’’ آپ اس ’ نا معقول عورت‘ کو روک نہیں سکتیں، یہ بار بار۔۔۔‘‘ خلیل الرحمان قمر اور ماروی سرمد کے درمیان لڑائی کس بات پر شروع ہوئی؟ پروگرام کو وہ کلپ سامنے آگیا جو آن ائیر ہی نہیں کیا گیا

لاہور ( نیوز ڈیسک ) ماروی سرمد اور خلیل الرحمان کے درمیان لڑائی کا وہ متنازعہ ویڈیو کلپ منظر عام پر آگیا ہے جو میڈیا پر نشر نہیں کیا گیا ۔ تفصیلات کے مطابق سماجی کارکن ماروی سر مد اور ڈرامہ نویس خلیل الرحمان قمر کے درمیاں دوران پروگرام ہونے والا جھگڑا شدت اختیار کر گیا ہے اور سوشل میڈیا پر زیر بحث بھی ہے۔

تاہم اب اس متنازعہ پروگرام کا وہ حصہ بھی منظر عام پر آگیا ہے جو میڈیا کی جانب سے نشر نہ کیا گیا ۔ اس ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ماروی سرمد خلیل الرحمان قمر کی بات کو بار بار کاٹی رہیں اور ان پر ہنستی رہی۔ خلیل الرحمان قمر نے کہا کہ یہ جاہل عورت میرے پر ہنس رہی ہے برائے مہربانی اسے منا کریں اچھا نہیں لگا ۔جس پر ماروی سرمد نے خلیل الرحمان قمر سے بدتمیزی کی اور کہا کہ بکواس بند کروں جس پر خلیل الرحمان بھڑک اٗٹھے۔


واضح رہے نجی ٹی وی پر دوران پروگرام سماجی کارکن ماروی سرمد کے ’’میرا جسم میری مرضی ‘‘ کا نعرہ لگانے پر ڈرامہ رائٹر خلیل الرحمان قمر نے کہا کہ اپنا جسم دیکھو جا کے، کوئی تھوکتا نہیں ہے آپ کے جسم پر، تیرے جسم میں ہے کیا، اس پر مرضی چلاتا کون ہے؟ بے حیا عورت کے جسم پر کوئی تھوکتا بھی نہیں ہے، گھٹیا عورت، خلیل الرحمان قمر ماروی سرمد پر برس پڑے۔نجی نیوز چینل کے ایک لائیو شو میں معروف ڈرامہ نگار خلیل الرحمان قمر اور خاتون صحافی ماروی سرمد کے درمیان انتہائی تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا ہے۔ سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے شو میں خلیل الرحمان قمر اور ماروی سرمد بطور مہمان گفتگو کا حصہ تھے جس میں عدالت کی جانب سے خواتین مارچ کی اجازت سے متعلق بات چیت جاری تھی۔جے یو آئی ف کے رہنما اور سینیٹر مولانا فیض محمد بھی بطور مہمان اس گفتگو کا حصہ تھے۔ دوران گفتگو تلخ کلامی کا سلسلہ اس وقت جاری ہوا جب مصنف خلیل الرحمان قمر اپنی بات مکمل کر رہے تھے کہ ماروی سرمد نے ان کی بات کاٹ کر ’’میرا جسم میری مرضی‘‘ کا اپنا مخصوص نعرہ لگایا جس پر خلیل الرحمان قمرماروی سرمد پر برس پڑے ۔ خلیل الرحمان قمر نے انتہائی سخت لہجہ اپناتے ہوئے میرا جسم میری مرضی کا نعرہ لگانے پر ماروی سرمد کو گھٹیا اور بے حیا عورت قرار دے دیا۔