’’ آپ بس حکم کریں باقی میں ۔۔۔‘‘ میاں منشاء نے جیل میں نواز شریف کو کیا آفر کرائی؟ بالاخر حقیقت سامنے آگئی

لاہور (نیوز ڈیسک ) پاکستان کی معروف کاروباری شخصیت میاں منشا نے سابق وزیراعظم نوازشریف سے کوٹ لکھپت جیل میں ملاقات کی تھی۔ میاں منشا نے کوٹ لکھپت جیل میں نوازشریف کے ساتھ علیحدگی میں ملاقات کی تھی ، یہ ملاقات تقریبا َ10 منٹ تک جاری رہی جس دوران نیب کیسز

کے حوالے سے مشاورت بھی کی گئی۔ میڈیا رپورٹس دعویٰ کیا گیا تھا کہ میاں منشا نوازشریف کیلئے خصوصی پیغام لے کر جیل پہنچے تھے۔اسی متعلق گفتگو کرتے ہوئے معروف صحافی ہارون الریشد کا کہنا تھا کہ میری معلومات کے مطابق میاں منشا نے نواز شریف سے جیل میں ملے اور کہا کہ مجھے ڈیل کرنے دیں۔میاں منشاء نے نواز شریف سے ڈیل کرنے کی اجازت مانگی جب کہ نواز شریف کے بھائی شہباز شریف بھی ڈیل چاہتے ہیں۔خیال رہے میاں منشا ایم سی بی بینک اورنشاط ملز کے مالک ہیں اور کاروباری حلقے میں ان کابڑا نام میں ہے۔خیال رہے سابق حکمراں جماعت پاکستان مسلم لیگ ن اور حکومت کے درمیان ڈیل طے کیے جانے کی کوششوں سے متعلق گزشتہ کچھ عرصے سے کافی خبریں گردش کر رہی ہیں۔تحریک انصاف کی حکومت کا دعویٰ ہے کہ پاکستان مسلم لیگ ن مسلسل این آر اوحاصل کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔ جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن ڈیل یا این آر او حاصل کرنے کے حوالے سے گردش کرنے والی تمام خبروں کی تردید کرتی آئی ہے۔تاہم اس حوالے سے میڈیا ذرائع دعویٰ کرتے ہیں کہ پاکستان مسلم لیگ ن واقعی میں ریلیف کے حصول کیلئے کوششیں کر رہی ہے۔ کچھ لوگوں کا دعویٰ ہے کہ پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر اور قومی اسمبلی کے اپوزیشن لیڈرشہباز شریف اپنی جماعت خاص کر اپنے خاندان کیلئے ریلیف کے حصول کیلئے ہی لندن گئے تھے۔ جبکہ کچھ ذرائع کا دعویٰ ہے کہ شہباز شریف کا لندن چلے جانا ہی ڈیل کا حصہ ہے تاہم اب شہباز شریف لندن سے واپس آ چکے ہیں اور ن لیگ نے حکومت کو ٹف دینے کا فیصلہ کر لیا ہے۔نواز شریف نے بھی شہاز شریف کو سخت بیانیہ اپنانے کی ہدایت کی ہے۔