شواہد مکمل ۔۔۔ 30 جون کے بعد پاکستان کی اہم ترین شخصیات کے ساتھ کیا ہونے والا ہے؟ بڑی خبر

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) معروف صحافی چوہدری غلام حسین کا کہنا ہے کہ میری وزیراعظم عمران خان سے ملاقات ہوئی جس میں انہوں نے کہا کہ میں مہنگائی کو ختم کروں گا۔انہوں نے مزید کہا کہ میرے علم میں ہے کس کس جگہ سے ڈوریں ہلائی جا رہی ہیں اور میری حکومت کو ناکام کرنے کی

کوشش کی جا رہی ہے لیکن مجھے حکومت کی بھی پرواہ نہیں۔میں اللہ کا حاضر و ناظر جان کر عمل پیرا ہوں۔میں لوٹ مار کرنے والوں کو نہیں چھوڑوں گا چاہے وہ میری قریبی شخصیت کیوں نہ ہو۔چوہدری غلام حسین کا کہنا تھا کہ 30جون کے بعد ملک سے اربوں ڈالر لوٹنے والوں کی شامت آئے گی۔جن میں بڑے بڑے نام بھی شامل ہیں اور اس حوالے سے پاکستان کو اہم ثبوت بھی مل گئے ہیں۔خیال رہے وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت پارٹی و حکومتی ترجمانوں کا اجلاس ہوا تھا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا تھا کہ اجلاس میں وزیراعظم کے کے خطاب ، بجٹ،سیاسی معاملات اور احتساب پر بریفنگ دی گئی۔وزیراعظم عمران خان نے اپنے خطاب سے متعلق پارٹی و حکومتی ترجمانوں کو اعتماد میں لیا اور پس منظر سے آگاہ کیا۔ اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ پہلی ترجیح معاشی استحکام تھا۔کامیاب ہو گئے۔دوسری ترجیح احتساب ہے۔اب شروع ہو گا۔انہوں نے مزید کہا کہ اب کسی کرپٹ کے لیے کوئی رعایت نہیں۔اقتصادی حالات بہتری کی جانب گامزن ہیں۔اب ہر کرپٹ سے لوٹی ہوئی دولت اکھٹی کریں گے۔جن حالات میں اقتدار ملا صرف 20 دن کے پیسے تھے۔خاموش رہ کر معاشی حالات بہتر کیے۔وزیراعظم عمران خان نے بجٹ پر اپوزیشن کے احتجاج سے نمٹنے کے لیے ترجمانوں کو بھی گرین سگنل دے دیا۔ خیال رہے گذشتہ روز پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے مالی سال 20-2019ء کا بجٹ پیش کیا۔بجٹ تقریر کے اختتام پر وزیراعظم عمران خان نے اپوزیشن کو فاتحانہ انداز میں اشارے کیے ۔