’’ رحمان ملک نے مجھے ایک رات ویزے کے لیے بُلایا اور۔۔۔‘‘ سنتھیا ڈی رچی کا ایک اور دھماکہ، ایسا انکشاف کر دیا کہ پی پی قیادت بھی منہ چھپانے پر مجبور ہوگئی

لاہور(نیوز ڈیسک ) امریکی سنتھیا رچی کا کہنا ہے کہ رحمان ملک سے اس رات کے بارے میں سوال کرنا چاہیئے جب اس نے میرے ویزے کے معاملات کے لئے بلایا تھا۔ سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ رحمان ملک سے اس

رات کے بارے میں سوال کرنا چاہیئے جب اس نے میرے ویزے کے معاملات کے لئے بلایا تھا۔مزید بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ان سے مجھے پیش کئے گئے پھولوں اور تحائف کے بارے میں پوچھا جائے، رحمان ملک سے پوچھا جائے کہ اسے یاد ہے کہ میں نے کیا پہنا تھا۔پیغام جاری کرتے ہوئے امریکی صحافی کا کہنا تھا کہ رحمان ملک سے اس وقت کے بارے میں پوچھا جائے جب انہوں نے میرے مشروب میں نشہ ملا دیا تھا اور میرے ساتھ زیادتی کی تھی۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز الزامات عائد کرتے ہوئے امریکی صحافی کا کہنا تھا کہ مجھے رحمان ملک نے 2011 میں جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا، ایوان صدر میں یوسف رضا گیلانی نے دست درازی کی، مخدوم شہاب الدین نے بھی بدسلوکی کی۔ امریکی صحافی سنتھیا رچی نے بتایا ہے کہ یہ واقعہ منسٹر انکلیو میں رحمان ملک کی رہائش گاہ پر پیش آیا تھا۔ جبکہ ایوان صدر میں اس وقت کے وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے بھی ان کیساتھ دست درازی کی تھی۔سنتھیا کی جانب سے سابق وفاقی وزیر مخدوم شہاب الدین پر بھی ان سے بدسلوکی کیے جانے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ سنتھیا کا کہنا ہے کہ انہیں جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کا واقعہ ان دنوں میں پیش آیا جب اسامہ بن لادن آپریشن ہوا تھا۔ خاتون صحافی کا مزید کہنا تھا کہ مجھے ملاقات کیلئے بلایا گیا تھا، میرا خیال تھا کہ یہ میرے ویزے سے متعلق ملاقات ہوگی، لیکن مجھے پھول دیے گئے اور میرے مشروب میں نشہ آور چیز ڈال دی گئی۔