غضب کی گرمی میں پاکستان کا ایسا علاقہ جہاں 30 سالوں بعد جون میں بھی برفباری ہوگئی

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)جون کے مہینے میں چترال میں 30 سال بعد برفباری۔ لوگ نظارہ دیکھ کر حیران رہ گئے۔ موسم گرما میں برف سے موسم ایک بار پھر سے سرد ہو گیا۔نجی ٹی وی کے مطابق ایک طرف جہاں میدانی علاقوں میں سورج آگ برسا رہا ہے تو وہیں دوسری جانب

چترال میں برفباری سے موسم کافی سہانا ہو گیا۔ چترال میں 30 سال بعد برفباری دیکھ کر لوگوں کی حیرت کا ٹھکانہ نہیں رہا۔اپر چترال کے علاقہ کھوت ، اویر اور گرم چشمہ کے بگوشٹ اور دیگر بالائی علاقوں میں بارش کے بعد برفباری سے ان علاقوں نے سفید چارد اوڑھ لی۔ سرد ہواؤں نے چترال کا موسم انتہائی خوشگوار بنا دیاہے۔ دوسری جانب یہ خبر ہے کہ کراچی میں صبح سویرے ہی شدید گرمی محسوس کی جارہی ہے اور آج شہر میں ہیٹ ویو کا خدشہ بھی موجود ہیں۔ محکمہ موسمیات کا کہنا ہے شہر میں آج زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 40 سے 42 ڈگری سینٹی گریڈ تک جانے کا امکان ہے جب کہ مختلف علاقوں میں شدید حبس میں بجلی کی طویل بندش سے شہری بے حال ہوچکے ہیں۔دوسری جانب بحیرہ عرب میں سمندری طوفان ‘وایو’ کے باعث شہر میں شام تیز ہواؤں کے ساتھ ہلکی بارش کی بھی پیش گوئی کی گئی ہے۔ صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی نے شہریوں کو احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے سر ڈھانپ کر رکھنے، چھتری، تولیہ، پانی اور لیموں ساتھ رکھنے کی ہدایت کی ہے۔پی ڈی ایم اے کا کہناہے کہ شدید گرمی میں مشقت والے کام سے گریز کریں، بچے سخت دھوپ میں کھیلنے سے گریز کریں جب کہ سرکاری اسپتالوں میں خصوصی وارڈز قائم کردیے گئے ہیں۔ اور اب یہی خبر آئی ہے کہجون کے مہینے میں چترال میں 30 سال بعد برفباری۔ لوگ نظارہ دیکھ کر حیران رہ گئے۔ موسم گرما میں برف سے موسم ایک بار پھر سے سرد ہو گیا