You are here
Home > پا کستا ن > اسلام آباد کی سیکیورٹی کیلئے ڈیجیٹل نظام سے لیس کتنی گاڑیاں خریدنے کا فیصلہ کر لیا گیا؟ جان کر یقین کرنا مشکل

اسلام آباد کی سیکیورٹی کیلئے ڈیجیٹل نظام سے لیس کتنی گاڑیاں خریدنے کا فیصلہ کر لیا گیا؟ جان کر یقین کرنا مشکل

اسلام آباد (ویب ڈیسک) حکومت نے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کی سیکیورٹی کیلئے ڈیجیٹل نظام سے لیس 100 گاڑیاں خریدنے کا فیصلہ کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی کابینہ کے اجلاس میں گاڑیوں کی خریداری کے لیے بجٹ کے معاملہ پر بحث ہوئی ، اس دوران معاون خصوصی ڈاکٹر عشرت حسین نے تجویز دی کہ گاڑیوں کی خریداری کے لیے سی ڈی اے سے پیسے لے لیں۔

بتایا گیا ہے کہ اس موقع پر وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا کہ اسلام آباد میں 33 میں سے 30 ناکے ختم کر دیے گئے ہیں ، جب کہ نئی جدید 100 گاڑیاں آنے کے بعد شہر میں سے مزید 3 چیک پوسٹوں کو بھی ختم کر دیں گے ، اس وقت بھی روایتی ناکوں کے نظام کو ختم کر کے ٹیکنالوجی کی مدد سے پیٹرولنگ کی جارہی ہے۔ ذرائع کے مطابق کابینہ اجلاس کے دوران وزیر اعظم عمران کان کی جانب سے وزارت داخلہ کو ڈیجیٹل سیکیورٹی نظام کو جلد از جلد مکمل کرنے کی ہدایت کردی گئی۔

اس کے علاوہ وفاقی کابینہ نے ملازمین کی تنخواہیں بڑھانے کی سمری بھی منظور کرلی، تنخواہوں میں اضافہ مارچ سے نافذالعمل ہوگا، گریڈ 21 سے 22 کے ملازمین کی تنخواہیں بجٹ میں بڑھانے پر اتفاق کیا گیا ، تفصیلات کے مطابق اس موقع پر بعض وزراء نے سرکاری ملازمین کی تنخواہیں بڑھانے کی مخالفت بھی کی ، ان کا کہنا تھا کہ ملازمین کی تنخواہوں میں فوری اضافے سے خزانے پر بوجھ بڑھے گا۔

تنخواہوں میں اضافے پر وفاقی کابینہ کو دی گئی بریفنگ میں بتایا گیا کہ تنخواہوں میں اضافہ کرنے سے 21 ارب روپے سالانہ خرچ آئےگا ، سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں پےاینڈ پنشن کمیشن کی سفارشات کی روشنی میں فرق کم کیا جا رہا ہے ، گریڈ ایک سے 19 کے وفاقی ملازمین کی بنیادی تنخواہ جبکہ گریڈ 21 سے 22 کے ملازمین کی تنخواہیں بجٹ میں بڑھائی جائیں گی ، سمری میں بتایا گیا کہ 17 وفاقی اداروں پی ایم سیکرٹریٹ، نیب، سپریم کورٹ، پارلیمنٹ و دیگر کے ملازمین اضافے سے مستفید نہیں ہوسکیں گے۔


Top