You are here
Home > پا کستا ن > “خان صاحب ! ہم نے آپ کو ووٹ اس لیے نہیں دیا تھا کہ آپ ۔۔۔۔” خواجہ سراؤں نے حکومت سے باقابل یقین مطالبہ کردیا

“خان صاحب ! ہم نے آپ کو ووٹ اس لیے نہیں دیا تھا کہ آپ ۔۔۔۔” خواجہ سراؤں نے حکومت سے باقابل یقین مطالبہ کردیا

لاہور( ویب ڈیسک) سگنلز اور شاہراہوں سے خواجہ سراء کی پکڑ دھکر کا معاملہ، خواجہ سراؤں کا پریس کلب کے باہر پنجاب پولیس کے خلاف احتجاج، پنجاب پولیس کے خلاف شدید نعرے بازی کی، خواجہ سرا کہتے ہیں حکومت ہمیں نوکریاں دے یا پھر پکڑدھکر بند کرے۔سگنلز اور شاہراہوں سے پکڑ دھکر کے خلاف خواجہ سراؤں کا

پریس کلب کے باہر بھرپور احتجاج کیا، خواجہ سراء نے پنجاب پولیس کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور احتجاجا پریس کلب سے چیئرنگ کراس تک پیدل مارچ کیا۔ خواجہ سراؤں کا کہنا تھا کہ سگنلز اور شاہراہوں سے پنجاب پولیس بلا وجہ پکڑ دھکر کر رہی ہے۔مظاہرے میں شریک دیگر خواجہ سراؤں کا کہنا تھا کہ روزگار کی خاطر سڑکوں پر بھیک مانگنے آتے ہیں، خواجہ سراؤں کو پکڑ کر جیل میں بند کیا جاتا ہے اور تشدد بھی کیا جاتا ہے۔ حکومت ہمیں روزگار دے تو سڑکوں پر کبھی نہ آئیں، نہیں تو ہماری کمیونٹی کو تنگ نہ کیا جائے۔خواجہ سراؤں نے کلب سے چیرنگ کراس پر طالبات کی منظوری کے لیے دھرنا دے دیا۔ انکا کہنا تھا کہ ہم معاشرے کا حصہ ہیں ہمیں جینے دیا جائے۔ پنجاب پولیس ٹریفک سنگلز پر کمیونٹی کے لوگوں کی گرفتاری فورا بند کرے۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ آرمی چیف نے پارلیمانی رہنماؤں کو کہا چیئرمین نیب ہم نے نہیں لگایا، آپ جانو اور چیئرمین نیب جانیں، چیف الیکشن کمیشن بھی ہم نے نہیں لگایا یہ بھی آپ جانواور الیکشن کمیشن جانیں، فوج سیاسی مداخلت کا حصہ نہیں بنے گی، جو منتخب حکومت ہوگی اس کا ساتھ دیں گے۔انہوں نے نجی ٹی وی کو بتایا کہ عسکری قیادت سے ملاقات میں 15 پارلیمانی لیڈرز موجود تھے۔ عسکری قیادت سے ملاقات میں شہبازشریف، خواجہ آصف ، احسن اقبال ، بلاول بھٹو، شیری رحمان ، شاہ محمود قریشی ، سراج الحق اور اسد الرحمان بھی موجود تھے۔نوازشریف نے مودی کو خوش کرنے کیلئے ڈان لیک کا بیان دیا۔ شیخ رشید نے کہا کہ آرمی چیف سے ملاقات میں گلگت بلتستان کے انتظامی امور پر بات چیت کی گئی۔آرمی چیف نے کہا کہ فیئرالیکشن کے بعد گلگت بلتستان کو صوبہ بنانے پر اتفاق ہوا۔صوبے میں سینیٹ کی نمائندگی ہوگی، اسمبلی ہوگی۔ آرمی چیف سے نیب کاروائیوں اور چیف الیکشن کمیشن سے متعلق بات ہوئی ، جس پر آرمی چیف نے کہا کہ نیب چیئرمین ہم نے نہیں لگایا، آپ اور چیئرمین نیب جانوں، چیف الیکشن کمیشن بھی ہم نے نہیں لگایا یہ بھی آپ اور چیف الیکشن کمیشن جانیں۔


Top