم ایف کے پاس جارہی ہے اسے کوئی آئیڈیل صورتحال نہیں قرار دیا جاسکتا ۔پروفیسر ساجد میر نے کہا کہ پنجاب میں ضمنی انتخابات میں مسلم لیگ ن کے اُمید واروں کی حمایت کر رہے ہیں ۔ اجلاس میں ناظم اعلیٰ ڈاکٹر حافظ عبدالکریم، مولانا علی محمد ابو تراب، قاری صہیب میر محمدی، علامہ شفیق خاں پسروری، چوہدری کاشف نواز رندھاوا، ڈاکٹر زعیم الدین لکھوی، ڈاکٹر عبدالغفور راشد، چوہدری یٰسین ظفر، مولانا عبدالباسط شیخوپوری، حافظ عامر نجیب، قاری عتیق الرحمن شاہ، مولانا عثمان سلیمان، حاجی نواز مغل ، حافظ فیصل افضل شیخ و دیگر نے شرکت کی۔ اجلاس میں عام انتخابات میں بھر پور شرکت کا فیصلہ کیا گیا۔ ناظم اعلیٰ حافظ عبدالکریم نے کہا کہ ہم سیاسی میدان میں اپنی طاقت کا مظاہرہ کریں گے۔ اجلاس میں مولانا عبدالرشید حجازی اور چوہدری کاشف نواز رندھاوا نے ضمنی انتخابات میں ہونے والی سرگرمیوں کے بارے میں رپورٹ پیش کی۔اجلاس میں حوثی باغیوں کی طرف سے سعودی عرب کے مختلف مقامات پرہونے والے حملوں کی مذمت کی گئی اور قرار دیا گیا کہ حرمین شریفین کے تحفظ کے لیے ہر قسم کی قربانی دی جائے گی ۔

Categories
پاکستان

پی ٹی آئی کی منحرف رکن آپے سے باہر!!! عمران خان پر سنگین الزامات عائد کر دیئے

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کی منحرف رکن عظمیٰ کاردار نے پارٹی چیئرمین اور ان کی اہلیہ پر سنگین الزامات عائد کر دیئے۔نجی ٹی وی کے مطابق عظمیٰ کاردار کا کہناہے کہ علیم خان بشریٰ بی بی ، فرح خان کی کرپشن کی راہ میں رکاوٹ بنتے،علیم خان کو اس لئے وزیراعلیٰ نہیں بننے دیا گیا

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کی منحرف رکن عظمیٰ کاردار نے پارٹی چیئرمین اور ان کی اہلیہ پر سنگین الزامات عائد کر دیئے۔نجی ٹی وی کے مطابق عظمیٰ کاردار کا کہناہے کہ علیم خان بشریٰ بی بی ، فرح خان کی کرپشن کی راہ میں رکاوٹ بنتے،علیم خان کو اس لئے وزیراعلیٰ نہیں بننے دیا گیا، منحرف رکن پی ٹی آئی کا مزید کہناتھا کہ عثمان بزدار کٹھ پتلی تھے، وزیراعلیٰ ہاﺅس کرپشن کا گڑھ تھا،ان کا کہناتھا کہ فرح گوگی، طاہر خورشید ، بشریٰ بی بی کی کرپشن کے وعدہ معاف گواہ بنیں گے۔ عظمیٰ کاردار کا کہناتھا کہ عمران خان نے وائٹ کالر کرائم کیا، منی لانڈرنگ سے پیسہ باہر بھجوایا،کرپشن کا70 فیصد عمران، بشریٰ بی بی،30 فیصد فرح گوگی کو جاتا رہا،ان کا کہناتھا کہ عمران خان ہنس ہنس کر بشریٰ بی بی کی فائلز پر دستخط کرتے رہے۔منحرف رکن پی ٹی آئی کا کہناتھا کہ عمران خان کا موبائل بھی بشریٰ بی بی کے پاس ہوتا ہے، بشریٰ بی بی فیصلہ کرتی عمران خان سے کس نے ملنا اور کس نے نہیں،جہانگیر ترین سے دوری کی وجہ بھی بشریٰ بی بی تھیں۔ دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کے رہنما فیاض الحسن چوہان کا کہنا ہے کہ دو پرائیویٹ افراد کی آڈیو لیک کرنا غیر اخلاقی، غیر قانونی اور غیر انسانی ہے۔ سابق خاتون اوّل بشریٰ بی بی کی آڈیو لیک پر فیاض الحسن چوہان نے ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ آڈیو لیک کا حال بھی توشہ خانہ اور دیگر الزامات کی طرح ہوگا، پریڈ گراؤنڈ کا کامیاب جلسہ آڈیو لیک کرنے والوں کے منہ پر طمانچہ ہے۔ فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ آڈیو ویڈیو لیکس والی سیاست عمران خان کے مشن کا راستہ نہیں روک سکتی، عمران خان پوری جرات اور دلیری سے انجمن غلامان امریکا کا مقابلہ کر رہے ہیں، امریکی سازش کا شکار ہونے والے لوٹے غدار نہیں تو کیا ٹیپو سلطان کہلائیں جائیں۔ پی ٹی آئی رہنما کا کہنا تھا کہ راولپنڈی اسلام آباد کے لاکھوں شہریوں کی جلسے میں شرکت عمران خان پر اعتماد ہے۔

Categories
پاکستان

عازمین حج کیلئے اچھی خبر!! حکومت نے بڑا فیصلہ کرلیا

اسلام آباد: (ویب ڈیسک) وفاقی حکومت نے عازمین حج کو سبسڈی کی رقم اداکرنے کا فیصلہ کرلیا۔تفصیلات کے مطابق حکومت نے سبسڈی کی رقم وزارت مذہبی امور کو فراہم کر دی ،وفاقی کابینہ نے ایک لاکھ پچاس ہزار روپے عازمین کو حج پر سبسڈی دی تھی۔کابینہ کے فیصلے کے مطابق تمام عازمین حج کو وطن واپسی پر 1,50,000 روپے کی سبسڈی دی جائے گی۔

وفاقی حکومت نے حاجیوں کی ادائیگی کے لیے سبسڈی کی رقم بھی وزارت مذہبی امور کو منتقل کر دی۔ ادھر سعودی عرب کی وزارتِ حج وعمرہ نے عمومی مقتدرہ اوقاف کے ساتھ سٹریٹجک شراکت داری کے تحت رواں سال [1443ھ] کے حج کے لیے دُنیا کے تمام بھر کے عازمین جج وعمرہ کے لیے ایک نیا آگاہی پروگرام شروع کیا ہے۔ اس آگاہی پروگرام میں 13 تفصیلی رہنما کتابچے ہیں جو عازمین کی دلچسپی کے موضوعات کے بارے میں آسان طریقے سے حج کے تمام مراحل اور مناسک کے بارے میں معلومات پر فراہم کرتے ہیں۔ یہ معلومات ایک آن لائن پورٹل کے ذریعے 14 عالمی زبانوں میں دی گئی ہیں۔ صارفین اور عازمین ویب گاہ https://guide.haj.gov.sa سے استفادہ کر سکتے ہیں۔ یہ آگاہی گائیڈز سعودی وژن 2030 کے مقاصد کے عین مطابق ہیں جن کا مقصد حجاج کرام کو بیت اللہ کے سفر میں سہولت فراہم کرنا اور ان کے تمام سوالوں کے جوابات 14سے زیادہ زبانوں میں تسلی بخش انداز میں دے کر انہیں حج کے بارے میں آگاہی دینا ہے۔ وزارت حج وعمرہ نے بتایا ہے کہ اپنے تمام تراجم کے ساتھ 182گائیڈز مختلف زبانوں میں پیش ہیں۔ ان میں حج کے حوالے سے قانونی امور، صحت کے معاملات، شرعی رہ نمائی، ریگولیٹری معلومات اور تنظیمی نوعیت کی ہدایات آسان زبان میں تصاویر اور تفصیلی انفو گرافکس کے ذریعے فراہم کی گئی ہیں۔ تاکہ قاری کو پڑھنے اور انہیں سمجھنے میں آسانی ہو۔ اس اقدام کے ذریعے حج وعمرہ کی وزارت عازمین حج کی خدمت بجا لانے کی کوشش کرتی ہے کہ ضیوف الرحمن ان معلومات کے حصول کے بعد زیادہ سے زیادہ عبادات بجا لا سکیں۔ یہ معلومات چوبیس گھنٹے سمارٹ ڈیوائسز پر مفت دستیاب ہیں۔ آن لائن پورٹل پر اس حوالے سے 10,178 صفحات پر مشتمل معلومات استفادے کے لیے موجود ہیں۔ یہ کام وزارت حج وعمرہ کی طرف سے جنرل اتھارٹی برائے اوقاف کے ساتھ سٹریٹجک تعاون اور متعدد سرکاری ایجنسیوں کے ساتھ فعال شراکت کے تحت انجام دیا گیا ہے، جو دوران حج خدمات فراہم کرتی ہیں۔ اس کا مقصد حجاج کرام اور عمرہ زائرین کے لیے اپنے آگاہی پیغامات پہنچانا ہے۔ یہ سہولت اردو کے علاوہ عربی، انگریزی، فرانسیسی، بنگالی، انڈونیشین، ملے ،باھاسا، امہاری، فارسی، اسپانوی، ترکیہ، روسی اور سنہالی میں دستیاب ہیں۔

Categories
پاکستان

طلبا کیلئے اچھی خبر!! حکومت نے بڑی خوشخبری سنا دی

لاہور: (ویب ڈیسک) پنجاب حکومت نے طلبا کے لئے دوبارہ لیپ ٹاپ اسکیم شروع کا اعلان کردیا ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز نے اعلان کیا ہے کہ طلباءکیلئے لیپ ٹاپ اسکیم پھر شروع ہو رہی ہے۔ وزیراعلیٰ حمزہ شہبازنے مزید کہا کہ مہنگائی پرقابوپانے کیلئے پرائس کنٹرول کمیٹیوں کوفعال کردیا

جبکہ مزدور کے لئے کم از کم اجرت 25ہزار مقرر کر دی گئی ہے ۔ان کا کہناتھا کہ سرکاری اسپتالوں کی او پی ڈی کو بہتر بنا رہے ہیں،تحصیل اور ڈسٹرکٹ اسپتالوں میں مفت ادویات دستیاب ہیں،کابینہ نہیں تھی پھر بھی 200ارب کی سبسڈی دےکرآٹاسستا کیا۔ حمزہ شہبا ز کا مزید کہناتھا کہ عوام کی مشکلات اور دکھوں کا احساس ہے،اللہ تعالیٰ نے خدمت کا موقع دیا ،وقت ضائع کئے بغیر سرگرم عمل ہیں،ہم مشکلات سے گھبرانے والے نہیں ،مسائل پر قابو پاکردم لیں گے۔ دوسری جانب صوبہ سندھ کے شہریوں کے لیے سستی بجلی کی جانب بڑا قدم اٹھاتے ہوئے، سندھ حکومت نے نیپرا کے مقابلے میں سیپرا کے قیام کا قانونی مسودہ تیار کر لیا۔تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نے نیپرا کے مقابلے میں سیپرا کے قیام کی تیاری کے سلسلے میں سندھ الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی کا ابتدائی مسودہ تیار کر لیا۔ مجوزہ قانون کے مطابق سندھ میں سیپرا بجلی کے ٹیرف کا تعین کرے گی، پاور جنریشن اور لائسنسنگ کو ریگولیٹ کرے گی، اور صوبے میں پاور ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کی مانیٹرنگ کرے گی۔ سندھ کابینہ کے 5 جولائی کے اجلاس میں اتھارٹی کے قیام پر غور اور فیصلہ ہوگا، بتایا جا رہا ہے کہ اس کے بعد سندھ اسمبلی کے اجلاس میں اس مسودے کی منظوری دے کر اسے قانونی صورت دی جائے گی۔ خیال رہے کہ وفاق میں پہلے ہی اس حوالے سے ایک اتھارٹی موجود ہے، تاہم اٹھارویں ترمیم کے بعد صوبائی حکومت کو یہ اختیار حاصل ہے کہ وہ بجلی کی تقسیم اور اس کا ٹیرف مقرر کرے۔ اس وقت تھر کوئلہ اور ونڈ سے پیدا ہونے والی بجلی سندھ حکومت کی اپنی ہے، لہٰذا صوبائی حکومت اس سلسلے میں سندھ کے شہریوں کو سستی بجلی کی فراہمی کے لیے یہ قانون سازی کر رہی ہے۔

Categories
پاکستان

مہنگائی سے تنگ عوام کےلئے اچھی خبر!!! سستی بجلی کی جانب بڑا قدم اٹھا لیا گیا

کراچی: (ویب ڈیسک) صوبہ سندھ کے شہریوں کے لیے سستی بجلی کی جانب بڑا قدم اٹھاتے ہوئے، سندھ حکومت نے نیپرا کے مقابلے میں سیپرا کے قیام کا قانونی مسودہ تیار کر لیا۔تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نے نیپرا کے مقابلے میں سیپرا کے قیام کی تیاری کے سلسلے میں سندھ الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی کا ابتدائی مسودہ تیار کر لیا۔

مجوزہ قانون کے مطابق سندھ میں سیپرا بجلی کے ٹیرف کا تعین کرے گی، پاور جنریشن اور لائسنسنگ کو ریگولیٹ کرے گی، اور صوبے میں پاور ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کی مانیٹرنگ کرے گی۔ سندھ کابینہ کے 5 جولائی کے اجلاس میں اتھارٹی کے قیام پر غور اور فیصلہ ہوگا، بتایا جا رہا ہے کہ اس کے بعد سندھ اسمبلی کے اجلاس میں اس مسودے کی منظوری دے کر اسے قانونی صورت دی جائے گی۔ خیال رہے کہ وفاق میں پہلے ہی اس حوالے سے ایک اتھارٹی موجود ہے، تاہم اٹھارویں ترمیم کے بعد صوبائی حکومت کو یہ اختیار حاصل ہے کہ وہ بجلی کی تقسیم اور اس کا ٹیرف مقرر کرے۔ اس وقت تھر کوئلہ اور ونڈ سے پیدا ہونے والی بجلی سندھ حکومت کی اپنی ہے، لہٰذا صوبائی حکومت اس سلسلے میں سندھ کے شہریوں کو سستی بجلی کی فراہمی کے لیے یہ قانون سازی کر رہی ہے۔ ادھر وفاقی وزیر توانائی خرم دستگیر خان نے قوم کو عید الضحیٰ پر لوڈشیڈنگ ختم نہ ہونے کی نوید سنا دی۔ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر خرم دستگیر نے کہا کہ عید الضحیٰ پر لوڈشیڈنگ ختم نہیں ہو سکتی لیکن واضح کمی آئے گی، 720 میگا واٹ کے پاور پلانٹ نے 29 جون سے اپنا کام شروع کر دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نئے میگا پراجیکٹ سے اگلے سال گرمی میں بجلی کی پریشانی نہیں ہوگی، بجلی کا بحران ملک کے ساتھ بڑی ڈکیتی کرنے والوں کی وجہ سے آیا تھا، وقت پر ایندھن نہ خریدنے کی مجرمانہ غفلت کی گئی۔ وزیر توانائی نے کہا کہ کوئلے کی قیمت میں پچھلے سال کی نسبت اضافہ ہوا، عمران خان نے سی پیک میں بہت رکاوٹیں ڈالیں۔

Categories
پاکستان

اب مہینوں نہیں صرف دنوں کی بات!!!! نواز شریف کی وطن واپسی سے متعلق بڑی خبر آگئی

سیالکوٹ: (ویب ڈیسک) وزیر دفاع خواجہ آصف نے ن لیگ کے قائد میاں نواز شریف کی وطن واپسی سے متعلق اہم بیان دے دیا ان کا کہنا ہے کہ نواز شریف جلد وطن واپس آجائیں گے۔ اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمیں اس بات کا اچھی طرح سے

ادراک ہے کہ مہنگائی میں بے پناہ اضافہ ہوا ہے۔ پیٹرولیم مصنوعات اوراشیائے خورد ونوش کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے جس کی وجہ سے لوگ مالی طور پر بہت پریشان ہیں۔ خواجہ آصف نے کہا کہ تیل اور کوئلے کی قیمتیں تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہیں، 1990میں ہم نے عوام کا قرض اتارنے کی کوشش کی تھی۔الیکشن میں ایک سال ہے پھرعوام کی عدالت میں سب پیش ہوں گے، سابق وزیراعظم سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ عمران خان دھاندلی کے ذریعے اقتدار میں آئے تھے، اقتدار سے نکلنے کے بعد وہ خواس باختہ ہوگئے ہیں۔ وزیر دفاع نے کہا کہ ہم اکیلے نہیں آج عمران خان بھی ضمانت پر ہے، مہنگائی کی ذمہ داری صرف ہماری حکومت ہی نہیں سابقہ حکومت بھی برابر کی ذمہ دار ہے۔ ادھر وفاقی وزیر توانائی خرم دستگیر خان نے قوم کو عید الضحیٰ پر لوڈشیڈنگ ختم نہ ہونے کی نوید سنا دی۔ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر خرم دستگیر نے کہا کہ عید الضحیٰ پر لوڈشیڈنگ ختم نہیں ہو سکتی لیکن واضح کمی آئے گی، 720 میگا واٹ کے پاور پلانٹ نے 29 جون سے اپنا کام شروع کر دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نئے میگا پراجیکٹ سے اگلے سال گرمی میں بجلی کی پریشانی نہیں ہوگی، بجلی کا بحران ملک کے ساتھ بڑی ڈکیتی کرنے والوں کی وجہ سے آیا تھا، وقت پر ایندھن نہ خریدنے کی مجرمانہ غفلت کی گئی۔ وزیر توانائی نے کہا کہ کوئلے کی قیمت میں پچھلے سال کی نسبت اضافہ ہوا، عمران خان نے سی پیک میں بہت رکاوٹیں ڈالیں۔

Categories
پاکستان

پولیس اہلکارنے سڑک پر ہی عدالت لگالی، مزدور سے بدسلوکی

لاڑکانہ: (ویب ڈیسک) لاڑکانہ میں پولیس اہلکار نے سڑک پر ہی عدالت لگالی۔ اہلکار کی محنت کس کے ساتھ بدسلوکی کی ویڈیو سامنے آگئی۔پولیس اہلکار نے مزدور کا گریبان پکڑ لیا اور زمین پر لٹا کر پیٹنا چاہا۔ اس دوران شہری نے ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر وائرل کر دی۔

پولیس اہلکار نے کہا کہ آلو پیاز بیچنے والے ریڑھی بان کو سڑک پر کھڑا نہ ہونے کا کہا جب کہ مزدور کا کہنا ہے کہ پیسے نہ دینے پر پولیس اہلکار نے تشدد کا نشانہ بنایا۔ایس ایس پی سرفراز نواز شیخ نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے مذکورہ پولیس اہلکار کو معطل کر دیا۔

Categories
پاکستان

ضمنی انتخابات!!!! پنجاب حکومت باز رہے ورنہ ۔۔۔۔ پرویزالہیٰ کا اہم بیان آگیا

لاہور: (ویب ڈیسک) اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویزالہیٰ نے کہا ہے کہ اسمبلی اجلاس سپریم کورٹ کے تمام احکامات کے عین مطابق ہوگا۔ اپنے ویڈیو پیغام میں ان کا کہنا ہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلے پر نیک نیتی سےعمل کرانا سب کی ذمےداری ہے، پی ٹی آئی، پاکستان مسلم لیگ اور ن لیگ سب کی ذمہ داری بنتی ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویزالہیٰ اور ق لیگ کے رہنما نے کہا ہے کہ اسمبلی اجلاس سپریم کورٹ کے تمام احکامات کے عین مطابق ہوگا۔ اپنے ویڈیو پیغام میں ان کا کہنا ہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلے پر نیک نیتی سےعمل کرانا سب کی ذمےداری ہے، پی ٹی آئی، پاکستان مسلم لیگ اور ن لیگ سب کی ذمہ داری بنتی ہے۔ پرویزالہیٰ نے کہا کہ اسمبلی اجلاس سپریم کورٹ کے تمام احکامات کے عین مطابق ہوگا، اسمبلی کے اندر بڑا اچھا اور دوستانہ ماحول ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب کے انتخاب میں غیر جانبداری اور شفافیت کو یقینی بنایا جائے گا، حمزہ شہباز نے بھی سپریم کورٹ کو بھی اس بات کی یقین دہانی کرائی ہے۔ اسپیکر پنجاب اسمبلی نے بتایا کہ حمزہ شہباز نے بھی کہا ہے کہ ضمنی الیکشن غیر جانبدارانہ اورشفاف انداز میں مکمل کرائیں گے، حکومت ٹرانسفر پوسٹنگ پر سپریم کورٹ کے فیصلے پر سختی سے عمل کرائے۔ پرویزالہیٰ کا کہنا تھا کہ عدالتی فیصلے کے مطابق ادارے مخالفین کے خلاف استعمال نہیں ہونے دیں گے، ضمنی الیکشن والے حلقوں میں ترقیاتی اسکیم یا فنڈ نہیں دیے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی ٹینڈر ہوگیا تو حکومت کا فرض ہے کہ اس کو فوری ختم کرائے، وزراء اور مشیر الیکشن کمیشن کے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی نہیں کریں گے۔ اسپیکر پنجاب اسمبلی نے مزید کہا کہ حکومتی مشینری اور سیاسی جماعتیں انتظامی معاملات میں مداخلت سے باز رہیں گے، اسمبلی افسران ضابطے اور قواعد کے مطابق امور سرانجام دیں گے۔

Categories
پاکستان

عیدالاضحی پر لوڈشیڈنگ ہوگی یا نہیں ؟ وفاقی وزیر نے صاف صاف بتا دیا

گوجرانوالہ: (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر توانائی خرم دستگیر خان نے قوم کو عید الضحیٰ پر لوڈشیڈنگ ختم نہ ہونے کی نوید سنا دی۔ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر خرم دستگیر نے کہا کہ عید الضحیٰ پر لوڈشیڈنگ ختم نہیں ہو سکتی لیکن واضح کمی آئے گی، 720 میگا واٹ کے پاور پلانٹ نے 29 جون سے اپنا کام شروع کر دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نئے میگا پراجیکٹ سے اگلے سال گرمی میں بجلی کی پریشانی نہیں ہوگی، بجلی کا بحران ملک کے ساتھ بڑی ڈکیتی کرنے والوں کی وجہ سے آیا تھا، وقت پر ایندھن نہ خریدنے کی مجرمانہ غفلت کی گئی۔ وزیر توانائی نے کہا کہ کوئلے کی قیمت میں پچھلے سال کی نسبت اضافہ ہوا، عمران خان نے سی پیک میں بہت رکاوٹیں ڈالیں۔ انہوں نے کہا کہ تریمو جھنگ کا 1200 میگاوواٹ کا منصوبہ 2020 میں مکمل کرنا تھا، تریموں جھنگ پراجیکٹ پر بھی نیب کا مقدمہ بنایا گیا، 30 جون کو سب سے زیادہ 30 ہزار میگا واٹ بجلی کی ریکارڈ طلب ظاہر ہوئی۔ خرم دستگیر نے مزید کہا کہ 2 مہینے میں جو گھریلو صارفین کو مشکل آئی صنعتوں کو بجلی دینے کی وجہ سے آئی، 7 تاریخ تک تربیلا اپنی 3400 میگا واٹ بجلی دینا شروع کر دے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان نے اپنے آخری سال بڑی ڈکیتی کی، آج جو بھی معاشی چیلنجز ہیں وہ ان ڈکیتیوں کی حکومت کی وجہ سے ہیں، شہباز شریف کی حکومت آج چھٹی کے روز بھی کام میں مگن ہے۔انہوں نے کہا کہ تمام سرکاری عمارتوں کو درجہ بہ درجہ شمسی توانائی پر منتقل کریں گے، 300 یونٹ استعمال کرنے والوں کو کم ریٹس پر بجلی فراہم کر رہے ہیں، گھریلو صارفین کو بھی شمسی توانائی پر منتقل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ خرم دستگیر نے کہا کہ سولر پینل پر ایک جامع پیکج کی تیاری ہو رہی ہے، شہباز شریف آئندہ چند دن میں سولر پروجیکٹ کا اعلان کریں گے۔

Categories
پاکستان

آرمی چیف قطر گئے تو کیا پیشکش کی گئی ؟ وفاقی وزیر نے نیا پینڈورا باکس کھول دیا

اسلام آباد: (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر احسن اقبال نے کہا ہے کہ عالمی منڈی میں گیس مہنگی ہوچکی، عمران نیازی خزانہ کو جھاڑو پھیر گیا ہمارے آرمی چیف قطر گئے تو اس نےسستی گیس کی پیشکش کی۔ لوڈشیڈنگ پر وفاقی وزیر عجیب منطق پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس سال ملک میں غیرمعمولی گرمی پڑی ہے موسم بہار نہیں آیا سیدھا موسم گرما آگیا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر احسن اقبال نے کہا ہے کہ عالمی منڈی میں گیس مہنگی ہوچکی، عمران نیازی خزانہ کو جھاڑو پھیر گیا ہمارے آرمی چیف قطر گئے تو اس نےسستی گیس کی پیشکش کی۔ لوڈشیڈنگ پر وفاقی وزیر عجیب منطق پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس سال ملک میں غیرمعمولی گرمی پڑی ہے موسم بہار نہیں آیا سیدھا موسم گرما آگیا نارووال:زیادہ گرمی ہونےسےڈیمانڈمیں اضافہ ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نےآج لوڈشیڈنگ سےمتعلق اجلاس بلایاتھا عوام کو پتا ہونا چاہیےکہ آج ملک میں لوڈ شیڈنگ کیوں ہورہی ہے آج ملک میں ساڑھے3ہزارمیگا واٹ سےزائد بجلی کے منصوبے بندہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ بجلی کےمنصوبوں کوچلانےکیلئےملک میں گیس نہیں ہے عمران خان حکومت نے وقت پرایل این جی کے سودے نہیں کیے دوسری وجہ وہ ملک کا خزانہ خالی کر گئے ہیں ملک کے خزانے میں پیسا نہیں ہے پٹرول، گیس،خوردنی تیل یوکرین جنگ کےباعث5گنامہنگاہوگیا۔احسن اقبال نے کہا کہ عمران حکومت نےپیشکش ٹھکرائی وہ مہنگی گیس خرید کر کمیشن کمانا چاہتے تھے ہمارے آرمی چیف قطر گئے تو اس نےسستی گیس کی پیشکش کی۔ دوسری جانب وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق، پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان پر برس پڑے اور کہا کہ عمران خان سے پوچھنا چاہیے کہ وہ کس کے ایجنڈے پر کام کررہا ہے؟ ن لیگی رہنما نے کہا کہ ایک آدمی جمہوریت کا چیمپئن بنتا ہے، وہ ڈنکے کی چوٹ پر آئین توڑنے کی بات کرتا ہے، کبھی عدلیہ کو آواز دیتا ہے تو کبھی فوج کو پکارتا ہے اور ادارے اپنی آئینی حدود میں رہ کر کام کر رہے ہوں تو انہیں گالیاں دیتا ہے۔

Categories
پاکستان

عمران خان کے گرد گھیرا تنگ!!! ن لیگ نے چُپکے سے بڑی کارروائی ڈال دی

لاہور: (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر برائے اقتصادی امور ایاز صادق کہتے ہیں کہ توشہ خانہ کیس سے متعلق عمران خان کے خلاف اسپیکر قومی اسمبلی کے پاس ریفرنس جمع ہوچکا ہے، اسپیکر 30 دن میں فیصلہ کرکے ریفرنس الیکشن کمیشن کو بھجوائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے کشمیر کے حوالےسےٹرمپ سے کیا وعدہ پورا کیا

عمران خان نے ملک کے خلاف جو باتیں کیں، اس پر ان کے خلاف کیس سپریم کورٹ لے کر جائیں گے۔ دوسری جانب وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق، پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان پر برس پڑے اور کہا کہ عمران خان سے پوچھنا چاہیے کہ وہ کس کے ایجنڈے پر کام کررہا ہے؟ ن لیگی رہنما نے کہا کہ ایک آدمی جمہوریت کا چیمپئن بنتا ہے، وہ ڈنکے کی چوٹ پر آئین توڑنے کی بات کرتا ہے، کبھی عدلیہ کو آواز دیتا ہے تو کبھی فوج کو پکارتا ہے اور ادارے اپنی آئینی حدود میں رہ کر کام کر رہے ہوں تو انہیں گالیاں دیتا ہے۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ اگرغداری ہو رہی تھی تو اس وقت آپ ملک کے وزیر اعظم تھے، جوڈیشل کمیشن بنا لیتے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمیں امپورٹڈ حکومت کہتے ہیں، کیا امریکی سفیر کو صدارتی محل میں گارڈ آف آنر دینے کو ہم نے کہا تھا؟ عمران خان سے پوچھنا چاہیے کہ وہ کس کے ایجنڈے پر کام کر رہا ہے۔ سعد رفیق نے عمران خان سے متعلق مزید کہا کہ ’تم اداروں کی مداخلت کروانا چاہتے ہو، آئین توڑنے کی دعوت دے رہے ہو، برملا کہتے ہو کہ ادارے ملک میں تبدیلی لائیں، جو لائن ٹو نہیں کرتا اسے سوشل میڈیا ٹیم کے ذریعے گالیاں نکلواتے ہو، اپنے محسنوں، انگلی پکڑ کر چلانے والوں کو بُرا بھلا کہتے ہو۔‘ خیال رہے کہ سابق وزیراعظم عمران خان کا ایک اور توشہ خانہ اسکینڈل گزشتہ دنوں سامنے آیا ہے۔ پہلے میڈیا میں رپورٹ ہوئی گھڑیوں کے علاوہ تین مزید گھڑیاں عمران خان نے فروخت کیں اور اپنی حکومت کی ترامیم کا فائدہ اٹھا کر گھڑیوں کی قیمت کا تخمینہ اصل سے کم لگوایا اور اس کم قیمت کا 20 فیصد قومی خزانے میں جمع کروایا۔

Categories
پاکستان

امریکی سفیر کو صدارتی محل میں گارڈ آف آنر کس شخصیت نے دیا ؟ وفاقی وزیر تہلکہ خیز انکشاف کر دیا

لاہور: (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق، پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان پر برس پڑے اور کہا کہ عمران خان سے پوچھنا چاہیے کہ وہ کس کے ایجنڈے پر کام کررہا ہے؟ ن لیگی رہنما نے کہا کہ ایک آدمی جمہوریت کا چیمپئن بنتا ہے، وہ ڈنکے کی چوٹ پر آئین توڑنے کی بات کرتا ہے

کبھی عدلیہ کو آواز دیتا ہے تو کبھی فوج کو پکارتا ہے اور ادارے اپنی آئینی حدود میں رہ کر کام کر رہے ہوں تو انہیں گالیاں دیتا ہے۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ اگرغداری ہو رہی تھی تو اس وقت آپ ملک کے وزیر اعظم تھے، جوڈیشل کمیشن بنا لیتے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمیں امپورٹڈ حکومت کہتے ہیں، کیا امریکی سفیر کو صدارتی محل میں گارڈ آف آنر دینے کو ہم نے کہا تھا؟ عمران خان سے پوچھنا چاہیے کہ وہ کس کے ایجنڈے پر کام کر رہا ہے۔ سعد رفیق نے عمران خان سے متعلق مزید کہا کہ ’تم اداروں کی مداخلت کروانا چاہتے ہو، آئین توڑنے کی دعوت دے رہے ہو، برملا کہتے ہو کہ ادارے ملک میں تبدیلی لائیں، جو لائن ٹو نہیں کرتا اسے سوشل میڈیا ٹیم کے ذریعے گالیاں نکلواتے ہو، اپنے محسنوں، انگلی پکڑ کر چلانے والوں کو بُرا بھلا کہتے ہو۔‘ دوسری جانب وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ جو توشہ خانہ پر ہاتھ صاف کرے اس سے ملکی خزانہ کیسے محفوظ رہ سکتاہے؟ اربوں روپے کی پراپرٹی فرح شہزادی کے نام پر نکلی ہے۔ وفاقی وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ یہ ساڑھے 3 سال مسلط رہے تو ملک کا یہی حال ہونا تھا، مہنگائی کا ریکارڈ دو تین مہینوں میں نہیں بلکہ پچھلے 4سال میں ٹوٹا ہے، کیا پچھلے 4 سالوں کی ذمہ داری بھی ہم پر ہے؟ رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا کہ یہ چاہتے تھے حمزہ کو وزیر اعلیٰ کے عہدے سے ہٹا دیا جائے، حمزہ شہباز 17 اور 22 جولائی کو بھی سر خرو ہوں گے، ان کے آپس میں اختلافات تھے، یہ بری طرح ناکام ہوئے ہیں۔

Categories
پاکستان

منحرف ارکان صوبائی اسمبلی کی نااہلی کیخلاف درخواستیں!!! سپریم کورٹ سے بڑی خبر آگئی

اسلام آباد: (ویب ڈیسک) پنجاب کے منحرف ارکان صوبائی اسمبلی کی نااہلی کے خلاف درخواستیں سپریم کورٹ میں سماعت کے لیے مقرر کردی گئیں۔ چیف جسٹس پاکستان عمر عطا بندیال کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ 5 جولائی کو درخواستوں کی سماعت کرےگا۔ جسٹس امین الدین خان اور جسٹس محمد علی مظہر بھی 3 رکنی بینچ کا حصہ ہوں گے۔

خیال رہےکہ عائشہ نواز اور عظمیٰ کاردار سمیت دیگر افراد نے الیکشن کمیشن کا ڈی سیٹ کرنےکا فیصلہ چیلنج کیا ہے۔ الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کی جانب سے ریفرنس دائرکیے جانےکے بعد پی ٹی آئی کے 25 منحرف ارکان پنجاب اسمبلی کو ڈی سیٹ کیا تھا۔ یاد رہے پاکستان تحریک انصاف کے ڈی سیٹ ہونے والے 25 منحرف اراکین پنجاب اسمبلی کے نام اور حلقوں کی تفصیلات بھی جاری کی گئی تھیں۔ الیکشن کمیشن نے پنجاب اسمبلی میں وزیراعلیٰ کے انتخاب کے لیے حمزہ شہباز کو ووٹ دینے والے منحرف ارکان کے خلاف ریفرنس منظور کرتے ہوئے انہیں ڈی سیٹ کرنے فیصلہ سنایا۔ ڈی سیٹ ہونے والوں میں 16 ارکان کا تعلق ترین خان گروپ سے ہے جبکہ 5 ارکان کا تعلق علیم خان گروپ اور 4 ڈی سیٹ ہونے والے ارکان کا تعلق اسد کھوکھر گروپ سے ہے۔ ڈی سیٹ اراکین کے نام اور حلقے: راجہ صغیر، پی پی 7 راولپنڈی، ملک غلام رسول سانگھا، پی پی 83 خوشاب، سعید اکبر نوانی، پی پی 90 بھکر، محمد اجمل چیمہ، پی پی 97 فیصل آباد، عبد العلیم خان، پی پی 158 لاہور، نذیر چوہان، پی پی 167 لاہور، امین ذوالقرنین، پی پی 170 لاہور، ملک نعمان لنگڑیال، پی پی 202 ساہیوال، سلمان نعیم، پی پی 217 ملتان، زوار حسین وڑائچ، پی پی 224 لودھراں، نذیر احمد خان، پی پی 228 لودھراں، فدا حسین، پی پی 237 بہاولنگر،زہرا بتول، پی پی 272 مظفر گڑھ، لالہ طاہر، پی پی 282 لیہ، اسد کھوکھر، پی پی 168 لاہور،محمد سبطین رضا، پی پی 273 مظفر گڑھ، محسن عطا خان کھوسہ، پی پی 288 ڈی جی خان، میاں خالد محمود، پی پی 140 شیخوپورہ، مہر محمد اسلم، پی پی 127 جھنگ، فیصل حیات جبوانہ، پی پی 125 جھنگ، عائشہ نواز، ڈبلیو 322 مخصوص نشست، ساجدہ یوسف ڈبلیو 327 مخصوص نشست، عظمیٰ کاردار ڈبلیو 311 مخصوص نشست، ہارون عمران گل، این ایم 364 اقلیتی نشست، اعجاز مسیح، این ایم 365 اقلیتی نشست۔ الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ تمام اراکین کو پنجاب اسمبلی میں حمزہ شہباز کو ووٹ ڈالنے پر نااہل کیا گیا۔

Categories
پاکستان

آرمی چیف کی تعیناتی کب اور کس طریقہ کار کے تحت ہوگی ؟ نیا دعویٰ سامنے آگیا

فیصل آباد: (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ عمران خان کے سبسڈی بڑھانے پر عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے ریڈ مارک کردیا تھا، مجبوری میں ملک کو بڑی تباہی سے بچانے کیلئے مشکلات سے گزرنےکا فیصلہ کیا۔ فیصل آباد میں تقریب سے خطاب میں رانا ثنا اللہ نے کہا کہ گزشتہ

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ عمران خان کے سبسڈی بڑھانے پر عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے ریڈ مارک کردیا تھا، مجبوری میں ملک کو بڑی تباہی سے بچانے کیلئے مشکلات سے گزرنےکا فیصلہ کیا۔ فیصل آباد میں تقریب سے خطاب میں رانا ثنا اللہ نے کہا کہ گزشتہ روز پی ٹی آئی کے جلسے میں 8 ہزار کرسیاں لگائی گئیں اور کے پی سے لوگ لائے گئے، اسلام آباد سے 2 ہزار تک بندے تھے۔ رانا ثنا اللہ نے مزید کہا کہ جس نے عمران خان کو صادق اور امین قرار دیا وہ خود شکل چھپاتا پھررہا ہے، عمران خان نے خود پرویز الہٰی کو پنجاب کا سب سے بڑا ڈاکو کہا،کون سب سے بڑے ڈاکو کو وزیر اعلیٰ بنوانے کیلئے ایڑی چوٹی کا زور لگارہا ہے؟ رانا ثنا اللہ نے دعوٰی کیا کہ ابھی 50 کے قریب فرح گوگی اور گوگے برآمد ہوں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ مہنگائی بڑھنے کی بنیادی اور اصل وجہ تیل کی قیمتیں ہیں، آئی ایم ایف بضد تھا کہ سبسڈی صفر کرنی ہے، عمران خان کے سبسڈی بڑھانے پر آئی ایم ایف نے ریڈ مارک کردیا تھا، مجبوری میں ملک کو بڑی تباہی سے بچانے کیلئے مشکلات سے گزرنےکا فیصلہ کیا۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ عمران خان کی اہلیہ کی آڈیو سے سب واضح ہوگیا ہے، ان کے اعمال سامنے آرہے ہیں،سب عیاں ہوچکا ہے، جن کے ساتھ اس نےحکومت کی انہیں بھی ڈاکو چور کہتا ہے،اس بندے نے پوری قوم کو کنگال اور بےحال کردیا، لوٹ مار اور تباہی کرنے والا پوری قوم کو چور کہہ رہا ہے، میاں شہباز شریف اتفاق رائےسےاتحادیوں کو لے کر چل رہے ہیں، آرمی چیف کی تعیناتی مقررہ وقت پر اور طریقہ کار کے مطابق ہوگی۔

Categories
انٹرنیشنل

فیروز خان پیٹرول کی مسلسل بڑھتی قیمتوں سے متعلق مفتاح کے بیان پر سیخ پا

لاہور: (ویب ڈیسک) اداکار فیروز خان نے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مسلسل اضافے سے متعلق دیے گئے بیان پر شدید برہمی کا اظہار کیا ہے۔ فیروز خان نے انسٹاگرام اسٹوری پر پوسٹ شیئر کی جو مفتاح اسماعیل کے پیٹرول کی قیمتوں میں حالیہ اضافے پر طنزیہ تبصرے سے متعلق ہے۔

مفتاح اسماعیل نے اپنے ایک بیان میں مزاحیہ انداز میں کہا تھا کہ ‘جب بھی میں ٹیلی ویژن پر نظر آتا ہوں تو لوگ پیٹرول پمپس کی طرف بھاگنا شروع کردیتے ہیں’۔ اس بیان پر فیروز خان نے برہمی والے انداز میں لکھا کہ ‘انہیں یہ بات مضحکہ خیز لگتی ہے’۔اداکار نے مزید لکھا کہ ‘مجھے یقین ہے کہ مفتاح اسماعیل کی فیملی میں سے ان کا کوئی عزیز میری یہ بات ان تک ضرور پہنچائےگا کہ جہنم میں بھاگنے کے لیے کوئی جگہ نہیں ہوگی’۔ واضح رہےکہ اس وقت ملک میں پیٹرول کی نئی قیمت 248 روپے 74 پیسے فی لیٹر، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 276 روپے 54 پیسے فی لیٹر، مٹی کے تیل کی نئی قیمت 230 روپے 26 پیسے فی لیٹر اور لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت 226 روپے 15 پیسے فی لیٹر ہے۔ دوسری جانب اداکار و میزبان فیصل قریشی نے حکومت کو ملک میں ہمیشہ کے لیے لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کا طریقہ بتادیا۔ فیصل قریشی نے انسٹاگرام پر اسٹوری شیئر کی جس میں انہوں نے اپنے دوست کی جانب سے بتائی گئی تجویز کے بارے میں بتایا۔ اداکار نےکہا کہ تجویز یہ ہےکہ اگر ہرگھرکو 5 سے 10 کلو واٹ کا سولر سسٹم قسطوں پر لگوادیا جائے اور اس کا دورانیہ 5 سال میں مکمل ہو تو ہرگھر میں سولر سسٹم لگ جائےگا اور ملک میں لوڈ شیڈنگ جیسے مسئلےکا خاتمہ ہو جائےگا۔ انہوں نے اپنی اسٹوری میں مزید لکھا کہ اس طرح تیل سے چلنے والے 50 بجلی گھر فوراً بند ہوجائیں گے جس سے اربوں روپے کی امپورٹ کا بل ہمیشہ کیلئے ختم ہوجائے گا اور معیشت بہتر ہو جائے گی۔ اسٹوری میں فیصل قریشی نے مزید کہا کہ اگر حکومتی عہدیدار اس پر غور کریں تو ملکی حالات بہت بہتر ہوسکتے ہیں۔

Categories
اسپیشل سٹوریز

واٹس ایپ صارفین اب کتنے دن بعد ‘میسجز ڈیلیٹ’ کرسکیں گے ؟ اہم خبر آگئی

لاہور: (ویب ڈیسک) دنیا کی مقبول ترین ایپلی کیشن واٹس ایپ نے صارفین کی سہولت کو مدنظر رکھتے ہوئے ایک بار پھر ایپ میں تبدیلی کردی ہے۔ واٹس ایپ آئے دن نت نئے فیچرز متعارف کراتی ہے اور اب اس بار ایپلی کیشن نے اپنے ‘ڈیلیٹ فار ایوری ون (Delete for everyone)’ کے فیچر میں بڑی تبدیلی کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق دنیا کی مقبول ترین ایپلی کیشن واٹس ایپ نے صارفین کی سہولت کو مدنظر رکھتے ہوئے ایک بار پھر ایپ میں تبدیلی کردی ہے۔ واٹس ایپ آئے دن نت نئے فیچرز متعارف کراتی ہے اور اب اس بار ایپلی کیشن نے اپنے ‘ڈیلیٹ فار ایوری ون (Delete for everyone)’ کے فیچر میں بڑی تبدیلی کردی ہے۔ ایپ کی سرگرمیوں پر نظر رکھنے والی ویب سائٹ واٹس ایپ بیٹا انفو کی رپورٹ کے مطابق اب چیٹ میں بھیجے گئے پیغامات کو ڈیلیٹ کرنے کا دورانیہ بڑھا دیا گیا ہے۔ اپ ڈیٹ سے قبل واٹس ایپ کے میسجز میں ڈیلیٹ فار ایوری ون فیچر کی حد 1 گھنٹہ، 8 منٹ اور 16 سیکنڈ تھی لیکن اب نئے وقت کی حد 2 دن اور 12 گھنٹے ہوگی، یعنی دو دن بعد بھی آپ بھیجے گئے میسجز ڈیلیٹ کرسکیں گے۔ رپورٹ کے مطابق یہ اپ ڈیٹ فی الحال کچھ بِیٹا صارفین کے لیے جاری کی گئی ہے، جب کہ آہستہ آہستہ اس فیچر تک تمام صارفین کی رسائی ممکن ہوگی۔ اس کے علاوہ واٹس ایپ ڈیلیٹ فار ایوری ون فیچر کی مزید بہتری کے لیے بھی کام کر رہا ہے جس کے تحت اگر آپ گروپ ایڈمن ہیں تو مستقبل میں گروپس میں کسی بھی پیغام کو حذف کرنے کے اہل ہوں گے۔ یاد رہے کچھ روز قبل میٹا کی زیرملکیت واٹس ایپ دنیا کا مقبول ترین میسنجر ہے جس کے صارفین کی تعداد 2 ارب سے زیادہ ہے۔ یہی وجہ ہے کہ واٹس ایپ کی جانب سے صارفین کے لیے ہر ماہ کئی نئے فیچرز متعارف کرائے جاتے ہیں۔ خاص طور پر واٹس ایپ گروپس پر زیادہ توجہ دی جاتی ہے کیونکہ یہ صارفین میں بہت زیادہ مقبول ہیں۔ اسی لیے واٹس ایپ میں گروپس چیٹ کے حوالے سے چند نئے فیچرز کا اضافہ کیا گیا ہے۔ اینڈرائیڈ اور آئی او ایس صارفین کے لیے یہ نئے فیچرز متعارف کرائے گئے جو آئندہ چند دن میں سب کو دستیاب ہوں گے۔