خود کش بمبار کو ٹارگٹ پر جانے سے قبل کیسے تیار کیا جاتا ہے؟ تہلکہ خیز انکشافات

صوبائی دارالحکومت کراچی میں گرفتار ہونے والے دہشت گرد نے خودکش بمبار کو تیار کرنے کے لیے مہلک دوائیں استعمال کرنے کا انکشاف کیا ہے . نجی ٹی وی نیوز کے مطابق خودکش بمبار نے انکشاف کیا ہے کہ ٹارگٹ پر جانے سے قبل بمبار کو مختلف انجکشن لگائے جاتے اور رقم کا

لالچ دیا جاتا ہے .گزشتہ دنوں سی ٹی ڈی آپریشن ٹو کے ہاتھوں گرفتار ہونے والے دہشت گرد فہیم عرف محمد صاحب نے بیان دیا ہے کہ خودکش بمبار کو گروپ میں شمولیت کے وقت سر میں انجکشن لگایا جاتا ہے. انجکشن لگنے کے بعد خود کش بمبار نیم غنودگی کی حالت میں چلا جاتا ہے .انٹروگیشن رپورٹ کے مطابق دہشت گرد نے کہا کہ اسے حملے کی تیاری سے قبل بھی ہونٹ کے اندرونی حصے پر کٹ لگا کر ایک انجکشن لگایا گیا تھا، جس کے بعد مجھے خوشی محسوس ہو رہی تھی اور نظریں صرف ٹارگٹ پر تھیں. دہشت گرد کے مطابق ہمارے گروپ لیڈر نے مارے جانے کی صورت میں ڈیڑھ لاکھ افغانی روپے دینے کا کہا تھا. دہشت گرد نے افغانستان سے پاکستان آنے کے لیے افغان پاسپورٹ بھی بنا رکھا تھا.واضح رہے کہ دہشتگرد اس کے علاوہ بھی مختلف طریقے استعمال کرتے ہیں.