You are here
Home > پا کستا ن > عمران خان کی اکبر ایس بابر کو بڑے عہدے کی پیشکش! پارٹی فنڈنگ کیس سے دستبرداری کا کیا انعام دیا جائے گا؟ سب کچھ سامنے آگیا

عمران خان کی اکبر ایس بابر کو بڑے عہدے کی پیشکش! پارٹی فنڈنگ کیس سے دستبرداری کا کیا انعام دیا جائے گا؟ سب کچھ سامنے آگیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) پاکستان تحریک انصاف کے بانی رہنما اور پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کیس کے پٹیشنر اکبر ایس بابر نے انکشاف کیا کہ وزیراعظم عمران خان کے ایک معتمد خاص نے رابطہ کر کے پیشکش کی ہے کہ وہ فارن فنڈنگ کیس سے دستبرار ہو جائیں جس کے بدلے انہیں ان کی پسند کا کوئی بھی حکومت یا پارٹی عہدہ دینے کے لیے تیار ہیں۔

پاکستان تحریک انصاف کے ترجمان نے اکبر ایس بابر کے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ اکبر ایس بابر سے کوئی رابطہ کیا گیا۔اور نہ ہی انہیں کسی عہدے کی پیشکش کی گئی ہے۔وہ گذشتہ آٹھ سال سے پارٹی کو بلیک میل کر رہے ہیں اور چاہتے ہیں کہ ان کی پارٹی میں واپسی کا کوئی حقیقت نہیں ہے۔وہ مسترد شدہ ٹولے کے ایما پر تحریک انصاف کے خلاف سرگرم ہے۔

اکبر ایس بابر نے یہ انکشاف انہوں نے اتوار کو ٹوپی، صوابی میں پی ٹی آئی کے نظریاتی رہنماؤں اور ان کارکنان کے پہلے مشاورتی اجلاس سے خطاب کیا۔

قبل ازیں پاکستان تحریک انصاف کے بانی کارکن اکبر ایس بابر نے کہا ہے کہ میں نے جو بڑی جنگ شروع کی ہے اس کے لئے ہم نے پاکستان تحریک انصاف کے نام سے پارٹی بنائی تھی تاکہ ہم اس پلیٹ فارم سے معاشرے میں انصاف لا کر کڑا احتساب کیا جا سکے۔پی ٹی آئی میری اور سب ورکروں کی مشترکہ پارٹی ہے میں اس نظام کے خلاف اکیلا مقابلہ کرتا رہونگا۔

لہٰذا ملک کے عوام اور پاکستان تحریک انصاف کے کارکن میرے ساتھ اس جدوجہد میں بھر پور تعاون کریں۔اکبر ایس بابر نے کہا کہ بنیاد انصاف پر مبنی نظام لانے اور موروثی سیاست کے خلاف جدوجہد کرنا ملک سے کرپشن لاقانونیت کا خاتمہ اور سیاست میں سرمایہ کے عمل دخل کو روکنا تھا لیکن ہماری جدوجہد کو یرغمال بنا کر پارٹی کو دیگر سیاست کی طرز پر چلایا گیا باہر ملکوں سے کارکنوں نے پارٹی کو فنڈز دیا۔

 لیکن پارٹی کے اندر مافیاز نے نہ صرف فنڈز کا غلط استعمال کیا بلکہ اپنی تجوریاں بھرنے کیلئے نوجوانوں کے جزبات کو استعمال کرکے ملک کو تناہی کی نہج پر لایا عالمی سازش کے تخت پارٹی کو فنڈز لاکر پارٹی ملازمین کے اکائونٹ کو استعمال کیا۔


Top