You are here
Home > اسپشیل اسٹوریز > متفرق واقعات > اگر آپ الیویرا کوایک ناکارہ پودہ خیال کرتے ہیں تو آپ غلط ہیں، اس کے حیرت انگیز فوائد جانیئے اس خبر میں

اگر آپ الیویرا کوایک ناکارہ پودہ خیال کرتے ہیں تو آپ غلط ہیں، اس کے حیرت انگیز فوائد جانیئے اس خبر میں

کراچی(ویب ڈیسک) بزرگوں اور نوجوان کی بڑی تعداد تیزی کے ساتھ جوڑوں کے درد کی بیماری میں مبتلا ہورہی ہے، کیا آپ جانتے ہیں کہ اس تکلیف دہ بیماری کا علاج الیوویرا سے ممکن ہے۔تفصیلات کے مطابق اکثر لوگوں کو جوڑوں کے درد کی شکایت رہتی ہیں ، پہلے یہ بیماری صرف بزرگوں کو لاحق ہوتی تھی تاہم اب نوجوان اور بچے بھی تیزی کے ساتھ اس سے متاثر ہورہے ہیں۔

طبی ماہرین کے مطابق جوڑوں کے درد کی بیماری کی وجہ ہڈیوں کا کمزور ہونا یا وٹامنز کی کمی ہے، اس درد کو دائمی بیماری کہا جاتا ہے جس کو دور بھگانے کے لیے ہرصورت ادویات استعمال کرنی پڑتی ہے تاہم جیسے ہی ان کا استعمال روک دیا جاوے تو درد کی شدت میں اضافہ ہوجاتاہے۔آئیں ہم آپ کو بتاتے ہیں الیوویرا کے پودے میں جہاں کئی بیماریوں کو دور بھگانے کی صلاحیت ہے وہی یہ پودا جوڑوں اور عرق النسا کے درد سے نجات دلوانے میں کافی مدد گار ثابت ہوتا ہے۔اے آر وائی نیوز کے پروگرام میں الیوویرا کے فوائد بتاتے ہوئے حکمت سے وابستہ معروف شخصیت بلقیس نے کہا کہ عام طور پر الیوویرا کھانے والے لوگوں کو شکایت ہوتی ہے کہ انہیں السر یا پھر کوئی پیچیدہ بیماری لاحق ہوگئی۔انہوں نے بتایا کہ جب الیوویرا کا پتہ توڑا جاتا ہے تو اس میں سے پیلا تیل نکلتا ہے جسے عام طور پر لوگ خوراک کے لیے استعمال کرلیتے ہیں جبکہ یہ تیل مضرِ صحت ہے اور چیزوں کو گلانے کے کام آتا ہے۔الیوویرا کا پتہ چھری کی مدد سے کاٹ کر علیحدہ کر لیں اور پھر اُسے اچھی طرح پانی سے دھوئیں، بعد ازاں اس کے دونوں کنارے کاٹ دیں تاکہ پیلا تیل بند ہوجائے۔اگلے مرحلے میں اس کا چھلکا اتار کر اندر سے دیڑھ انچ کا ٹکڑا نکالیں اور اُسے نہار منہ پانی کے ساتھ نگل لیں یا پھر سوکھے الیورا کو لے کر اُس میں یہ ٹکڑا ڈالیں اور گرینڈر کی مدد سے پیس کر اسے استعمال کریں۔الیوویرا کے فوائد بتاتے ہوئے بلقیس آپا نے کہا کہ اگر اس کے ساتھ دیسی مکھن اور گھی کا استعمال کیا جائے تو یہ موٹاپے کو دور بھگانے میں بھی بہت مفید ثابت ہوتا ہے۔

Top