اسپین نے کورونا کے سامنے گھٹنے ٹیک دیے۔۔!! ملک میں ہلاکتوں کی 4 ہزارسے تجاوز کر گئی۔۔۔سینکڑوں مریضون کی حالت تشویشناک

میڈرڈ (ویب ڈیسک) اسپین میں کورونا وائرس سے مزید 773 افراد ہلاک۔ ملک میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 5 ہزار138 ہو گئی۔ 4 ہزار 165 مریضوں کی حالت تشویشناک۔ تفصیلات کے مطابق اسپین سے ایک اور افسوسناک خبر آئی ہے جس کے مطابق کورونا وائرس کے مبتلا مزید 773 افراد جان کی بازی ہار گئے ہیں۔

تازہ اطلاعات کے مطابق اس وقت اسپین میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 5 ہزار 138 ہو چکی ہے جبکہ مزید 4 ہزار 165 مریضوں کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے۔اسپین میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد مسلسل اضافے کے بعد 65 ہزار 719 کی سطح تک پہنچ چکی ہے۔ اسپین میں وائرس سے متاثر صحت یاب ہونے والے شہریوں کی تعداد 9 ہزار 357 ریکارڈ کی گئی ہے۔ اسپین میں کورونا وائرس کے کیسز اور اموات کی تعداد تیزی سے بڑھ رہی ہے۔ اٹلی کے بعد کورونا وائرس نے سب سے زیادہ تباہی اسپین میں مچائی ہے جہاں ہلاکتوں کی تعداد چین سے بھی زیادہ ہو چکی ہے۔اس وقت وبا کے باعث ہلاکتوں میں سرفہرست اٹلی ہے جہاں وائرس زدہ 9 ہزار 134 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ دوسرے نمبر پر اسپین ہے جہاں ہلاکتوں کی تعداد 5 ہزار 138 ہو گئی ہے۔ چین میں ہلاکتوں کی تعداد 3 ہزار 295 ہے، جبکہ ایران میں 2 ہزار 378 افراد مہلک وائرس کا نشانہ بن چکے ہیں۔ علاوہ ازیں امریکہ میں بھی وائرس کا پھیلاؤ کسی بھی دوسرے ملک سے زیادہ تیزی سے پھیل رہا ہے جہاں پر وائرس زدہ افراد کی تعداد سب سے زیادہ ہو چکی ہے۔تازہ اعداد و شمار کے مطابق امریکہ میں کورونا وائرس کے 18 ہزار 691 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں، اور مزید 4 سو افراد بھی ہلاک ہو چکے ہیں جس کے بعد امریکہ بھر میں کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد 1 لاکھ 4 ہزار 126 ہو گئی ہے اور ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 1 ہزار

695 کی سطح کو پہنچ گئی ہے۔ خبر ایجنسی کے مطابق امریکہ میں کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد کسی بھی دوسرے ملک سے زیادہ ہو گئی ہے۔جبکہ امریکہ میں اب تک وائرس سے متاثرہ 2 ہزار 522 افراد صحت یاب ہو چکے ہیں۔ مزید تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کا آغاز دسمبر 2019 میں چین کے صوبے ہوبے کے شہر ووہان سے ہوا تھا اور وہاں پر اب تک مجموعی طور پر 81 ہزار 394 افراد اس مرض سے متاثر ہوئے جب کہ وہاں ہلاکتوں کی تعداد 3295 ریکارڈ کی گئی ہے۔ چین میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ میں رواں ماہ مارچ میں حیران کن کمی آئی اور رواں ماہ کے وسط تک ووہان سے ایک بھی کیس سامنے نہیں آیا جس کے بعد ووہان سے لاک ڈاؤن کو بھی سلسلہ وار ختم کرنے کا آغاز کر دیا گیا ہے۔کورونا وائرس کو چینی وائرس قرار دینے والے ملک امریکہ میں حیران کن طور پر اس مرض سے سب سے زیادہ لوگ متاثر ہو چکے ہیں۔ 27 مارچ کی صبح تک امریکہ میں مریضوں کی تعداد بڑھ کر 85 ہزار سے زائد ہو گئی تھی جو کہ اب 1 لاکھ سے بھی تجاوز کر چکی ہے۔ خبر رساں ادارے کے مطابق امریکہ میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد اس وباء کے مرکز سمجھے جانے والے ملک چین سے بھی زیادہ ہو گئی اور یہ خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ امریکہ میں اس مرض سے ہلاکتیں بھی چین سے بڑھ جائیں گی کیوںکہ امریکہ میں ہلاکتوں کی تعداد بھی تیزی سے بڑھ رہی ہے۔