مشکل وقت میں کام آنے والے ساتھ چھوڑ گئے۔۔۔!!! 2 اہمم ترین ممالک عمران خان سے سخت ناراض، وزیر اعظم کو سُرخ جھنڈی دکھا دی

اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک ) معروف صحافی رانا عظیم نے دعویٰ کیا ہے کہ دو اہم قریبی ممالک پاکستان سے ناراض ہیں جس کی وجہ وفاقی کابینہ میں موجود ایک شخصیت اور وزیراعظم کے مشیر ہیں، عمران خان نے کئی ممالک کے دورے کر چکے ہیں، ان میں سے نمایا دورے

سعودی عرب، امریکہ متحدہ عرب امارات کے دورے شامل ہیں۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے پی یو ایف جے کے صدر اور سینئر صحافی رانا عظیم کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے جتنے بھی دورے کیے گئے ان تمام دوروں پر ایک شخصیت ایسی تھی جو عمران خان کے ساتھ نظر آئی، وہ شخصیت وزیراعظم کے ساتھ امریکہ کے دورے پر بھی تھی ،سعودی عرب،ایران اور متحدہ عرب امارات کے دوروں پر بھی تھی، پاکستان کے دو قریبی ممالک جنہوں نے پاکستان کو مشکل وقت میں سپورٹ کیا، ان ممالک کی جانب سے وزیراعظم کے ساتھ اُس شخص کی موجودگی پر اعتراض کیا، حالیہ سیاسی صورتحال اور نواز شریف سے متعلق پیدا ہونے والی صورت حال میں اِن ممالک نے شریف برادران کی بجائے وزیراعظم عمران خان کوہی سپورٹ کیا، وزیراعظم کے ساتھ موجود ان دو شخصیات کی وجہ سے عمران خان ان قریبی ممالک کے خلاف ہونے والی سازشوں کا کسی نہ کسی طریقے حصہ بن جاتے ہیں جس وجہ سے دونوں ممالک نے پاکستان سے ناراضگی کا اظہار کیا ہے،دونوں ممالک نے اس حوالے سے اپنا احتجاج ریکارڈ کروایا ہے اور پاکستان کو پیغام دیا ہے کہ یہ دونوں شخصیات جن میں ایک وفاقی وزیر اور دوسرے مشیر شامل ہیں،ان کا غیر ملکی دوروں میں کردار کم کیا جائے۔ان شخصیات کو ہر معاملے میں میں آگے لے کر نہ جائیں کہ جس سے عمران خان اور ان ممالک کے درمیان تعلقات میں خلل پیدا ہوں۔متحدہ عرب امارات نے اس حوالے سے کھل کر ناراضگی کا اظہار کیا اور اپنا احتجاج ریکارڈ کروایا۔جبکہ دوسرے ملک نے کھل کر ناراضگی کا اظہار نہیں کیا تاہم عمران خان تک یہ بات پہنچ چکی ہے۔اگر یہ معاملہ ہی چلتا رہا تو خدشہ ہے کہ یہ دونوں ممالک آنے والے وقت میں پاکستان کے حوالے سے کوئی سخت موقف اختیار کریں گے