کورونا سے ہلاکتیں ۔۔۔ !!!جاں بحق ہونے والے افراد کی میتوں کےساتھ کیا کیا جائے گا؟سندھ حکومت نے بڑا سرپرائز دے دیا

کراچی (ویب ڈیسک) سندھ حکومت نے کورونا کی وجہ سے جاں بحق ہونے والے افراد کی میتوں کی ورثا کو حوالگی کی منظوری دے دی ہے۔ تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نےکورونا وائرس کی وجہ سے جاں بحق ہونے والے افراد کی میتوں کو ان کے ورثاکے حوالے کرنے کی اجازت دیدی ہے۔ حکومتی حکامات کے مطابق میت کو غسل اور کفن ان فلاحی اداروں

میں دیا جائے جن کو حکومت نے پہلے سے اجازت دے رکھی ہے، ورثاء اپنے پیاروں کی تدفین اپنے ہاتھوں سے کر سکیں گے۔یاد رہے کہ اس سے قبل میتیں ورثا کے حوالے نہ کیے جانے کی وجہ سے کئی بار ہسپتالوں میں ڈاکٹرز اور ورثا کے درمیان کشیدگی دیکھنے کو ملی تھی جبکہ کئی بار تو ورثا کی جانب سے ہسپتال میں توڑ پھوڑ بھی کی گئی تھی۔ محکمہ صحت نے تدفین کے دوران احتیاطی تدابیر اپنانے اور وائرس کے پھیلاو کو روکنے سے متعلق ضروری ہدایات بھی جاری کی ہیں۔طبی ماہرین کے مطابق کفن میں لپٹی میت وائرس کے پھیلاو کا باعث نہیں بنتی ہے۔حکومت کی جانب سے مزید کہا گیا ہے کہ میت کو غسل اور کفن ان فلاحی اداروں میں دیا جائے جن کو حکومت نے اس کام کی پہلے سے اجازت دے رکھی ہے۔ضلعی حکام غسل اور تدفین کے تمام مراحل کی نگرانی کریں گے اور یقینی بنائیں گے کہ میت وائرس کے پھیلاؤ کا باعث نہ بنے۔میت کو سٹریچر اور مخصوص گاڑی پر ایک جگہ سے دوسری جگہ منتقل کیا جائے گا اور جو لوگ میت کو ایک جگہ سے دوسری جگہ منتقل کریں گے وہ صفائی کا خیال کریں گے اور تدفین کے بعد دوبارہ خود کو سینیٹائز کریں گے۔ حکومت کی جانب سے کہا گیا ہے کہ ایسی میتوں کی نماز جنازہ یا تدفین کیلئے کوئی مخصوص مسجد یا قبرستان نہیں ہے اس لیے کسی بھی جگہ نماز جنازہ پڑھی اور تدفین کی جاسکتی ہے۔