Categories
پا کستا ن

2018 سے ابتک روپے کی قدر میں کتنی کمی ہوئی، قرضوں میں کتنا اضافہ ہوا،،خوفناک حقائق سامنے آگئے

اسلام آباد(ویب ڈیسک)ملکی معیشت کی حالت انتہائی خراب ہے جو ہر گزرتے دن کے ساتھ مزید خراب ہوتی جا رہی ہے،پیپلز پارٹی کی اہم رہنما شیری رحمان نے روپے کی مسلسل گرتی قدر پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا ہے،جن کا کہنا ہے کہ حکومت نے اپنی ہی نااہلی کا ایک اور ریکارڈ توڑ دیا،

گزشتہ بیس دنوں میں روپے کی قدر میں چھ اعشاریہ دو روپے کی کمی واقع ہوئی ہے۔نائب صدر پیپلزپارٹی و سینیٹر شیری رحمان نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ دو ہزار اٹھارہ سے اب تک روپے کی قدر میں پچاس روپے سے زیادہ کمی ہوئی ہے، اورکوئی تعجب نہیں کہ اس ہفتے پاکستان کے قرضوں اور واجبات کا حجم 5.5 کھرب تک پہنچ گیا ہے، معیشت وینٹی لیٹر پر ہے لیکن آپ نے گھبرانا نہیں۔شیری رحمان نے کہا ہے کہ مارکیٹ میں بے اعتمادی اور روپے کی غیر مستحکم صورتحال معیشت کے لئے تباہ کن ہے، معیشت کی ایسی غیر یقینی کی صورتحال تاریخ میں نہیں دیکھی، معیشت اب آئی ایم ایف کے حوالے کی گئی ہے، معیشت کا دیوالیہ ہو چکا ہے لیکن آپ نے گھبرانا نہیں۔