You are here
Home > پا کستا ن > جماعت اسلامی اپوزیشن کی اے پی سی میں شرکت کرے گی یا نہیں؟دو ٹوک اعلان کر دیا گیا

جماعت اسلامی اپوزیشن کی اے پی سی میں شرکت کرے گی یا نہیں؟دو ٹوک اعلان کر دیا گیا

لاہور(ویب ڈیسک)اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس سے قبل ہی حکومت مخالف جماعتوں میں واضح اختلاف سامنے آ گیا ،بلاول بھٹو زرداری اور شہباز شریف کو بڑا جھٹکا،ملک بھر میں حکومت مخالف اجتماعات میں سٹریٹ پاور شو کرنے والی منظم سیاسی قوت جماعت اسلامی پاکستان نے اپوزیشن کی اے پی سی میں شرکت سے انکار کردیا ۔تفصیلات کے

مطابق جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات قیصر شریف نے اعلان کیا ہے کہ جماعت اسلامی کل ہونے والی اے پی سی میں شرکت نہیں کرئے گی ،اپوزیشن لیڈر شپ کو آگاہ کر دیاہے کہ ہمیں اپوزیشن جماعتوں کی سیاسی اور حکومت مخالف سرگرمی سے کوئی اختلاف نہیں تاہم جماعت اسلامی پہلے سے مہنگائی ، بے روزگاری ، لاقانونیت ، شعائر اسلام کے خلاف حکومتی اقدامات کے خلاف اور مسئلہ کشمیر پر جرا ت مند، بہادر کشمیریوں کی پشتی بانی کے لیے اپوزیشن کا دوٹوک صاف ستھرا کردار ادا کر رہی ہے،ہماری جدوجہد اسلامی پاکستان خوشحال پاکستان کے لیے جاری ہے،جماعت اسلامی عوامی مسائل کے حل ، با اختیار بلدیاتی نظام ، شفاف اور غیر جانبدانہ انتخابی نظام کے لیے ملک گیر تحریک چلائے گی۔قیصر شریف نے کہاکہ اپوزیشن جماعتوں کو عوام کا اعتماد بحال کرنے میں سخت محنت کرنا ہوگی،حال ہی میں بعض اپوزیشن جماعتوں نے اپنے بار بار بدلتے اقدامات سے خود اپوزیشن کی پوزیشن کو کمزور بنایا ، سینیٹ چیئرمین انتخاب اور عدم اعتماد ، فوجی عدالتوں اور فوجی سربراہوں کی توسیع ملازمت اور ایف اے ٹی ایف کے قومی غلامی پر مبنی قانون سازی پر اپوزیشن جماعتیں دباؤ کے سامنے نہ جھکتیں تو آج اپوزیشن کے لیے بڑی آسانیاں ہوتیں ۔ قیصر شریف نے کہا کہ تمام اپوزیشن جماعتوں کو سیاسی سرگرمیوں کا سیاسی ، آئینی اور جمہوری حق ہے،اپوزیشن جماعتوں نے اے پی سی منعقد کرنے کا فیصلہ کیا ہے اب اس کے نتائج کا قوم کو انتظار رہے گا، جماعت اسلامی کو اپوزیشن کی حکومت مخالف سیاسی سرگرمی سے کوئی اختلاف نہیں ،حکومت کی ناکامی اور نااہلی نے از خود اپوزیشن کو احتجاج کا موقع مہیا کر دیاہے،جب پارلیمنٹ ، صوبائی اسمبلیاں بے کار بنا دی جائیں ، آئین سے انحراف ہو اور عوام پر مہنگائی ، بے روزگاری ، لاقانونیت کے کوڑے برسائے جائیں تو احتجاج کے علاوہ کوئی راستہ باقی نہیں بچتا ۔


Top