بریکنگ نیوز: کیا نوازشریف ملک واپس آرہے ہیں؟ بیگم شمیم اختر کی میت پاکستان کب پہنچ رہی ہے؟ بہت بڑی خبر آگئی

لندن (ویب ڈیسک) سابق وزیراعظم و مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف اور مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی والدہ مرحومہ بیگم شمیم اختر کی میت جمعے کو لندن سے پاکستان کیلئے روانہ کی جائے گی۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ

بیگم شمیم اختر کی میت کے جمعرات کو لندن سے روانگی کے انتظامات مکمل ہوجائیں گے اور میت جمعے کو لندن سے پاکستان بھجوائی جائے گی۔ان کا کہنا ہے کہ بیگم شمیم اختر کی میت ہفتے کی صبح لاہور پہنچائی جائے گی۔مریم اورنگزیب نے بتایا کہ مرحومہ بیگم شمیم اختر کی تجہیز وتکفین کیلئے انتظامات شروع کردیے ہیں، نماز جنازہ کے وقت اور مقام کا اعلان جلد کیا جائے گا۔گزشتہ دنوں سابق وزیر اعظم نواز شریف اور شہباز شریف کی والدہ بیگم شمیم اختر کا لندن میں انتقال ہوگیا تھا۔جیل میں قید شباز شریف اور حمزہ شریف کو 5 روز کیلئے پیرول پر رہا کیا جائے گا جبکہ ان کی رہائی بیگم شمیم اختر کی میت پہنچنے سے ایک دن پہلے ہوگی۔ ۔ تفصیلات کے مطابق نواز شریف اور شہباز شریف کی والدہ کی میت آخری رسومات کیلئے جمعرات کو لاہور کیلئے روانہ کر دی جائیگی۔ اس سلسلہ میں کاغذات مکمل کئے جا رہے ہیں۔ اس سے قبل بیگم شمیم اختر کی میت لندن کے ریجنٹ پارک کی مسجد کے سرد خانے میں منتقل کروا دی گئی تھی ۔ بیگم شمیم اختر اتوار کے روز انتقال کر گئی تھیں ۔ وہ مختلف بیماریوں میں مبتلا تھیں اور انہیں الزائمر بھی کئی سال سے تھی۔ خاندانی ذرائع کا کہنا ہے کہ اس کے سینے میں شدید انفیکشن ہو گیا اور وہ کئی دنوں سے لندن کے پرائیویٹ ہسپتال میں زیر علاج تھیں۔ سابق وزیر اعظم نواز شریف اس وقت لندن میں مقیم ہیں جہاں پر وہ علاج کی غرض سے گئے تھے اور ذرائع کا کہنا ہے کہ وہ اپنی والدہ کی میت کے ساتھ پاکستان نہیں آئیں بلکہ لندن میں ہی اپنی والدہ کی نماز جنازہ پڑھ لیں گے جبکہ سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف ان دنوں جیل میں ہیں اور حکومت پنجاب انہیں اپنی والدہ کی آخری رسومات میں شرکت کیلئے پیرول پر رہا کریگی۔