پنجاب حکومت شدید مالی بحران کا شکار۔۔۔!!!پنجاب پولیس سے کیا گیا وعدہ وفا نہ ہو سکا ، معذرت کرلی گئی

لاہور (ویب ڈیسک) صوبائی دارلحکومت لاہور سمیت صوبے بھر میں سنگین جرائم اور بالخصوص دہشتگردوں سے نمٹنے کے لئے بکتر بند گاڑیوں کی خریداری کا منصوبہ کھٹائی میں پڑ گیا ہے۔ اس حوال سے پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ پنجاب حکومت کے شدید مالی بحران کے باعث رواں مالی سال 2020-21 میں بھی بکتر بند گاڑیاں نہیں

خریدی جاسکیں گی۔ذرائع کے مطابق پنجاب پولیس کے پاس اس وقت صرف 19 بکتر بند گاڑیاں موجود ہیں۔ جو نکارہ ہونے کی وجہ سے دھکا سٹارٹ ہیں۔ اس صورتحال میں آئی جی پولیس پنجاب شعیب دستگیرنے رواں مالی سال کے دوران 30نئی بکتر بند گاڑیاں خریدنے کے لئے پنجاب حکومت سے 1 ارب روپے سے زائد کے فنڈز مانگے تھے۔ مگر پنجاب حکومت نے ڈیمانڈ کردا 30 بکتر بند گاڑیوں کی تعداد کم کر کے 10 گردی اور اب مالی بحران کے باعث پنجاب حکومت نے 10 بکتر بند گاڑیاں بھی نہ خریدنے کا فیصلہ کیا ہے۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تمام ٹرینوں کےپرانےاسٹاپ ختم کرنے جارہے ہیں ایم ایل ون میں کوئی پھاٹک نہیں ہوگا، 30اگست سے پہلے منصوبے کا ٹینڈر ہوجائے گا،وزیراعظم سے ملوں گا اور کہوں گا چین کے صدرایم ایل ون کا سنگ بنیادرکھیں۔شیخ رشید کا کہنا تھا کہ انقلاب آیا ہےسہراعمران خان اور آرمی چیف کو جاتاہے، آرمی اسٹاف نےچین میں ملاقات میں ایم ایل ون پرترجیحی رکھی، 14سال بعد ایم ایل ون کا سہرا عمران خان کے سرلگا ہے جو ابتدا ہے، چینی سفیر کو کہا ایم ایل ون 5 نہیں 3سال میں مکمل کریں۔وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ 10ٹرینیں 16اگست سےکھولنے جارہے ہیں ، رحمان بابا،ہزارہ، فرید، بدر، مہر، موہن جو داڑو ایکسپریس چلانے کا فیصلہ کیا ہے، بدر ایکسپریس کا روٹ تبدیل کردیا گیا ہے جبکہ مارڈرن ریلوے کی بنیاد رکھنے جارہے ہیں، چاہتے ہیں روڈز کا رش ٹریک پر منتقل ہوجائے، ڈیڑھ سوسال

بعد ریلوے ٹریک پر کام کیا جارہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ نہیں سمجھتاکہ پی ٹی آئی کا کوئی وزیرکرپشن کرے گا ، کرپشن ایک سنجیدہ کرائم ہے، نیب کئی لوگوں کوبلاکران کو چھوڑ بھی دیتا ہے، نیب سمجھتی ہے کہ کیس ٹھیک نہیں تو اس بندے کو چھوڑا جاتا ہے۔شیخ رشید نے مزید کہا کہ کرپشن ایک سیریس کرائم ہے اس میں چھوٹ نہیں ہوسکتی ، عدالت نے عمران خان کوصادق اورامین کاسرٹیفکیٹ دیا ہے۔وفاقی وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ نوازشریف،آصف زرداری خاندانوں کی کوئی سیاست نہیں ہے، میں نے کہا تھا عید کے بعد دونوں خاندانوں کوبلایا جائے گا، ان تمام لوگوں کے کیس بہت سنجیدہ ہیں، عدالت نےفیصلہ دیاکہ120دن میں کیس کافیصلہ ہو تو کرپشن نیست ونابود ہوجائے گی۔انھوں نے کہا کہ ذمہ داری سےکہہ رہاہوں کہ نوازشریف کے سیریس کیسز ہیں، اگر ایک پائی ہم نہیں نکلوا سکے تو پھر ان کے پاس بھی نہیں رہے گی۔شیخ رشید کا کہنا تھا کہ کراچی کے نالے بھی مرکز نے صاف کرنے تھے یہ بھی وقت آنا تھا، یہ کسی بھی حکومت کےلئے خوش آئند بات نہیں۔اپوزیشن کے حوالے سے وفاقی وزیر نے کہا کہ کدھرگئی اےپی سی،میں ٹرین نہیں چلارہایہ تحریک چلاناچاہتے ہیں ، اپوزیشن والے سمجھدار لوگ ہیں۔بھارت سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ مودی نے30سال پہلےکہاایودھیاداخل ہوں گا ، ہٹلرخونی مودی ہے وہ چین سےنہیں لڑے گا، وہ سب ممالک سے اسلحہ لےگا ، کشمیر کی آزادی کے ساتھ بچہ بچہ شامل ہے۔شیخ رشید نے بتایا کہ عمران خان 5سال پورے کرے گا، ان کو آٹے اور چینی کے ریٹ پتہ ہیں ، عمران خان کوشش کررہے ہیں چینی آٹے کےریٹ کم کئےجائیں، سبسڈی دے کر چینی آٹے کےریٹ کم کرنےکی کوشش کی جارہی ہے