کیا یہ کھلا تضاد نہیں ۔۔۔۔۔؟؟؟ لاہور کی ہونڈا سوک والی خاتون سے زیادتی پر پورے ملک میں بھونچال اور تمام معلومات صیغہ راز ، مگر فیصل آباد کی 2 سگی بہنوں پر ہونیوالے ظلم کو کئی ہفتے گزر گئے، نام گھر کا پتہ بھی سب کے سامنے مگرکسی کر پروا نہیں ۔۔۔۔

فیصل آباد(ویب ڈیسک) قارئین کچھ ہفتے قبل لاہور کے نواح میں گجرپورہ گاؤں کے قریب لنک روڈ پر ایلیٹ کلاس کی ایک خاتون کے ساتھ افسوسناک واقعہ پیش آیا تواس پر پورے ملک میں جیسے بھونچال آگیا ، میڈیا نے معاملے کو اس قدر اٹھایا کہ پوری دنیا میں اسکی گونج سنائی دی

، اس قدر ہائی لایٹ ہونے کے باوجود کسی کو معلوم نہ ہو سکا کہ یہ معزز خاتون کون تھی ، اس کا نام ، محلہ گلی کا پتہ ، کسی کو ان معلومات کی بھنک نہ پڑی مگر معاشرے ،میڈیا اور لوگوں کے رویوں میں تضاد دیکھیے 11 ستمبر کو سانحہ موٹروے کے شاید 2 دن بعد فیصل آباد میں 2 سگی بہنوں کے ساتھ ایسا ہی افسوسناک واقعہ پیش آیا ،جسکی تمام معلومات اخباروں کی زینت بن چکی ہیں لیکن اسکے علاوہ ٹی وی چینلز کے لیے شاید یہ ایک عام سی خبر تھی اور کوئی خاص ہاٹ ایشو نہ تھا اس وجہ سےنہ صرف مذکورہ لڑکیاں اور خاندان بدنام ہو چکے ہیں بلکہ ان کے بارے میں اس شہر کے بچے بچے کو اس واقعہ کا علم ہے کہ محلہ اشرف آباد سے 15 افراد 2نو عمر بہنوں کو زبردستی ساتھ لیجا کر 6دن تک غلط کاری کا نشانہ بناتے رہے ۔ بااثر ملزموں کی طرف سے پیچھا نہ چھوڑنے پر والدہ کی طرف سے 15 ملزموں کیخلاف مقدمہ درج کرادیا گیا۔ پولیس رپورٹ کے مطابق 11 ستمبر کو سلمان وغیرہ 17 سالہ (ل)اور اس کی 15 سالہ بہن (آ)کو زبردستی ساتھ لے گئے ۔ ملزم انہیں مختلف مقامات پر رکھ کر بداخلاقی کا نشانہ بناتے رہے۔ ملزموں نے ان کی تصاویر بنانے کے علاوہ ویڈیوز بھی بنا لیں۔ 7 دن بعد (آ)کو جھنگ بازار کے علاقہ اور اگلے روز (ل)کو گوجرانوالہ چھوڑ کر فرار ہو گئے۔غریب والدین قانونی کارروائی کی سکت نہ رکھنے کی وجہ سے مکان ہی چھوڑ گئے مگر ملزموں نے ان کا وہاں بھی پیچا نہ چھوڑا۔ متاثرہ لڑکیوں پر آتے جاتے آوازیں کستے اور ویڈیو بنانے لگے۔ 6دن قبل دونوں بہنیں والدہ کے ہمراہ ملت روڈ پر جا رہی تھیں کہ ملزم ان کی پھر ویڈیو بنانے لگے۔ منع کرنے پر ماں بیٹیوں کو زدوکوب کیا اور ایک بار پھر فرار ہو گئے ۔ قارئین دیکھیے اس معاشرے میں ایک واقعہ پر تو گویا بھونچال آگیا مگر آخر الذکر واقعہ پر معاشرے ، میڈیا اور پولیس و انتظامیہ کی چشم پوشی اس ملک کے جنگل یا جانوروں کا معاشرہ بن جانے کی واضح مثال ہے ۔