نہ زمین کانپی نہ آسمان پھٹا : گھریلوملازمہ سے مالک مکان صفائی کے بعد کیا کام کرواتی تھی؟ دلخراش تفصیلات سامنے آگئیں

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سلامت پورہ میں گھریلو ملازمہ سے جنسی زیادتی، حاملہ ہونے پر لاہور لے جا کر اس کا آپریشن کروادیا گیا ،مالکن نے بال تک کاٹ دئیے ،پو لیس نے خاتون سمیت تین ملزمان کو گرفتار کر لیا،تفصیل کے مطابق واقعہ تھانہ سبزی منڈی کے علاقہ محلہ سلامت پورہ

میں پیش آیاجہاں پر 14سالہ سمیرا جو کہ نصرت عرف صائمہ کے گھر کام کرتی تھی،جسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا.سمیرانے بتایاکہ مالکن صائمہ مختلف افراد کو گھربلاتی اور مجھ سے زیادتی کرواتی تھی اس دوران حاملہ ہونے پر لاہور میں ایک کلینک لے جاکرپیٹ کا آپریشن کروادیامیرے رونے پر بال تک کاٹ دئیے، لڑکی کی والدہ کا کہناتھا اسکی بیٹی کی توزندگی خراب کی ہماری زندگی بھی اجیرن بنادی ہے پولیس نے نصرت، اسکے شوہرمظہرعرف ابوبکر اور علی کو گرفتار کرلیاہے جن کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے ۔واضح رہے گھریلو ملازمہ کو جنسی زیادتی نشانہ بنا کر مبینہ طور پر حاملہ کر دیا گیا ، بتایا گیا ہے کہ کیمپ نمبر تین کی رہائشی 14سالہ (س) سلامت پورہ میں نصرت عرف صائمہ بی بی کے گھر کام کاج کرتی تھی جہاں پر صائمہ کا شوہر مظہر اور دیگر افراد مبینہ طور پر جنسی زیادتی کا نشانہ بناتے تھے جس کے باعث وہ حاملہ ہو گئی ،اس حوالے سے متاثرہ لڑکی (س) نے میڈیا کو بتایا کہ باجی نصرت عرف صائمہ بی بی مختلف افراد کو گھر بلوا کر اس سے زیادتی کراتی تھی۔ انہوں نے اس کے پیٹ کا لاہور میں واقع کلینک سے آپریشن کروا دیا اور انہوں نے اس کے سر کے بال بھی کاٹ دیئے ہیں سبزی منڈی پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزمہ نصرت بی بی اس کے خاوند مظہر علی کو گرفتار کر لیا۔ فیرورزوالہ والا میں کوٹ رنجیت سنگھ میں محنت کش کا رشتہ دار نوجوان ملنے آیا جس نے اس کی جہاں سالہ بیٹی س کو ورغلا کر اس کے ساتھ زیادتی کر ڈالی اور فرارہو گیا اوکاڑہ میں گورنمنٹ کالونی کی (م) کے ساتھ شفا الرسول نے اغواء کے بعد زیادتی جبکہ موضع باماں بالا میں (م) کے ساتھ ناصر نے زیادتی کر ڈالی۔ عارف والا میں سعید نے حساس ادارے کے ملازم کے بیٹے (ر) سے زیادتی کی اور فرار ہو گیا۔