40 فیصد فیل طلبہ کو پاس کرنے کا فیصلہ!میٹرک کے نتائج سے متعلق نئی پالیسی متعارف ؟فیڈرل بورڈ کا بڑ ااعلان

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) فیڈرل بورڈ آف ایجوکیشن نے میٹرک کے نتائج سے متعلق پالیسی میں ایک بار پھر تبدیلی کرتے ہوئے امتحان میں 40 فیصد مضامین میں فیل ہونے والے طلبہ کو پاس کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔فیڈرل بورڈ اف ایجوکیشن میں میٹرک کے امتحان کی پالیسی میں تبدیلی کا نوٹیفیکیشن بھی

جاری کر دیا ہے۔بورڈ کا کہنا ہے کہ پرائیویٹ امیدوار بھی اس پالیسی سے مستفید ہو سکیں گے۔سپلی امتحان دیبے والے طلبا طالبات میں آسانی سے فائدہ حاصل کر سکیں گے۔نوٹیفیکیشن کے مطابق پرائیویٹ امیدوار جو 40 فیصد مضامین میں فیل تھے انہیں کے پاس کر دیا جائے گا۔ایسے امیدواروں کے نتائج کا اعلان جلد کیا جائے گا۔فیڈرل بورڈ نے سابق اور پرائیویٹ امیدواروں کو سالانہ نتائج میں پاس نہیں کیا تھا۔دوسری جانب پشاور تعلیمی بورڈ نے میٹرک امتحانات کے نتائج کا اعلان کردیا۔کورونا وباء کے باعث تمام طلبہ و طالبات کامیاب قرار دے دیئے گئے ۔پشاورتعلیمی بورڈ نے میٹرک امتحانات کے نتائج کا اعلان کردیا،سرکاری اسکول کی طالبہ نے آرٹس گروپ کی طالبہ جویریہ تنویر جبکہ سائنس گروپ میں ابوبکرصدیق نے پہلی پوزیشن حاصل کی۔ نتائج کے مطابق سائنس گروپ میں ابوبکرصدیق نے 1094 نمبروں سے پہلی پوزیشن حاصل کی ،سائنس میں ماریہ فیروزنے 1080 نمبروں سے دوسری جبکہ عبدالماجد اوراحمد خان 1078کے ساتھ تیسری پوزیشن حاصل کی ،آرٹس میں سرکاری اسکول کی طالبہ جویریہ تنویرنے 1003 نمبروں سے پہلی ، جویریہ مسعود اورمطہرہ نے 858 نمبروں سے دوسری پوزیشن جبکہ طالبہ عنادل نے 946 نمبروں سے تیسری پوزیشن حاصل کی۔امتحان میں 73 ہزار 833 طلبہ و طالبات نے حصہ لیا، جن طلبہ نے نویں میں جو گریڈ لیا تھا اس حساب سے میٹرک میں نمبر دیئے گئے ہیں۔میٹرک میں تین نمبر اضافی کورونا وباء کی صورت حال میں دیئے گئے۔تقریب کے مہمان خصوصی صوبائی وزیر ابتدائی و ثانوی تعلیم اکبر ایوب خان تھے اور یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ 40 فیصد فیل طلبہ کو پاس کر دیا جائے.