فیس بک کا گوگل کےخلاف جنگ کا اعلان ؟کاروباری دنیا ہکا بکا رہ گئی ،نیا فیچر متعارف

کیا فیس بک نے گوگل کے خلاف جنگ کا اعلان کر دیا ہے ؟ فیس بک جس نئے فیچر کو متعارف کر ارہا ہے اس سے تو کاروباری دنیا یہی سمجھ رہی ہے کہ سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک نے اپنے صارفین کو گوگل استعمال کرے سے روکنے کے لیے ایک نیا فیچر متعارف کر انے کا فیصلہ کر لیا ۔فیس بک کی جانب سے ایک نیا فیچر متعارف کر ایا

جارہا ہے جس کے ذریعے صارفین گوگل پر جانے کے بجائے سماجی رابطے کی اس ویب سائٹ سے ہی مطلوبہ سرچ کر یں گے ۔ یہ فیچر اس وقت آزمائشی بنیادوں پر امر یکا میں منتخب صارفین کے لیے پیش کر دیا گیا ہے اور بہت جلد دنیا بھر میں صارفین کے سامنے بھی متعارف کر ایا جائے گا ۔اس وقت فیس بک پر کسی لنک کو شئیر کر نے کے لیے صارفین کو تو یہ مطلوبہ سائٹ پر جاکر شئیر لنک کا بٹن کلک کرنا پڑتا ہے یا اس پیچ کا لنک فیس بک پر و فائل پر کاپی پیسٹ کرنا پڑتا ہے تاہم اب نئے فیچر کے ذریعے صارفین اپنی پسند کا مو اد ٹائپ کر کے اسے فیس بک کے نئے ایڈ اے لنک بٹن کے ذریعے شئیر کر سکیں گے ۔ فیس بک کاکہنا ہے کہ ہم بہت جلد ایڈ اے لنک نامی بٹن متعارف کر انے جارہے ہیں جس کے ذریعے صارفین فیس بک پر دیگر سائٹس کا مو اد وہاں جائے بغیر ہی شئیر کر سکیں گے ماہرین کہا کہنا ہے کہ اس فیچر کے نتیجے میں صارفین کو گوگل یا دیگر سرچ انجنز پر مواد تلاٹ کرنے کی ضرورت نہیں پڑے گینیویارک(نیوز ڈیسک) اللہ تعالیٰ نے شہد میں بہت سی خصوصیات رکھی ہیں جو انسان کو بہت زیادہ فائدہ پہنچاتی ہیں لیکن کیا آپ کو معلوم ہے کہ شہد کی مکھی کے ڈنگ میں بھی ایک خاصیت موجود ہے جو کئی بیماریوں کے لئے مفید ہے۔ماہرین صحت شہد کی مکھیوں کے ڈنگ سے کئی بیماروں مثلاًآرتھرائسس،فائبرومیلگیاوغیرہ کا علاج بھی کرچکے ہیں۔جو لوگ شہد کی مکھیوں سے بیمار افراد کا علاج کرتے ہیں وہ اس مقصد کے لئے مکھیاں پالتے ہیں اور بضرورت ان سے بیمار افراد کو ڈنگ مرواکر ان کا علاج کرتے ہیں۔آپ کو یہ جان کر حیرت ہوگی کہ بعض اوقات علاج کی خاطر مریض کوایک دن میں درجنوں بار ڈنگ مروایا جاتا ہے تاکہ ان کی بیماری دور ہوسکے۔ایک خاتون جس نے ایک دن میں 80ڈنگ مروائے کا کہنا تھا کہ اس کی وجہ سے اس کے جوڑوں کا درد کم ہوگیا ہے۔ مشرقی یورپ میں کچھ ڈاکٹرز شہد کی مکھیوں کے ڈنگ کے زہر کے انجیکشن بھی لگاتے ہیں۔1988ئ میں یونان کی یونیورسٹی میں چوہوں پرکی گئی تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ شہد کی مکھیوں کے ڈنگ سے چوہوں میں ہڈیوں کی بیماری بہت کم ہوگئی۔جنوبی کوریا کی یونیورسٹی میں کی گئی تحقیق میں یہ علم ہوا کہ اس ڈنگ میں یہ خاصیت بھی موجود ہے کہ یہ سوجن کو کم کرتا ہے۔ تاہم کچھ تحقیقات میں نتائج مختلف آئے اور ماہرین کا کہنا ہے کہ شہد کی مکھیوں کے ڈنگ میں کوئی افادیت نہیںاور جن لوگوں کو اس سے الرجی ہو وہ ڈنگ کھانے کے بعد کئی طرح کی انفیکشن کا شکار ہوجاتے ہیں۔