میری طبیعت ٹھیک نہیں۔۔۔ شیخ رشید نے بھی وزیر اعظم کے عشائیے میں شرکت سے معذرت کرلی

اسلام آباد (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے بھی وزیراعظم کے عشائیے میں شرکت سے معذرت کرلی، انہوں نے کہا کہ میری طبیعت ٹھیک نہیں ہے۔ میں آرام کرنا چاہتا ہوں، اس لیے عشائیے میں شرکت نہیں کرسکتا۔ ذرائع کے مطابق حکومت کی اتحادی جماعت عوامی مسلم لیگ کے سربراہ اور وفاقی وزیر ریلوے

نے بھی وزیراعظم کے بجٹ سے متعلق دیے گئے عشائیے میں شرکت سے معذرت کرلی ہے۔انہوں نے کہا کہ میری طبیعت ٹھیک نہیں ہے۔ میں آرام کرنا چاہتا ہوں۔ طبیعت خرابی کے باعث حکومتی عشائیے میں شرکت نہیں کرسکوں گا۔ اسی طرح مسلم لیگ ق ، بی این پی کے بعد جمہوری وطن پارٹی نے بھی وزیر اعظم کے عشائیے میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ جمہوری وطن پارٹی بھی حکومت کی اتحادی جماعت ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ جمہوری وطن پارٹی کے سربراہ نوابزادہ شازین بگٹی نے وزیراعظم کے عشایئے میں شرکت نہیں کریں۔وہ ذاتی مصروفیات کی بناء پر عشائیے میں شرکت نہیں کرسکیں گے۔ اس سے قبل بی این پی کے سربراہ اختر مینگل نے واضح انکار کرتے ہوئے کہا کہ ہم حکومت کے اتحادی نہیں رہے، اس لیے عشائیے میں شرکت نہیں کریں گے۔اسی طرح آج مسلم لیگ ق نے بھی وزیراعظم کے عشائیے میں شرکت سے انکار کیا ہے۔ چودھری پرویز الٰہی نے کہا کہ بجٹ کی منظوری کے لیے ہمارے ارکا ن کے ووٹ حکومت کی امانت ہیں، لیکن عشائیے میں ذاتی مصروفیات کی بناء پر شرکت نہیں کرسکیں گے، کیونکہ آج مسلم لیگ ق نے خود مختلف جماعتوں کو عشائیے کی دعوت دے رکھی ہے۔چودھری برادران نے اتحادی رہنماوں کو وزیراعظم عمران خان کے عشائیے سے پہلے کی دعوت دے رکھی ہے جس میں کئی اتحادی جماعتوں کے کئی رہنما چودھری برادران کو عشائیے میں شرکت کی یقین دہانی کراچکے ہیں جبکہ پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنماوں کوعشائیے میں شرکت کی دعوت نہیں دی گئی ہے۔ چودھری برادران نے ایم کیوایم، بی اے پی اور جی ڈی اے سمیت آزاد اراکین کو عشائیے میں شرکت کی دعوت دے رکھی ہے۔ اسی طرح گزشتہ روز وفاقی وزیر اسد عمر کو جی ڈی اے نے وفاقی حکومت کی حمایت جاری رکھنے اور وزیراعظم کے عشائیہ میں شرکت کی یقین دہانی کرادی ہے، پیرصدرالدین شاہ راشدی نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت کے حوالے سے کوئی خدشات نہیں ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ حکومت پانچ برس مکمل کرے۔