پنجاب حکومت نے سب کو پیچھے چھوڑ دیا ۔۔۔ کورونا کے فی مریض سے ہسپتال کا کتنا کرایہ وصول کیا جانے لگا ؟ حیرت کے جھٹکے کے لیے تیار ہو جائیں

لاہور (ویب ڈیسک) حکومت کی جانب سے کورونا کی روک تھام کیلئے ایکسپو سنٹر لاہور میں فیلڈ ہسپتال قائم کیا گیا تھا جس میں آنے والے فی مریض پر کرائے کی مد میں 9 لاکھ روپے کی لاگت آنے کا انکشاف ہوا ہے۔نجی ٹی وی اے آر وائی نیوز نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ

ایکسپو فیلڈ ہسپتال میں کورونا کے 600 مریضوں کا علاج کیا گیا ہے۔ ایکسپو سنٹر انتظامیہ کی جانب سے ضلعی حکومت کو 55 کروڑ روپے کا بل تھمادیا گیا ہے۔ اس حساب سے فیلڈ ہسپتال میں کورونا کے فی مریض پر کرائے کی مد میں 9 لاکھ 16 ہزار روپے سے زائد کے اخراجات اٹھے ہیں۔خیال رہے کہ ایکسپو سنٹر میں کورونا کے مریضوں کیلئے ایک ہزار بستر کا فیلڈ ہسپتال صرف 9 دن کی قلیل مدت میں تیار کیا گیا تھا۔ وزیر اعلیٰ عثمان بزدار نے اس ہسپتال کا یکم اپریل کو افتتاح کیا تھا۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق مراد علی شاہ وزیراعلی ہاؤس میں گندم کے ذخیرے اور قیمتوں کے جائزہ اجلاس کی صدارت کررہے تھے، اجلاس میں وزیر خوراک ہری رام، چیف سیکرٹری ممتاز شاہ، وزیراعلی سندھ کے پرنسپل سیکریٹری ساجد جمال ابڑو، سیکرٹری فوڈ لئیق احمد اور دیگر نے شرکت کی۔ وزیراعلی کو بریفنگ دیتے ہوئے سیکرٹری خوراک نے بتایا کہ سندھ میں گندم اور آٹے کی سپلائی اور قیمتیں مستحکم ہیں۔ اس پر مراد علی شاہ نے کہا کہ پنجاب میں بڑھتی قیمتیں سندھ میں مارکیٹ کو غیر مستحکم کرسکتی ہیں۔ واضح رہے کہ محکمہ خوراک سندھ کی جانب سےگندم کی نارمل ریلیز کا آغازستمبر کےمہینےمیں ہوتا ہے۔سیکریٹری خوراک لئیق احمد نےوزیراعلی سندھ کو بتایا کہ پنجاب حکومت نے صوبے میں گندم کے بحران کی وجہ سےفوراہی گندم کوریلیز کرنےکافیصلہ کیا ہے،اب بھی سندھ میں گندم اور آٹے کی قیمتیں پنجاب کے مقابلہ میں کم ہیں۔