لاہور میں حکومتی لاک ڈاﺅن کی دھجیاں اڑا دی گئیں، اندرون شہر میں عید کا سماں، لوگوں نے چھٹیوں کو تفریح کا ذریعہ بنالیا ، ویڈیو دیکھ کر آپ سر پکڑ لیں گے

لاہور (ویب ڈیسک) پنجاب حکومت کی جانب سے صوبے میں 2 روز کیلئے جزوی لاک ڈاﺅن کا اعلان کیا گیا تھا لیکن لاہور کے بعض علاقوں میں حکومتی احکامات کی دھجیاں اڑا دی گئیں جبکہ پولیس بے بسی کی تصویر بنی نظر آرہی ہے۔لاہور کے علاقوں شاد باغ، سکیم نمبر 2، چائنہ چوک اور مصری شاہ سمیت اندرون

لاہور کے علاقے شادباغ سکیم نمبر 2 پر لاک ڈاؤن کا حال

لاہور کے علاقے شادباغ سکیم نمبر 2 پر لاک ڈاؤن کا حال#LockDownPakisan #COVID19outbreak #Social_Distancing #StayHomeStaySafe

Gepostet von ‎مدنظر Mad-e-Nazar‎ am Sonntag, 22. März 2020

لاہور کے بیشتر علاقوں میں لوگوں کی جانب سے حکومتی ہدایات کو جوتے کی نوک پر رکھا گیا ہے۔ حکومت نے لاک ڈاﺅن کے دوران مخصوص دکانیں کھولنے کی اجازت دی تھی لیکن لوگوں نے کرونا وائرس کو تفریح کا ذریعہ بنالیا ہے۔ چھٹیاں ہونے کے باعث لوگ بڑی تعداد میں بازاروں کا رخ کر رہے ہیں اور اندرون لاہور کے مذکورہ بالا علاقوں میں عید کا سماں بنا ہوا ہے۔دوسری جانب پولیس کی جانب سے لوگوں کو گھروں تک محدود رکھنے کے حوالے سے کوئی کارروائی نہیں کی جارہی ۔ ایک مقامی صحافی نے پولیس ہیلپ لائن 15 پر 2 بار کال کرکے صورتحال سے آگاہ کیا ہے لیکن ہر بار ٹیم بھیجنے کا کہہ کر ٹرخادیا جاتا ہے۔لوگوں کے اس طرح کے رویے اور پولیس کی ناکام حکمت عملی کے باعث لوگوں میں سخت تشویش پائی جاتی ہے، اگر یہی رویہ برقرار رہا اور ہم نے اٹلی سے سبق نہ سیکھا تو آگے کا تصور کرکے ہی انسان پر کپکپی طاری ہوجات ہے۔ عوام کی بھی ذمہ داری ہے کہ وہ حکومتی احکامات کو ہوا میں نہ اڑائے اور حکومت کو فوج بلاکر کرفیو لگانے پر مجبور نہ کرے۔