سرکاری عمارت میں ٹک ٹاک ویڈیو کا معاملہ،گل پانڑہ کو کس (ن) لیگی رہنما کی سفارش پر اسسٹنٹ کمشنر نے انٹری کروائی ؟ شرمناک اعتراف کر لیا گیا

پشاور(ویب ڈیسک) گزشتہ دنوں لنڈی کوتل کے اسسٹنٹ کمشنر کی سرکاری قیام گاہ میں معروف گلوکارہ گل پانڑا کی ٹک ٹاک ویڈیو سامنے آئی تھی جو آتے ہی متنازع ہوگئی تھی۔اس حوالے سے سوال اٹھنے لگے تھے کہ گل پانڑا کسی سرکاری عمارت میں کیوں گئیں اور انہیں شوٹنگ کی اجازت کس نے دی۔


اس معاملے پر مسلم لیگ ن کے رہنما ارباب خضر حیات نے خاموشی توڑ دی ہے، چیف سیکریٹری خیبر پختونخوا کو لکھے گئے خط میں انہوں نے بتا یا ہے کہ ” گل پانڑہ میری فیملی کے ساتھ لنڈی کوتل گئی تھی، گل پانڑہ سمیت فیملی میں شامل تمام افراد کے چہروں پر ماسک تھے”۔نجی اخبار کے مطابق ارباب خضر حیات نے اپنے خط میں مزید کہا ہے کہ گل پانڑہ کی شناخت کو ظاہر نہیں کیا گیا تھا، اسسٹنٹ کمشنر نے ہماری فیملی کو دفتر میں چائے کی دعوت دی تھی، گل پانڑہ نے سبزہ زار میں چند سیکنڈ کی ٹک ٹاک وڈیو بنائی تھی۔خط کے متن کے مطابق گل پانڑہ نے ذاتی اکاؤنٹ سے ویڈیو اپ لوڈ کروائی، سوشل میڈیا پر گل پانٹرہ کی ٹک ٹاک وڈیو کو غلط رنگ دے کر پیش کیا گیا ہے۔