بریکنگ نیوز: لوہے کے چنے نیب کی چَکی میں آگئے۔!!

لاہور (ویب ڈیسک) خواجہ برادران کو زبردست جھٹکا ۔ مسلم لیگ (ن) کے رہنما خواجہ سعد اور خواجہ سلمان رفیق کی ضمانت کا معاملہ،نیب نے سپریم کورٹ میں نظر ثانی درخواست دائر کر دی۔ نیب کی جانب سے سپریم کورٹ میں دائر نظر ثانی درخواست میں کہا گیا ہے کہ

سپریم کورٹ 20 جولائی کا تفصیلی فیصلہ واپس لے، رولز کے تحت نیب مقدمات کی تین رکنی بنچ سماعت کر سکتا ہے جبکہ دو رکنی بنچ نے سعد رفیق اور سلمان رفیق کو ضمانت دی۔ واضح رہے کہ نیب نے خواجہ برادران کو پیرا گون سیکنڈل کیس میں گرفتار کیا تھا، لاہور ہائیکورٹ نے انکی ضمانت کی درخواست مسترد کر دی تھی بعد ازاں سپریم کورٹ نے انہیں رہا کیا تھا۔ خواجہ برادران کی رہائی کے بعد نیب نے سپریم کورٹ کے فیصلے پر نظر ثانی اپیل کا کہا تھا جو آج عدالت میں دائر کردی گئی ہے۔ خواجہ برادران پر فرد جرم عائد کی جا چکی ہے۔ عدالت نے ریفرنس کے 3 ملزموں ندیم ضیاء، عمر ضیاء اور فرحان علی کو اشتہاری قرار دے رکھا ہے جنہوں نے پیراگون سوسائٹی میں سادہ لوح شہریوں سے 59 کروڑ کا فراڈ کیا ہے۔ لاہور کی احتساب عدالت نے 4 ستمبر کو مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی خواجہ سلمان رفیق کے خلاف پیراگون ہاؤسنگ سوسائٹی میں بے ضابطگیوں پر دائر ریفرنس میں فرد جرم عائد کی تھی۔ خواجہ سعد رفیق اور خواجہ سلمان رفیق نے صحت جرم سے انکار کیا تھا۔ واضح رہے کہ 11 دسمبر کو لاہور ہائی کورٹ نے مسلم لیگ ن کے رہنماؤں خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کی عبوری ضمانت خارج کردی تھی، جس کے بعد نیب نے دونوں بھائیوں کو حراست میں لے لیا تھا۔ خواجہ برادران کو پیراگون ہاؤسنگ اسکینڈل میں گرفتار کیا گیا۔