سنتھیا ڈی رچی کا شرمناک دعویٰ ، بلاول ہاؤس میں برطانوی شہری کیا کرتے ہیں؟ امریکی بلاگر نے ناقابلِ یقین ثبوت پیش کر دیئے

اسلام آباد( نیوز ڈیسک) بے نظیر بھٹو سے متعلق دعوے پر مشہور امریکی خاتون بلاگر اور سوشل میڈیا ایکٹویسٹ سنتھیا ڈی رچی کے پیپلزپارٹی پر وار جاری ہیں ، سنتھیا ڈی چی کے مطابق پیپلزپارٹی کے سپورٹرز انہیں وٹس ایپ اور سوشل میڈیا پر ہراساں کررہے ہیں، گندی زبان کا استعمال اور دھمکیاں دے رہے ہیں۔

اور اب کے بار انہوں نے چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو کو نشانہ بنایا ہے۔اپنے ایک ٹویٹ میں سنتھیا ڈی رچی نے بلاول بھٹو، آصفہ بھٹو، شیری رحمان اور سحر کامران سے سوال کیا کہ آپ سب لوگ مجھے ملک بدر کرنے کا کہہ رہے ہیں تو ذرا کچھ سوالات کے جواب دیں۔سنتھیا ڈی رچی نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ یہ بتائیں کہ جیسن اور ڈیوڈ نامی برطانوی شہری بلاول ہاؤس میں کیا کر رہے ہیں، بےنظیر بھٹو کے دور سے ہی بلاول کے ساتھ رہنے والے یہ برطانوی شہری کون ہیں؟ان برطانوی شہریوں سے متعلق سنتھیا ڈی رچی کا یہ دعویٰ ہے کہ ان کے ساتھ بلاول بھٹو کے جنسی تعلقات ہیں.


جس پر ان کے اس دعوے کی نفی کرتے ہوئے ایک پاکستانی صارف نے ڈیوڈ نامی برطانوی جیالے کی پوری بائیوگرافی پر مبنی ایک ویڈیو پوسٹ کی جس میں بتایا گیا ہے کہ ڈیوڈ کو بلاول بھٹو نے بطور پانی کا ماہر رکھا ہوا ہے کیونکہ سندھ کے متعدد مثلاً کیماڑی اور لیاری جیسے علاقوں میں پانی کا بہت مسئلہ ہے تو اس مقصد کے تحت گزشتہ کئی سالوں سے ڈیوڈ اور جیسن سندھ میں ہی رہائش پذیر ہیں۔


واضح رہے کہ سنتھیا ڈی رچی آج کل جیالوں کے ہاتھوں تنقید اور گالیوں کی زد میں ہیں، سنتھیا ڈی رچی نے کچھ دن پہلے ٹویٹ کرتے ہوئے وٹس ایپ سکرین شاٹ شئیر کیا جس میں اس نے دعویٰ کیا کہ پیپلزپارٹی کا ایک جیالا ماجد علی آغا اسکے خلاف کمپین چلارہا ہے اور جیالوں کے ساتھ اسکا ذاتی موبائل نمبر شئیر کررہا ہے