بریکنگ نیوز : (ق) لیگ کے تیور بدل گئے!! حکومت کیخلاف جنگ کی تیاری۔۔۔ حکومتی ایوانوں میں اچانک بھونچال آگیا

لاہور(ویب ڈیسک) تجزیہ کار ہارون الرشید نے کہاہے کہ معاملہ یہ ہے کہ ق لیگ اورعمران خان دونوں کے تیور بدل گئے ، وہ جنگ کرنے کیلئے تیار ہیں، عمران خان اب تلے ہوئے ہیں، چودھری برادران بڑے متحمل لوگ ہیں لیکن حکومت اوران کے درمیان پہلے دن سے مشاورت کا فقدان رہا ہے ،

اس وقت صورتحال کچھ زیادہ عمران خان کے حق میں نہیں ، مہنگائی اور بے روزگاری بڑھ رہی ہے ، عمران کی معاشی ٹیم کچھ کرنہیں سکتی، وزیراعظم کو یہ مسئلہ ہے کہ وہ کبھی ٹھیک آدمی سے مشاورت نہیں کرتے ، اپوزیشن کا پلان یہ ہے مئی جون میں تحریک عدم اعتماد لائی جائے اورشہبازشریف وزیراعظم ہوں ، وہ کہتے ہیں یہ اسٹیلشمنٹ کا بی پلان ہے لیکن ایسانہیں ہوگا، عمران خان کو چودھری برادران سے براہ راست بات کرنی چاہئے ، ان سے معاملہ طے کرنا بہت آسان ہے مشکل نہیں ، وزیراعظم کے لئے حالات مشکل ہیں مہنگائی بے روزگاری عرو ج پرہے اس میں کوئی شک نہیں کہ پاکستان کو دیوالیہ ہونے سے عمران خان نے بچایا ۔ انہوں نے کہاکہ اگر ڈیلی میل کے خلاف کیس ہوگیا اورشہبازشریف جیت گئے تو شایدوہ اخبارہی بند ہوجائے گا ، اگر شہبازشریف ہار گئے تو وہ کئی ہفتے سو نہیں سکیں گے ، بلوچستان والا فارمولا قابل عمل ہے کہ فضل الرحمان کو کچھ وزارتیں اوروزارت اعلیٰ دے دی جائے ۔چند ہفتے اہم ہیں کمیٹیاں وقت گزارنے کیلئے بنائی گئی ہیں ، ایم کیوایم اپنا فیصلہ خودنہیں کریگی انہیں جو کہا جائے گا وہ کریگی۔ چین میں کرونا وائرس کے حوالے سے کہا کہ والدین بے چین ہیں اس لئے حکومت کو چاہئے کہ وہ انہیں لائے ،ایک تھیوری یہ ہے کہ جان بوجھ کر وائرس پھیلا یا گیا ہے کیونکہ چین سے سارے خوف زدہ ہیں۔بھارت جو یہ کہہ رہاہے کہ وہ سات روز میں پا کستا ن کو فتح کرلیں گے یہ ان کی بھول ہے وہ پاکستان کو سات صدیوں میں بھی فتح نہیں کرسکتے ۔ چین میں چندسو پاکستانی ہیں انہیں لے آئیں پاکستان میں لا کران کا علاج کیاجائے سکریننگ کی جائے ان کے معاملے میں تاخیر نہیں کرنی چاہئے ۔