عمران حکومت بے نظیر بھٹو کے جوتوں کے برابر بھی نہیں ۔۔۔۔ ایسی بات کہہ دی گئی کہ ملک میں نئی بحث چھڑ گئی

کراچی (ویب ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اورسندھ کے وزیر اطلاعات سعید غنی نے کہا ہے کہ محترمہ نظیر بھٹو کا نام مٹانے والوں کی نسلیں مٹ جائینگی ، حکمران بے نظیر کے جوتوں کے برابر بھی نہیں، بونے حکمرانوں کی کوئی سازش کامیاب نہیں ہو گی۔

پپپلز پارٹی کی خواتین کیجانب سے بے نظیر اِنکم سپورٹ پروگرام کا نام تبدیل کرنے کے خلاف کراچی پریس کلب کے باہر احتجاجی مظاہرے خطاب کرتے ہوئے سعید غنی نے کہا کہ محترمہ شہید بی بی کا نام زندہ ہے اور تاریخ میں ہمیشہ زندہ رہیگا ،محترمہ نظیر بھٹو کا نام مٹانے والوں کی نسلیں مٹ جائینگی ،حکمران بے نظیر کے جوتوں کے برابر بھی نہیں، بونے حکمرانوں کی کوئی سازش کامیاب نہیں ہوگی۔انہوں نے کہا کہ بینظیر اِنکم اسپورٹ کارڈ سے محترمہ شہید کی تصویر ہٹانا سیاسی انتقام ہے، آج بونے حکمران اِنکم سپورٹ پروگرام کو سیاست کا نام دے رہے ہیں، جس میں جرات ہے وہ اسمبلی جائے اور قانون تبدیل کرائے۔سعید غنی نے موجودہ مسخرے اور بونے حکمرانوں کے پیٹ میں زیادہ مروڑ اٹھ رہے ہیں، جنہوں نے بے نظیر اِنکم سپورٹ پروگرام کا غلط استعمال کیا ہے انکے خلاف کاروائی ہونی چاہیے۔ دوسری جانب سندھ کے وزیر اطلاعات و محنت سعید غنی نے کہا ہے کہ میری اور میرے بھائی کی کردار کشی شروع کردی گئی ہے ۔دو سال پرانی ایک اخباری رپورٹ جس میں میرا نام تک نہیں اس کے ساتھ مجھے جوڑا گیا کیوں کہ میں پولیس کے مشکوک کردار پر بات کررہا ہوں۔سندھ پولیس کا مزاج نیب کی طرح ہوگیا ہے، جو آپ کے خلاف بولے اس کے خلاف کارروائی کرو، پولیس حکام کو بتایا کہ ان کے علاقے میں منشیات کا کام بڑھ رہا ہے اور پولیس نہیں روک رہی۔وزیراعلی سے کہوں گا کہ میرے خلاف رپورٹ کی ویری فکیشن کرائیں، اگر الزامات درست ہیں تو سخت سے سخت سزا بھگتوں گا، عہدہ اور سیاست بھی چھوڑدوں گا۔