گندا ہے پر دھندہ ہے: بھارت نے پاکستانیوں کو”زہر“ کھلانا شروع کردیا، مگر کیسے ؟؟ سنسنی خیز انکشافات

اسلام آباد(ویب ڈیسک) افغانستان اور بھارت کی جانب سے افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کی آڑ میں غیر معیاری اشیا پاکستان اسمگل ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔پاکستان نے بھارتی اشیا کی پاکستان درآمد پر پابندی لگائی تو افغانستان اور بھارت کے راستوں غیر معیاری اسمگلڈ شدہ اشیا پاکستان اسمگل کی جانے لگیں۔ خفیہ اطلاع پر ماڈل کسٹمز

کلیکٹریٹ اسلام آباد نے للا انٹرچینج پر چھاپہ مارا تو کارروائی کے دوران کروڑوں روپے مالیت کا بھارتی دودھ، گٹکا، جعلی سیگریٹ اور دیگر اشیا قبضے میں لے کر 4 ملزمان کو گرفتار کر لیا۔ قبضے میں لیا گیا سامان دو ٹرکوں میں موجود تھا۔محکمہ کسٹمزکے مطابق قلیل المیعاد بھارتی دودھ ملک شیک، چائے اور ڈیری مصنوعات میں استعمال ہوتا ہے۔ جسے مختلف دکانوں اور ہوٹلوں میں ترسیل کر کے انسانی جانوں سے کھیلا جا رہا ہے۔اسسٹنٹ کلیکٹر کسٹمز راؤ فہد کے مطابق گرفتار کیے گئے چاروں ملزمان کو مزید تفتیش کے لیے ہیڈ کوارٹر منتقل کر دیا گیا۔رکن کسٹمز ایم سی سی اسلام آباد جواد آغا کے مطابق محکمہ کسٹمز نے رواں ہفتے ایک کروڑ روپے مالیت کی اسمگل شدہ گاڑیاں بھی قبضے میں لی گئی ہیں۔ کسٹمز نے بھارت اور افغانستان کے راستے اسمگلنگ کے نیٹ ورک کے دیگر ملزمان کی گرفتاری کے لیے ٹیم تشکیل دے دی ہے۔رکن کسٹمز ایم سی سی اسلام آباد جواد آغا کے مطابق محکمہ کسٹمز نے رواں ہفتے ایک کروڑ روپے مالیت کی اسمگل شدہ گاڑیاں بھی قبضے میں لی گئی ہیں۔ کسٹمز نے بھارت اور افغانستان کے راستے اسمگلنگ کے نیٹ ورک کے دیگر ملزمان کی گرفتاری کے لیے ٹیم تشکیل دے دی ہے۔ اسلام آباد جواد آغا کے مطابق محکمہ کسٹمز نے رواں ہفتے ایک کروڑ روپے مالیت کی اسمگل شدہ گاڑیاں بھی قبضے میں لی گئی ہیں۔ کسٹمز نے بھارت اور افغانستان کے راستے اسمگلنگ کے نیٹ ورک کے دیگر ملزمان کی گرفتاری کے لیے ٹیم تشکیل دے دی ہے۔