انا للہ و انا الیہ راجعون۔۔!!!پیپلز پارٹی میں سوگ کا سماں،اہم رہنما اور سابق وزیر انتقال کر گئے

لاہور(ویب ڈیسک)پیپلزپارٹی کے سینئررہنما چودھری احمد مختار انتقال کرگئے، ان کی نماز جنازہ آج دن ڈیڑھ بجے ڈیفنس ٹی بلاک میں ادا کی جائے گی ،نجی ٹی وی چینل کے مطابق خاندانی ذرائع کاکہنا ہے کہ پیپلزپارٹی کے رہنما چودھری احمد مختار انتقال کرگئے،چودھری احمد مختاردفاع، پانی و بجلی اورتجارت کے وزیر رہ چکے ہیں ،

چودھری احمد مختار 2008 سے 2013 تک وزیر دفاع رہے ۔قبل ازیں چوہدری احمد مختارکو اُن کے عہدے سے ہٹا کرنوید قمر کو وفاقی وزیردفاع کا قلم دان سونپ دیاگیا تھا جبکہ وزیردفاع کو پانی و بجلی کی وزارت سونپ دی گئی ہے ۔بجلی کی بڑھتی ہوئی لوڈ شیڈنگ اور سعودی ڈیفنس اتاشی پر اے ایس ایف کے تشدد سمیت کئی اہم واقعات کی وجہ سے دونوں وزارتوں کے وزراءتبدیل کردیئے گئے ۔نئے وزیرپانی و بجلی احمدمختارکاکہناتھاکہ بجلی کے بحران کا حل تلاش کرنے کی کوشش کروں گاتاہم خاتمے کا ٹائم فریم نہیں دے سکتا۔اُنہوں نے کہاکہ انسان کوشش کرے تو مسئلہ حل ہوہی جاتاہے۔نئے آفس گیانہ ہی سٹاف سے ملاقات ہوئی ۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق حلقہ این اے 105میں چودھری پرویزالٰہی اوراحمدمختارایک دوسرے کے خلاف صف آرا تھے،ن لیگ کی طرف سے اورنگزیب بٹ کوٹکٹ ملنے کا امکان تھا،2008کے انتخابات میں اس سیٹ پرچودھری احمد مختارجنہیں ن لیگ کی حمایت بھی حاصل تھی79,735ووٹ لیکرجیتے تھے ان کے مقابلے میں چودھری شجاعت حسین کو 65,738 ووٹ ملے تھے۔ 2002 میں یہ سیٹ چودھری شجاعت نے 66,809 ووٹ لیکرجیتی تھی اورچودھری احمدمختار 52,632ووٹ لیکر ہارگئے تھے ۔ گیارہ مئی کے انتخابات میں چودھری احمد مختار کوسخت مشکلات درپیش ہیں کیونکہ پیپلزپارٹی کی بہت سے شخصیات جن میں سلیم سرو ر جوڑا ، اورنگ زیب بٹ ، طارق جاوید چودھری ، نوابزادہ اور سماں خاندان پارٹی کو چھوڑ کردوسری جماعتوں میں جاچکے ہیں اوران کے جانے سے پیپلزپارٹی کھوکھلی ہوچکی ہے۔