You are here
Home > پا کستا ن > تم ایسے کام نہیں کرو گے ۔۔۔ حکومت نے ترقیاتی پراجیکٹ کی مانیٹرنگ اورنگرانی کی ذمہ داری کس عالمی ادارے سے کروانے کا فیصلہ کر لیا؟ جان کرآپ بھی داد دیں گے

تم ایسے کام نہیں کرو گے ۔۔۔ حکومت نے ترقیاتی پراجیکٹ کی مانیٹرنگ اورنگرانی کی ذمہ داری کس عالمی ادارے سے کروانے کا فیصلہ کر لیا؟ جان کرآپ بھی داد دیں گے

اسلام آباد(ویب ڈیسک) حکومت نے پہلی بارحکومتی پراجیکٹ کی مانیٹرنگ اورنگرانی عالمی اداروں سے کرانے کا فیصلہ کرتے ہوئے ٹین بلین ٹری سونامی پروگرام کی تھرڈ پارٹی مانیٹرنگ کیلئے معاہدہ کرلیا۔تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے سرکاری منصوبوں میں شفافیت کی جانب اہم قدم اٹھاتے ہوئے پہلی بارحکومتی پراجیکٹ کی مانیٹرنگ اورنگرانی عالمی اداروں سے کرانے کا فیصلہ کرلیا۔

حکومت نے ٹین بلین ٹری سونامی پروگرام کی تھرڈ پارٹی مانیٹرنگ کیلئے معاہدہ کرلیا ، معاہدہ وزارت موسمیاتی تبدیلی اور 3 عالمی اداروں کےکنسورشیم کے درمیان ہوا، ڈبلیوڈبلیوایف،آئی یوسی این اورایف اے او منصوبے کی مانیٹرنگ کریں گے۔معاہدے کی تقریب میں معاون خصوصی امین اسلم،عالمی اداروں کےحکام شریک ہوئے ،وزیراعظم کے معاون خصوصی ملک امین کی اے آروائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا حکومتی منصوبوں میں خوداحتسابی کامثالی عمل شروع کیاجارہاہے، 10بلین ٹری منصوبے میں شفافیت کیلئے تھرڈپارٹی مانیٹرنگ کا معاہدہ کیا۔ملک امین اسلم کا کہنا تھا کہ پہلی بارآزادعالمی پینل حکومتی منصوبےکی مانیٹرنگ کرےگا، عالمی ادارے منصوبے کی مکمل پرفارمنس آڈٹ رپورٹ تیارکریں گے کہ کتنے درخت لگے، کہاں کمی ہے اور کہاں بہتری ہونی چاہیے سب معلوم ہوسکے گا۔معاون خصوصی نے کہا کہ منصوبے کی صوبائی حکومت اور وزارت کی سطح پر بھی مانیٹرنگ جاری رہے گی۔ حکومت نے ٹین بلین ٹری سونامی پروگرام کی تھرڈ پارٹی مانیٹرنگ کیلئے معاہدہ کرلیا ، معاہدہ وزارت موسمیاتی تبدیلی اور 3 عالمی اداروں کےکنسورشیم کے درمیان ہوا، ڈبلیوڈبلیوایف،آئی یوسی این اورایف اے او منصوبے کی مانیٹرنگ کریں گے۔معاہدے کی تقریب میں معاون خصوصی امین اسلم،عالمی اداروں کےحکام شریک ہوئے ،وزیراعظم کے معاون خصوصی ملک امین کی اے آروائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا حکومتی منصوبوں میں خوداحتسابی کامثالی عمل شروع کیاجارہاہے، 10بلین ٹری منصوبے میں شفافیت کیلئے تھرڈپارٹی مانیٹرنگ کا معاہدہ کیا۔ملک امین اسلم کا کہنا تھا کہ پہلی بارآزادعالمی پینل حکومتی منصوبےکی مانیٹرنگ کرےگا، عالمی ادارے منصوبے کی مکمل پرفارمنس آڈٹ رپورٹ تیارکریں گے کہ کتنے درخت لگے، کہاں کمی ہے اور کہاں بہتری ہونی چاہیے سب معلوم ہوسکے گا۔معاون خصوصی نے کہا کہ منصوبے کی صوبائی حکومت اور وزارت کی سطح پر بھی مانیٹرنگ جاری رہے گی۔


Top