پاک فوج نے باقاعدہ آذربائیجان کی حمایت کا اعلان کر دیا

راولپنڈی (نیوز ڈیسک ) پاک فوج نے آذربائیجان کے مئوقف کی مکمل حمایت کا اعلان کردیا ہے، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل ندیم رضا نے کہا کہ نگورنو کاراباخ کے تنازع کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق چاہتے ہیں، مسلح افواج آذربائیجان کے مؤقف کی مکمل حمایت کرتی ہے۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات

عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل ندیم رضا اور آذربائیجان کے سفیر علی علی زادہ کے درمیان جوائنٹ اسٹاف ہیڈکوارٹرز راولپنڈی میں ملاقات ہوئی ہے۔جس میں میں باہمی دلچپسی امور اور خطے کی تازہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی نے کہا کہ پاکستان کی مسلح افواج نگورنو کاراباخ کے تنازع پر آذربائیجان کے مئوقف کی مکمل حمایت کرتی ہے۔نگورنو کاراباخ کے تنازع کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق چاہتے ہیں۔ ملاقات کے بعد پاکستان میں تعینات آذربائیجان کے سفیر علی علی زادہ نے ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ میں آذربائیجان کے مؤقف کی حمایت پر پاکستانی افواج سے اظہار تشکر کیا ہے۔


یاد رہے پاکستان آذربائیجان کے مئوقف کی بھرپورحمایت کرتا ہے، اس کی تائید دفترخارجہ بھی کرچکا ہے۔ لیکن افواج بھجوانے کی خبریں بےبنیاد ہیں۔ ترجمان دفتر خارجہ نے ناگورونو کاراباخ میں آرمینیا کے خلاف پاک فوج کی آذربائیجان کی فوج کے ہمراہ لڑائی سے متعلق خبروں کو بے بنیاد اور افواہیں قرار دیتے ہوئے کہا کہ ایسی اطلاعات غیر ذمہ دارانہ ہیں تاہم ناگورونو کاراباخ پر آذربائیجان کے موقف کی حمایت کرتے ہیں۔ناگورونو کاراباغ کی صورتحال پر پاکستان کو گہری تشویش ہے اور آذربائیجانی شہری آبادی پر آرمینیا کی طرف سے بھاری شیلنگ نہایت افسوسناک ہے۔ اس سے پورے خطے کے امن و امان کو نقصان پہنچ سکتا ہے لہذا مزید کشیدگی سے بچنے کے لیے آرمینیا فوری طور پر فوجی کارروائی بند کرے۔ ترجمان نے مطالبہ کیا کہ مزید کشیدگی سے بچنے کیلئے آرمینیا فوری طور پر فوجی کارروائی بند کرے۔ ناگورونو کاراباخ پر آذربائیجان کے موقف کی حمایت کرتے ہیں یاد رہے پاکستان نے کو نگورنوکاراباخ میں کشیدگی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہم نگورنو کاراباخ پر آذربائیجان کے موقف کی حمایت کرتے ہیں