کیا آ پ اب بھی شاہد آفریدی کے لاڈلے ہیں ؟صحافی کے سوال پر احمد شہزاد کاناقابل یقین جواب، کرکٹ شائقین کے کام کی خبر

لاہور(ویب ڈیسک)معروف کرکٹر احمد شہزاد نے کہا ہے کہ کسی کا لاڈلا ہونا کوئی برائی کی بات نہیں ہے ،وہ شاہد آفریدی کی بہت عزت کرتے ہیں لیکن اب ملاقات کم ہی ہوتی ہے ۔نجی نیوز چینل سما نیوز کے پروگرام میں صحافی نے سوال کیا کہ آپ ماضی میں شاہد آفریدی کے بہت لاڈلے تھے

لیکن پھر ان تعلقات میں کمی دیکھنے میں آئی ،ایسا کیوں ؟اس پر جواب دیتے ہوئے احمد شہزاد نے کہا کہ کسی کا لاڈلہ ہونے میں کوئی برائی نہیں ہے ،میں شاہد بھائی کی بہت عزت کرتا ہوں اور ان سے پیار بھی کرتا ہوں ،اسی لیے وہ بھی مجھ سے پیار کرتے ہیں ،آج کل میں ٹیم میں کم بیک کے لیے محنت کر رہا ہوں اور شاہد آفریدی اپنی فاونڈیشن کے لیے دن رات کام کر رہے ہیں اس لیے ملاقات نہیں ہو پاتی ۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی نے اپنی نومولود بیٹی کا نام ’عروہ‘رکھ دیا ہے- دو روز قبل قومی ٹیم کے 38 سالہ سابق کپتان شاہد آفریدی کے گھر پانچویں بیٹی کی پیدائش ہوئی تھی جس کی اطلاع انہوں نے اپنے چاہنے والوں کو سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹویٹر پر دی تھی- بیٹی کی پیدائش کے بعد شاہد آفریدی نے آج اس کا نام رکھا دیا ہے- سابق کپتان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں لکھا کہ’’آپ لوگوں نے میری بیٹی کے لیے جو نام تجویز کیے تھے وہ سب میں نے پڑھے،آپ سب کا شکریہ، ان کا مزید کہنا تھا کہ اب سسپینس ختم ہوچکا اور میں نے اپنی بیٹی کا نام ’عروہ‘ رکھ دیا ہے‘‘-سابق کپتان نے اپنی ٹویٹ میں ان چھ لوگوں کو بھی مینشن کیا اور مبارک باد دی جنہوں نے ان کی بیٹی کا نام عروہ تجویز کیا تھا-یاد رہے کہ شاہد آفریدی نے گزشتہ روز ٹویٹر پر اپنی بیٹی کے نام کے لیے مداحوں سے مشورہ مانگا تھا- انہوں نے اپنے ٹویٹ میں لکھا کہ ’آپ لوگ کوئی ایسا نام تجویز کریں جو A سے شروع ہوتا ہو، شاہد آفریدی نے لکھا تھا کہ وہ جس کا بھی تجویز کردہ نام رکھیں گے اسے انعام بھی دیں گے، ان کے اس اعلان کے بعد سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے ان کو بہت سے نام تجویز کیے تھے-