Categories
پاکستان

نواز شریف سے ملاقات کے بعد عدنان صدیقی پی ٹی آئی “ٹائیگرز “کے ہتھے چڑھ گئے

کراچی(ویب ڈیسک) سابق وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات کے بعد سوشل میڈیا پر عدنان صدیقی کا نام پاکستان میں ٹاپ ٹرینڈ میں سے ایک ہے۔ پاکستان میں حالیہ دنوں میں جاری سیاسی ہلچل کے دوران جہاں سیاسی کارکنان اور عام شہری متحرک نظر آئے وہیں ملک کی شوبز انڈسٹری کی شخصیات بھی سیاست میں دلچسپی لیتی نظر آرہی ہیں۔ تاہم

جہاں زیادہ تر شوبز شخصیات عمران خان ساتھ دیتی نظر آرہی ہیں وہیں کچھ لوگوں کا جُھکاؤ دیگر جماعتوں خاص کر ن لیگ کی جانب ہے۔ گزشتہ روز سے سوشل میڈیا پر معروف اداکار عدنان صدیقی اور سابق وزیرِاعظم پاکستان نواز شریف کی لندن میں ملاقات کی ایک تصویر گردش کر رہی ہے جس پر سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے دلچسپ تبصرے سامنے آرہے ہیں۔ اس ملاقات کے بعد سوشل میڈیا پر عدنان صدیقی کا نام پاکستان میں ٹاپ ٹرینڈ میں سے ایک ہے۔ اسی تصویر کو سیٹھ عبداللہ نامی صارف نے بھی شیئر کیا اور لکھا کہ ’ان میں سے ایک عظیم اداکار ہے اور دوسرے عدنان صدیقی۔‘ ایک اور ٹوئٹر صارف نے ہمایوں سعید اور عدنان صدیقی کے مشہور ڈرامے ’میرے پاس تم ہو‘ کا ایک کلپ شیئر کیا اور پی ٹی آئی کے حامیوں کا ری ایکشن مزاح کے طور پر ظاہر کرنے کی کوشش کی۔ اس ویڈیو میں ہمایوں سعید عدنان صدیقی کو تھپڑ مار رہے تھے۔ جبکہ ملاقات کے حوالے سے عدنان صدیقی کا کہنا ہے کہ ’میٹنگ بہت اچھی رہی، میں اپنی فلم کے لئے آیا تھا، ادھر ہم اپنی فلم کی پروموشن کررہے ہیں تو نواز شریف کو مدعو کرنے کے لیے آیا تھا کہ ہماری فلم آکر دیکھیے، ہم نے بڑی محنت کی ہے‘۔عدنان صدیقی کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف نے انہیں بتایا کہ ’ہم آپ کی برادری کے لیے بھی بہت کچھ سوچ رہے ہیں جبکہ ملاقات میں فلم پالیسی کے حوالے سے بھی گفتگو ہوئی‘۔

Categories
Uncategorized

لیگی رہنماوں کی لندن ملاقات ،نواز شریف نے ارکان سے کس چیز کا حلف لیا؟؟تہلکہ خیز دعویٰ کر دیا گیا

لندن(ویب ڈیسک) وزیراعظم شہباز شریف اپنی کابینہ کے اراکین اور دیگر پارٹی عہدیداروں کے ہمراہ برطانیہ گئے جہاں( ن )لیگ کے قائد نواز شریف کے ساتھ ملاقات ہوئی۔ اس ملاقات میں کن معاملات پر بات ہوئی اور کیا طے پایا؟ اس حوالے سے لیگی رہنماتاحال چپ سادھے ہوئے ہیں۔” ڈیلی ڈان “کے مطابق کہا جا رہا ہے کہ اس ملاقات میں شامل لوگوں نے ملاقات کا احوال مخفی رکھنے کا حلف اٹھا رکھا ہے۔

اس سے قبل جب قومی اسمبلی میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی مدت ملازمت میں توسیع پرووٹنگ ہونے والی تھی، تب بھی لیگی وفد نے لندن میں نواز شریف سے ملاقات کی تھی اور اس ملاقات کے حوالے سے بھی ایسی ہی رازداری دیکھی گئی تھی۔ گزشتہ دنوں ہونے والی ملاقات کے متعلق اگرچہ سب خاموش ہیں تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ اس ملاقات میں گورننس، ملکی معیشت اور خارجہ پالیسی سے متعلق مسائل پر بات کی گئی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اس ملاقات کے شرکاءنے ایک بار نہیں بلکہ دو بار حلف اٹھایا کہ وہ میاں نواز شریف کے ساتھ ہونے والی اس گفتگو کو مخفی رکھیں گے۔بعد ازاں حسن نواز کے دفتر کے باہر کابینہ کے سینئر اراکین احسن اقبال اور رانا ثناءاللہ نے میڈیا سے گفتگو کی اور کہا کہ ملاقات میں نواز شریف کو ملک کو درپیش معاشی بحران پر بریفنگ دی گئی اور پاکستان میں عمران خان جس طرح انارکی پھیلا رہے ہیں، اس سے نواز شریف کو آگاہ کیا گیا۔ رپورٹ کے مطابق اس طرح کی پارٹی میٹنگز کے بعد نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر پارٹی کے لوگ اندر کی باتیں بتا دیتے ہیں لیکن اس ملاقات کے بعد وہ بھی مصر ہیں کہ اس ملاقات میں ہونے والی گفتگو منظرعام پر لانے کے لیے یہ مناسب وقت نہیں ہے۔ اس ملاقات کا حال متحدہ اپوزیشن میں شامل دیگر جماعتوں کے ساتھ مشترکہ طور پر عوام کو بتایا جائے گا۔

Categories
پاکستان

ن لیگ کا لندن اجلاس !نواز شریف کی سزا کیخلاف اپیل دائر کرنے کا فیصلہ

لندن(ویب ڈیسک) لندن میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے قائد میاں نواز شریف کی زیرصدارت پارٹی کا اہم اجلاس ہوا، 2 گھنٹے تک جاری رہنے والے اس اجلاس میں وزیراعظم شہباز شریف اور ان کی کابینہ کے ارکان بھی شریک ہوئے۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کی سزا کیخلاف اپیل دائر کی جائے گی۔

اجلاس میں وزیر داخلہ رانا ثنا، وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال، وزیر ہوابازی سعد رفیق، وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب و دیگر رہنما بھی شریک ہوئے۔ اجلاس کے بعد وفاقی وزرا مریم اورنگزیب، احسن اقبال اور رانا ثنااللہ نے میڈیا سے گفتگو کی۔ وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا کہ آئین شکنوں کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کرلیا ہے، اتحادیوں کو اعتماد میں لے کر کارروائی کریں گے، ملک میں انتشار پھیلانے کی ہر گز اجازت نہیں دیں گے، ملک میں گالی اور بدتمیزی کا کلچر فروغ دیا جارہا ہے۔ رانا ثنا نے کہا کہ موجودہ سیاسی صورت حال سےنمٹنے کیلئے نوازشریف نے بہترین رہنمائی کی ہے، اجلاس میں ہونے والے فیصلے اتحادیوں سے منظور کرائیں گے۔ اس موقع پر صحافی نے سوال کیا کہ کیا عمران خان کوگرفتارکیا جائےگا؟ جس پر رانا ثنا نے جواب دیا کہ جس کی گرفتاری بنتی ہے اسے گرفتار کریں گے۔ رانا ثنا اللہ کا مزید کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کا واضح مؤقف رہاہے کہ الیکشن قبل از وقت ہونے چاہئیں، الیکشن کرانے کے فیصلے کا اختیار مسلم لیگ ن کے پاس نہیں ہے، الیکشن کا فیصلہ اس فورم کے پاس ہے جہاں تمام سربراہ ہیں، اتفاق رائے سے جو فیصلہ ہوگا ہم اس کے پابند ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سائبر کرائم قوانین کو مضبوط کر رہے ہیں تاکہ ان لوگوں کو ریگولیٹ کیا جائے، آئی ایم ایف کے پاس پہلے دن سے گئے ہوئے ہیں، فیصلہ ہواہے معیشت کی صورتحال کو ٹھیک کرنا ہے ، یہ گند جو اس نے ڈالا ہے اسے بے نقاب بھی کرنا ہے لوگوں کو بتانا ہے۔ رانا ثنا اللہ نے کہا کہ نواز شریف ہر قیمت پر واپس جائیں گے وہ جانا چاہتے ہیں، ڈی جی آئی ایس پی آر کا بیان قومی تقاضوں کے مطابق ہے، فواد چوہدری کے ہتک آمیز بیان کی مذمت کرتے ہیں۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ سابق حکومت کی گند کو سامنے لایاجائےگا، کیسز تو بہت چھوٹی چیز ہے، قوم کے ساتھ جویہ کر کے گئے ہیں قوم کے سامنے لایا جائے گا، انتخابی اصلاحات کریں گے، اوورسیز پاکستانیوں کی نمائندگی کا طریقہ کار بنائیں گے، ووٹنگ مشین اڑا دیں گے، ختم کریں گے، فرح کو واپس لائیں گے۔ اس موقع پر مریم اورنگزیب نے کہا کہ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ نواز شریف کی سزا کے خلاف اپیل کی جائے گی۔ احسن اقبال نے بھی رانا ثنا کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت گزشتہ دورِ اقتدار کے سبب سنگین صورتِ حال سے دوچار ہے، آنے والے چند دنوں میں واضح ہو جائے گا کہ آج کے مشاورتی اجلاس میں کیا اہم فیصلے ہوئے۔ خیال رہے کہ وزیراعظم شہباز شریف کی قیادت میں ن لیگ کا وفد نواز شریف سے ملاقات کیلئے گزشتہ روز لندن پہنچا تھا اور کل ہی ملاقات کا پہلا دور بھی ہوا تھا۔

Categories
پاکستان

موجودہ ملکی سیاسی صورتحال،نواز شریف بھی میدان آگئے،بڑا بیان جاری کر دیا

لندن(ویب ڈیسک) سابق وزیراعظم و مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف نے کہا ہے کہ عمران خان سے آئندہ الیکشن میں مکمل جان چھوٹ جائے گی۔ لندن میں میڈیا سے گفتگو میں نواز شریف کا کہنا تھاکہ شہباز شریف کل لندن پہنچیں گے جہاں اہم امور پر بات چیت ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ حکومت سر سے

پاؤں تک بحران پیدا کر کے گئی ہے اور عمران خان کی حکومت نے سیاسی، معاشی، اقتصادی اورآئینی معاشرتی بحران پیدا کردیا ہے۔ ان کا کہنا تھاکہ پاکستان تحریک انصاف نے ہمارا قومی کلچر ہی بگاڑ دیا، پاکستان میں 70 سال میں پہلی بار ایسا کلچر دیکھ رہے ہیں۔ نواز شریف کا کہنا تھاکہ عمران خان نے وہ تباہی مچائی ہے جس کی مثال نہی ملتی، شکر ادا کرو کہ عمران خان سے جان چھوٹی، عمران خان سے آئندہ الیکشن میں مکمل جان چھوٹ جائے گی۔دوسری طرف) مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف سے اہم امور پر مشاورت کے لیے وزیراعظم شہباز شریف وفد کے ہمراہ لندن روانہ ہو گئے۔ مسلم لیگ ن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف کو بعض معاملات پر پارٹی رہنماؤں مشاورت کرنی ہے اور ن لیگ بڑا فیصلہ کرنے جا رہی ہے۔ ذرائع کے مطابق نواز شریف نے ویڈیو لنک پر اجلاس کی تجویز مسترد کر دی تھی، ملاقات میں آئندہ الیکشن، پنجاب کابینہ اور پاور شیئرنگ سے متعلق اہم فیصلے کیے جانے کا امکان ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں پر لائحہ عمل سے متعلق بھی نوازشریف اور اسحاق ڈار سے مشاورت ہو گی۔ حکومت پر الیکشن کے لئے دباؤ بڑھ گیا اور مشکل معاشی فیصلے سے مقبولیت میں کمی سے ن لیگ قیادت پریشان ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم شہباز شریف ن لیگ کی سینئر قیادت کے ہنگامی اجلاس میں شرکت کیلئے رات لندن روانہ ہوئے ، اجلاس میں نوازشریف لیگی رہنماؤں سے الیکشن کیلئے بڑھتے دباؤ پر مشاورت کریں گے۔ بعض لیگی رہنماؤں نے نواز شریف کوفوری انتخابات میں جانے کا مشورہ دے دیا جبکہ الیکشن اصلاحات میں تاخیر پر بھی بعض رہنماؤں نے تحفظات کا اظہار کیا ہے۔ خیال رہے نوازشریف نے لندن میں ن لیگ کی سینئر قیادت کا ہنگامی اجلاس طلب کرلیا ،

شاہدخاقان عباسی پہلے سےہی ملک سے باہر ہیں جبکہ احسن اقبال ، مریم اورنگزیب ، سعدرفیق ، خرم دستگیراوردیگر رہنما لندن میں ہونیوالےاجلاس میں شرکت کریں گے۔ اجلآس میں موجودہ معاشی اور سیاسی صورتحال پر مشاورت ہوگی اور پی ٹی آئی کے لانگ مارچ کے حوالے سے حکمت عملی بھی طے کی جائے گی۔

Categories
پاکستان

نواز شریف کا وہ گناہ جس کا کفارہ وہ اس دور حکومت میں کر سکتے ہیں ،اشتعال انگیز سیاست سے کنارہ کیوں ضروری ہے،سینئر صحافی انصار عباسی نے بڑے خطرے سے آگاہ کر دیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک)سینئر صحافی انسار عباسی اپنے کالم میں لکھتے ہیں کہ گزشتہ ماہ 28 اپریل کو وفاقی شرعی عدالت نے تقریباً 20 سال کے بعد سود کے خلاف فیصلہ دیا اور وفاقی حکومت کو حکم دیا کہ پانچ سال کے اندر نظامِ معیشت کو سود کی لعنت سے پاک کیا جائے۔ دیر آید درست آید۔1992 میں سود کے خلاف

وفاقی شرعی عدالت نے اپنا فیصلہ سنایا تھا لیکن اُس وقت کی نواز شریف حکومت نے اُس فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا اور پھر یہ معاملہ عدالتوں میں گزشتہ 30 برس گھومتا رہا اور یوں پاکستان کی معیشت اور اس کی عوام کی بڑی تعداد سود جیسے بڑے گناہ میں کسی نہ کسی طرح مبتلا رہی۔ سود کے خلاف 1992 کے فیصلے پر عملدرآمد کی بجائے اُسے چیلنج کرنے کا فیصلہ اُس وقت کی نواز شریف حکومت کا ایک ایسا گناہ ہے جس کا نواز شریف کے پاس کفارہ ادا کرنے کا سنہری موقع ہے۔ آج پاکستان کے وزیر اعظم شہباز شریف ہیں جو نواز شریف کے چھوٹے بھائی ہیں اور اُن کا تعلق اُسی ن لیگ سے ہے جس کی سربراہی میاں نواز شریف کر رہے ہیں۔ سود کتنا بڑا گناہ ہے اس بارے میں میاں صاحب کو خوب معلوم ہو گا اس لیے میری اُن سے درخواست ہے کہ وزیر اعظم شہباز شریف کو سختی سے ہدایت جاری کریں کہ وہ شرعی عدالت کے فیصلے پر سنجیدگی سے جلد از جلد عملدآمد کروانے کے لیے اقدامات کریں تاکہ پاکستان کی قوم کو اس لعنت سے چھٹکارا مل سکے۔ یہ میرا ایمان ہے کہ اس لعنت سے ہم جان چھڑائیں گے تو اس سے پاکستان اور عوام دونوں خوشحال ہوں گے۔ میں نے چند دن پہلے اس بارے میں وزیر اعظم شہباز شریف سے بھی بات کی اور اُنہیں یہی باور کروایا کہ اُس گناہ کو جو 1992 میں نواز حکومت سے سرزد ہوا، اُس کا اُن کے پاس کفارہ ادا کرنے کا بہترین موقع ہے جسے کسی صورت بھی ضائع نہیں کیا جانا چاہیے۔ یہاں میں پاکستان کی سیاست میں بڑھتی ہوئی نفرت اور انتشار کے متعلق محترم مفتی محمد تقی عثمانی کے حالیہ بیان کو قارئینِ کرام کے لیے پیش کر رہا ہوں اس امید کے ساتھ کہ

ہو سکتا ہے کہ مفتی صاحب کی بات ہی کسی کو سمجھ آ جائے ۔ عید کے موقع پر اپنے خطاب میں سیاسی قیادت اور قوم کے نام اہم پیغام میں مفتی صاحب نے کہا: ’’ــہاتھ جوڑ کر کہتا ہوں کہ خدا کے لئے نفرتوں کے بیج بونا ختم کردو، اسی جذباتیت اور گالی گلوچ کی وجہ سے آدھا ملک ہم گنوا بیٹھے، اب آدھا رہ گیا ہے، خدا کے لئے اس کی تو حفاظت کرلو! ہمارے معاشرے کے درمیان نفرتیں پھیلائی جارہی ہیں، اشتعال انگیز یاں کی جارہی ہیں، ایک دوسرے پر حملوں کی تیاریاں ہورہی ہیں، بلکہ حملے کئے جارہے ہیں، اور مسلمانوں کی جو وحدت ہے اس کو پارہ پارہ کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ دنیا میں سیاسی اختلافات کہاں نہیں ہوتے، لیکن ان اختلافات کو دشمنیوں میں تبدیل کردینا، عداوت میں تبدیل کردینا، ایک دوسرے کے خون کا پیاسا ہوجانا ہرگز درست نہیں۔ یاد رکھو! یہ سیاسی اختلافات کوئی کفر و اسلام کا معرکہ نہیں، لیکن ایک دوسرے پر جھوٹے الزامات لگانا، ایک دوسرے کو ایسے مطعون کرنا جیسے وہ اسلام کے دائرے سے ہی خارج ہے، وہ ہمارا مسلمان بھائی ہی نہیں ہے، افسوس ہے کہ سارا رمضان ہمارا اس آفت میں گزرا ہے، کیا یہ پاکستان اس لئے بنا تھا کہ ہم ایک دوسرے کے گلے کاٹیں۔ اختلاف کو اختلاف کی حد میں رکھیں، آپ کا جو سیاسی نظریہ ہو، اعتدال کو، سنجیدگی کو، متانت کو، سمجھ بوجھ کر اختیار کریں، اور جذباتیت کا خاتمہ کریں، ٹھنڈے دل و دماغ سے سوچیں، ٹھنڈے دل و دماغ سے فیصلے کریں۔ ہم نے اگراپنا یہ رویہ تبدیل نہ کیا، تو پھر یاد رکھو کہ جس طرح اللّٰہ تبارک وتعالیٰ نے اپنی رحمت سے ہمیں پاکستان عطا فرمایا، خطرہ ہے کہ وہ کہیں ہم سے یہ نعمت چھین نہ لے، آدھا ملک ہم گنوا بیٹھے اسی جذباتیت کی وجہ سے، اسی گالی گلوچ کی وجہ سے،

اسی ناسمجھی کی وجہ سے، اب آدھا رہ گیا ہے، خدا کے لئے اس کی تو حفاظت کرلو! جو بات زبان سے نکالو وہ سولہ آنے سچی ہونی چاہئے، دوسروں پر الزام تراشی سے پہلے سوچ لو کہ کیا تم اللّٰہ کے پاس جاکر اس الزام کو ثابت کرسکو گے، اگر نہیں ثابت کرسکوگے تو جہنم کے انگارے تمہارا مقدر ہیں۔ اپنی زبان کو قابو میں لاؤ، اپنی سوچ کو قابو میں لاؤ، اپنی فکر کو قابو میں لاؤ، اعتدال پیدا کرو، سنجیدگی پیدا کرو، ایک دوسرے کی بات ٹھنڈے دل سے سمجھنے کا حوصلہ پیدا کرو۔ میں آپ حضرات سے اس عظیم اجتماع کے اندر یہ گزارش کرتا ہوں، یہ درخواست کرتا ہوں، ہاتھ جوڑ کر یہ کہتا ہوں کہ خدا کے لئے نفرتوں کے بیج بونا ختم کردو، نفرتوں کو اپنے دل سے نکال دو، اشتعال انگیز یاں ختم کردو، اور ٹھنڈے دل و دماغ سے اللّٰہ سے رجوع کرکے مانگو کہ یا اللّٰہ کون سا راستہ ہمارے لئے بہتر ہے، اور اسی پر عمل کرو۔‘‘

Categories
پاکستان

نواز شریف سے کون کون اور کب ملاقاتیں کرتا رہا؟ شیخ رشید نے بڑا انکشاف کر دیا

رولپنڈی(ویب ڈیسک) سابق وزیر داخلہ اور سربراہ عوامی مسلم لیگ شیخ رشید کا کہنا ہےکہ دو ووٹوں کی اکثریت سے امپورٹڈ حکومت لائی گئی، ان کی حکومت کے دنوں میں نواز شریف سے جو ملاقاتیں ہو رہی تھیں وہ اور اس وقت کے وزیراعظم عمران خان اُس سے باخبر تھے۔

صحافیوں سےگفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ سارا ملبہ ادارے پر نہیں ڈالنا چاہیے، جو لوگ سارا ملبہ ادارے پر ڈال رہے ہیں ان سے کہتا ہوں کہ ایسا مت کرو، فوج پاکستان کا بہت عظیم ادارہ ہے، ان کی بہت قربانیاں ہیں۔ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ شہباز شریف نے جوتے پالش کیے، جس کے بعد دو ووٹوں کی اکثریت سے حکومت لائی گئی، پہلے کہہ دیا تھا کہ مارچ میں ہماری حکومت کے لیے مشکلات ہیں کیونکہ نواز شریف سے جو ملاقاتیں ہو رہی تھیں میں اور عمران خان باخبر تھے، یہ سامراجی پلان بنایا گیا،دو ووٹوں کی اکثریت سے امپورٹڈ حکومت لائی گئی، اگر کل سالک اور چیمہ الگ ہوجائیں تو اکثریت ختم ہوجائے،کل باپ یا ایم کیو ایم یا جی ڈی اے کے دو تین ممبر علیحدہ ہوجائیں تو یہ ختم ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ نوازشریف نے 14 بارگالیاں دیں، شہبازشریف نے 14 بار بوٹ پالش کیے، شہبازشریف نے جوتے پالش کرکےگارنٹی دی ہے، ایک غلط طریقے سے سامراج اور بین الاقوامی طاقتوں نے جو پلان بنایا وہ الٹ ہوگیا۔

Categories
پاکستان

شدید خواہش کے باوجود نواز شریف عمرے کی ادائیگی کیلئے سعودی عرب نہیں جا پائینگے، مگر کیوں ۔۔۔۔؟؟

لندن(ویب ڈیسک) لندن میں ڈاکٹرز نے سابق وزیراعظم نواز شریف کو سفر کی اجازت نہیں دی، جس کے باعث وہ عمرے کی ادائیگی کیلئے سعودی عرب نہیں جاسکتے۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف خواہش کے باوجود عمرے کی ادائیگی کیلئے

سعودی عرب نہیں جا رہے ، ذرائع کا کہنا ہے کہ لندن میں ڈاکٹرز نے نواز شریف کو سفر کی اجازت نہیں دی۔ ذرائع نے بتایا کہ نواز شریف رمضان کا آخری عشرہ مدینہ میں گزارنے کے خواہشمند تھے۔ گذشتہ روز پاکستانی حکومت کی جانب سے سابق وزیراعظم نواز شریف کو پاسپورٹ جاری کیا گیا تھا، جاری کردہ پاسپورٹ کی مدت 10 سال ہے، ترجیحی بنیاد پر عام کیٹیگری میں جاری کیا گیا ہے۔ ذرائع نے بتایا تھا کہ نواز شریف کو ڈپلو میٹک پاسپورٹ جاری نہیں کیا گیا، حکومت کی تبدیلی کے بعد پاسپورٹ کی تجدید کی ہدایت جاری کی گئی تھی، نواز شریف اب کسی بھی وقت پاکستان کیلئے روانہ ہوسکتے ہیں۔

Categories
پاکستان

بڑے بڑوں کی چھٹی! نواز شریف نے مریم نواز کو اہم ذمہ داریاں سونپ دیں

لاہور(ویب ڈیسک) پاکستان مسلم لیگ ن کی مرکزی نائب صدر مریم نواز نے کل سے لاہور کے مختلف حلقوں کے دورے کرنے کا اعلان کردیا۔مریم نواز کا کہنا تھاکہ لاہور کے مختلف علاقوں کے دورے نوازشریف اور شہباز شریف کی ہدایت پر کروں گی۔انہوں نے کہا کہ دوروں کے دوران کارکنوں سے ملاقات کروں گی،

آج شام حلقہ این اے 128 میں افطار کے بعد کارکنوں کے درمیان ہوں گی۔ان کا کہنا تھاکہ عید کے بعد جلسوں کا شیڈول بھی تیار ہے۔

Categories
پاکستان

فارن فنڈنگ کیس میں پوری پی ٹی آئی فارغ ہو جائیگی،نواز شریف بھی بول پڑے

لندن(ویب ڈیسک) مسلم لیگ ن کے قائد اور سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ اگر پی ٹی آئی کے خلاف آیا تو پوری پارٹی ختم ہوجائے گی۔ سابق وزیراعظم نواز شریف نے لندن میں مولانا فضل الرحمان کے بھائی ضیا الرحمان سے ملاقات کے

بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ پی ٹی آئی کے خلاف آتا ہے تو پوری پارٹی ختم ہوجائے گی ممبر شپ ختم ہوجائے اس لیے پہلے سے ہی استعفے دلا دیے تاکہ لگے کہ پہلے ہی استعفے دیے تھے۔ انہوں نے کہا کہ صدر ملک کا ہوتا ہے اسے ملک کا سوچنا چاہیے، صدر کیسے حلف لینے سے انکار کرسکتا ہے، عارف علوی کے اقدام کو قوم کیسے تسلیم کرے گی۔ سابق وزیراعظم نے کہا کہ کبھی نہیں سوچا تھا کہ پاکستان اس حال کو پہنچے گا جس حال میں آج ہے، ملک میں لوگ بھوک سے مر رہے ہیں، لوگ بچوں کو پال نہیں سکتے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے بڑی محنت سے پاکستان کو کھڑا کیا تھا اسحاق ڈار نے معیشت کھڑی کی، نواز شریف نے عمران خان کا نام لیے بغیر کہا کہ اس شخص نے زمین بوس کردی۔ ن لیگی قائد نے کہا کہ اس نے الیکشن سے پہلے بھی جھوٹے وعدے کیے اور اس کے بعد بھی جھوٹے وعدے کیے گئے۔

Categories
پاکستان

مشن لندن!بلاول بھٹو آج نواز شریف سے ملاقات میں کونسے اہم معاملات نمٹائیں گے

لندن(ویب ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کا وفد آج چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی قیادت میں قائد مسلم لیگ (ن) میاں نواز شریف سے لندن میں ملاقات کرے گا ۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیر خزانہ و سینئر رہنما مسلم لیگ (ن) اسحاق ڈار نے میڈیا سے بات کر تے ہوئے کہا کہ

میاں نواز شریف سے ملاقات کیلئے پاکستان پیپلز پارٹی نے رابطہ کیا تھا ، ملاقات کیلئے پی پی پی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری لندن پہنچ چکے ہیں اور ان کا وفد آج ملاقات کیلئے پہنچے گا۔ وفد میں بلاول بھٹو زرداری کے ساتھ سید خورشید شاہ ، سید نوید قمر ، شیری رحمان اور قمر زمان کائرہ شامل ہونگے ۔ اسحاق ڈار نے سوالات کے جوابات دیتے ہوئے کہا کہ پیپلزپارٹی کا وفد میاں نواز شریف کو مبارک باد دینے کیلئے آ رہا ہو گا ، ہماری بھی خواہش ہے کہ انتخابات کا انعقاد جلد سے جلد ہو لیکن دیکھنا یہ ہو گا کہ عملی طور پر یہ کب ممکن ہو سکتا ہے کیونکہ جنرل الیکشن نئی حلقہ بندیوں کے بغیر نہیں ہو سکتے ۔اسحاق ڈار نے کہا کہ صدر عارف علوی کو ہٹانے کیلئے 298 ووٹ چاہئے، مجھے نہیں لگتا کہ ابھی صدر کے مواخذہ کے چانس ہیں ، میرے چیئرمین سینٹ بننے والا آئٹم ایجنڈے پر نہیں ہے ،کل سے سوشل میڈیا پر میرے چیئرمین سینٹ بننے کی خبریں گردش کر رہی ہیں۔

Categories
اسپیشل سٹوریز

عمران خان کے ساتھ بھی وہی ہو سکتا ہے جونواز شریف کے ساتھ ہوا،حامد میر نے سابق وزیر اعظم کے مستقبل کا اشارہ دیدیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک) تجزیہ کار حامد میر نے دعویٰ کیا ہے کہ عمران خان کے ساتھ بھی وہی ہو سکتا ہے جو نواز شریف کے ساتھ کیا گیا تھااور جس طرح ان کے جلسوں پر پاپندی لگائی گئی تھی وہی پاپندی عمران خان پر بھی لگ سکتی ہے۔ نجی ٹی وی جیو نیوز

کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے انہوں نےکہا کہ عمران خان الیکشن کی طرف نہیں جا رہے بلکہ وہ اپنی بقا کی جنگ لڑ رہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ خاص کر پچھلے ایک سال میں عمران خان نے کیاکیا نظام بنا رکھا تھا وہ سب کھل کر سامنے آ رہا ہے اور کچھ چیزیں ایسی بھی سامنے آئیں گی جن کی جھلکیاں آپ دیکھ بھی چکے ہیں۔ابھی ان کے خلاف امریکہ میں ایک کیس کھلنے جا رہا ہے اور بھی بہت سے معاملات ہیں۔سینئر صحافی کا کہنا تھا کہ عمران خان نےپہلے سپریم کورٹ اورپھر فوج کو اندر سے توڑںے کی کوشش کی۔ان کا کہنا تھا کہ شیریں مزاری نے ڈی جی آئی ایس پی آر کے اس بیان کی تردید کی کہ عمران خان نے فوج سے تین باتوں کا کہا تھا اور ان کا کہنا تھا کہ عمران خان نے پرویزخٹک کے ذریعے فوج سے بات کی ہے جس کا میں پہلے بھی آپ کو بتا چکا ہوں کے عمران خان نے پرویز خٹک کے ذریعے ہی فوج سے کہا تھا کہ مجھے اس صورتحال سے نکالا جائےتو مجھے یہ بتائیں کہ پرویز خٹک کی بجائے شیریں مزاریٰ کیوں بول رہی ہیں؟اگر ان کو سچ بولنے کا اتناہی شوق ہےتو بتا دیں جرنلسٹ پروٹیکشن بل کے راستے میں کون رکاوٹ بن رہا تھا؟کون وزیراعظم کو کہتا تھا کہ اس بل کو پاس نہ کریں؟ یہ بھی بتا دیں کے کس نے دفتر میں بلا کر شیریں مزاری سے کہا کہ یہ کام نہ کریں؟ حامد میرکا حکومت کے حوالے سے کہنا تھا کہ اگر تمام اتحادی کابینہ میں شامل ہو گئے تو یہ حکومت اپنی مدت پوری کر سکتی ہے۔