حویلیاں طیارہ حادثے میں لاشوں کی شناخت کرنیوالی فرانزک ماہرین کی ٹیم کو کراچی بھیجنے کا فیصلہ

کراچی (ویب ڈیسک) حویلیاں طیارہ حادثےکی لاشوں کی شناخت کرنیوالی ٹیم کراچی بھیجنے کا فیصلہ کرلیا گیا ، فرانزک ماہرین لاشوں کے اعضا کی مدد سے شناخت میں مددفراہم کریں گے جبکہ دانتوں سے بھی شناخت کی جا سکے گی۔ تفصیلات کے مطابق حویلیاں طیارہ حادثے کی لاشوں کی شناخت کرنیوالی

یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کا فرانزک ماہرین کی ٹیم کراچی بھیجنے کا فیصلہ کرلیا گیا ، ٹیم میں ڈاکٹر عروج ، ڈاکٹرہمایوں تیمور، ڈاکٹر منیر احمد، ڈاکٹر خرم شہزاد شامل ہیں ۔ وائس چانسلر یو ایچ ایس پروفیسر جاوید اکرم نےنوٹیفکیشن جاری کر دیا اور کہا ٹیم میں ایسے ماہرین موجود ہیں جنھوں نے حویلیاں طیارہ حادثہ میں جاں بحق ہونے والوں کی شناخت کی تھی، ٹیم لاشوں کی شناخت کیلئے ڈی این اے ٹیسٹ کرے گی جبکہ فرانزک ماہرین لاشوں کےاعضاکی مددسےشناخت میں مددفراہم کریں گے اور دانتوں سے بھی شناخت کی جاسکے گی۔ پروفیسرجاوید اکرم نے کہا کہ یو ایچ ایس کے فرانزک ماہرین کی ٹیم بھیجنے کا فیصلہ گورنر پنجاب چودھری محمد سرور کی ہدایت پر کیا گیا، اس سانحہ پر ساری قوم افسردہ ہے، اللہ تعالی لواحقین کو صبر جمیل عطا فرمائے۔ ان کا کہنا تھا کہ پروفیسر جاوید اکرم کا کہنا تھا کہ ٹیم پی آئی اے کے خصوصی طیارے کے ذریعے کراچی جا رہی ہے، اس حوالےسے این ڈی ایم اے کی جانب سے رابطہ کیا گیا ہے، ،یونیورسٹی آف ہیلتھ سائینسز فرنزک ٹیسٹنگ کی صلاحیت رکھنے والی ایشیا کی واحد یونیورسٹی ہے دوسری جانب نادرا کی ٹیکنیکل ٹیم جاں بحق افرادکی شناخت کیلئےکراچی پہنچ گئی، نادراٹیم مسافروں کی انگوٹھوں کےذریعےشناخت کرےگی، جاں بحق افرادمیں زیادہ ترافرادجھلس چکےہیں جوناقابل شناخت ہیں، نادراٹیم نے انگوٹھے کے ذریعے3میں سے2 میتوں کی شناخت کرلی ہے۔ ترجمان این ڈی ایم اے کا کہنا ہے کہ طیارہ حادثےکی میتیں جناح اسپتال میں رکھی گئی ہیں، ضرورت پیش آئی تومیتوں کومتبادل میت خانوں میں منتقل کیاجائےگا۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز لاہور سے آنے والا طیارہ کراچی ایئرپورٹ کے قریب آبادی پر گر کر تباہ ہو گیا تھا، جس میں 97 افراد جاں بحق ہوئے، حادثے میں بینک آف پنجاب کے سربراہ سمیت 2 افراد معجزانہ طور پر بچ گئے، 97 میں سے اب تک صرف 19 افراد کی شناخت کی جا چکی ہے۔