جھوٹوں کی بات پر حامد میر سب سے برہم۔۔!! مولانا طارق جمیل کی بات پر پاکستانی صحافی کیوں آگ بگولہ ہورہے ہیں؟ بالاخر وجہ سامنے آگئی

اسلام آباد( نیوز ڈیسک) معروف سوشل میڈیا ایکٹوسٹ صدیق جان کا کہنا ہے کہ مولانا طارق جمیل نے کوئی انہونی بات نہیں کی، یہ تو سب کو پتہ ہے کہ میڈیا پر کتنا جھوٹ بولا جاتا ہے۔ حامد میر سب سے زیادہ غصہ کررہے ہیں، یعنی چور کی داڑھی میں تنکا۔صدیق جان نے

تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ مولانا طارق جمیل نے کوئی انہوں بات نہیں کی، یہ تو سب کو پتہ ہے کہ میڈیا پر کتنا جھوٹ بولا جاتا ہے۔ حامد میر سب سے زیادہ غصہ کررہے ہیں، یعنی چور کی داڑھی میں تنکا۔۔صدیق جان نے مزید کہا کہ حامد میر نے کہا کہ مولانا طارق جمیل 1998 میں نواز شریف کی کابینہ کے اجلاسوں میں بھی یہی باتیں کرتے تھے جو آجکل عمران خان کے بارے میں کرتے ہیں۔ یعنی حامد میر کو 21 سال تک مولانا طارق جمیل سے کوئی مسئلہ نہیں تھا، مسئلہ اب ہے۔صدیق جان نے حامد میر کے مبینہ جھوٹ ایکسپوز کرتے ہوئے کہا کہ حامد میر نے تو یہ تک جھوٹ بولا کہ میر شکیل الرحمان کو اغوا کیا ہے حالانکہ انہیں نیب نے گرفتار کیا تھا اور انہیں احتساب عدالت میں پیش کیا گیا تھا اور عدالت نے ہی انکے ریمانڈ میں توسیع دی۔ حامد میر نے تو شوگر انکوائری رپورٹ پر بھی جھوٹ بولا کہ اگر محمد مالک رپورٹ لیک نہ کرتے تو حکومت یہ رپورٹ شائع نہ کرتی۔صدیق جان نے مزید کہا کہ حامد میر تو یہ تک کہتے رہے کہ این آراو کی ضرورت نوازشریف اور آصف زرداری کو نہیں، نوازشریف این آراو نہیں دے گا ۔ حامد میر تو یہ کہتے رہے کہ اگر مولانا اسلام آباد آگیا تو عمران خان کی حکومت نہیں رہے گی ، اسلئے عمران خان خود ہی استعفیٰ دیکر معاملات خراب ہونے سے بچائیں۔صدیق جان نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ حامد میر صاحب کی گزشتہ ایک برس میں کی گئی حق اور سچ پر مبنی باتوں کو ایک جگہ اکٹھا کرنے کے لیے مجھے وقتاً فوقتاً 23 ویڈیوز کرنا پڑیں۔ حامد میر ان 23 ویڈیوز کو تو جھوٹا ثابت کریں