You are here
Home > پا کستا ن > بریکنگ نیوز: سرکاری اراضی پر قبضے۔۔!! اسلام آباد ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کے سینیٹر کیخلاف کارروائی کا حکم دے دیا

بریکنگ نیوز: سرکاری اراضی پر قبضے۔۔!! اسلام آباد ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کے سینیٹر کیخلاف کارروائی کا حکم دے دیا

اسلام آباد (ویب ڈیسک) اسلام آباد ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کے سینیٹر اورنگزیب اورکزئی کے خلاف کارروائی کا حکم دیدیا۔ سی ڈی اے اور ایم سی آئی نے سرکاری اراضی پر قبضے کی رپورٹ ہائیکورٹ میں جمع کرا دی۔ رپورٹ میں بتایا گیا کہ پی ٹی آئی سینیٹر اورنگزیب اورکزئی نے

پودے لگانے کی اجازت لے کر سرکاری اراضی پر قبضہ کرلیا ہے۔ عدالت میں سی ڈے اے اور ایم سی آئی سرکاری اراضی کیس میں قبضے کی رپورٹ عدالت میں جمع کرائی گئی جس میں بتایاگیاکہ پی ٹی آئی سینیٹر اورنگزیب اورکزئی نے پودے لگانے کی اجازت لے کر سرکاری اراضی پر قبضہ کر لیا۔ رپورٹ کے مطابق سینیٹراورنگزیب اورکزئی نے سرکاری اراضی پر تالاب، دیواریں، سڑک اور سیڑھیاں بنائیں،عدالتی حکم کے بعد پی ٹی آئی سینیٹر سے سرکاری اراضی واگزار کرالی۔ عدالت نے سینیٹر کے گھر اور سرکاری اراضی کی نشاندہی کا حکم دیتے ہوئے کہاکہ اگر سینیٹر اورنگزیب اورکزئی کا گھر غیر قانونی ہے تو کارروائی کریں، عدالت نے یہ حکم بھی دیاکہ سرکاری اراضی پر قبضے پر سینیٹر اور سی ڈی اے افسران کے خلاف کاروائی کی جائے اور درخواست نمٹادی۔ سلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے 5صفحات پر مشتمل حکم نامے میں قراردیا ہے کہ اسلام آباد میں زمینوں پر قبضوں کے رجحان میں اضافہ ہوا ہے اور حیران کن طور پر وز را اور حکومتی ادارے ریئل اسٹیٹ کا غیرقانونی کاروبار کر رہے ہیں،اداروں اور وزارتوں کے رئیل اسٹیٹ کے کاروبار میں ملوث ہونا مفادات کا ٹکراؤ ہے۔ عدالت نے لکھا ہے کہ اداروں اور وزارتوں میں ایسے معاملات نے سنجیدہ سوال کھڑے کر دیے ہیں کیونکہ رپورٹس بتا رہی ہیں کہ سسٹم کس طرح کرپشن زدہ ہو چکا اور تباہی کے دہانے پر ہے،اسلام آباد کی طاقتور ایلیٹ قانون کی دھجیاں بکھیرنے کی براہ راست ذمے دار ہے، یہ کہنے میں کوئی ہچکچاہٹ نہیں کہ ریاست عام شہریوں کے تحفظ میں ناکام ہو چکی۔حکم نامے میں مزید کہا گیا ہے کہ شہریوں کے بنیادی حقوق کے تحفظ کے لیے بنائے گئے ادارے بالواسطہ یا بلاواسطہ مبینہ قانون توڑنے میں لگے ہیں۔


Top