عہدے کے غرور میں آ کر غنڈہ گردی کرو گے تو میں بھول جاؤں گا کہ تم ۔۔۔گرفتاریوں کا حکم ، حکومت نے بڑےبڑوں کی نیندیں حرام کر دیں

کراچی (ویب ڈیسک) وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے 28 افسران کوگرفتار کرنے کا حکم دے دیا۔تفصیلات کے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے تبادلوں پر ایس بی سی اے افسران کی جانب سے آفس پر دھاوا بولنے والے 28 افسران کو گرفتار کرنے کا حکم دے دیا۔وزیراعلیٰ سندھ نے آئی جی


سندھ مشتاق مہر کو حکم دیا کہ افسران کو گرفتار کر کے مقدمہ درج کیا جائے، گرفتاریاں کر کے مجھے فوری طور پر اطلاع دے یں۔مراد علی شاہ نے وزیربلدیات کو ہدایت کی کہ فوری ایس بی سی اے میں اپنا دفتر قائم کریں، ہم کسی کوغنڈہ گردی کی اجازت نہیں دے سکتے۔سپریم کورٹ آف پاکسان کے حکم پر عمل کرتے ہوئے حکومت سندھ نے ایک حکم نامے کے ذریعے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے 28 افسران کو بدعنوانی کے الزام میں معطل کیا تھا۔حکومت کی جانب سے معطل کیے جانے والے افسران نے گزشتہ روز ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل کے دفتر میں دھاوا بولا تھا۔ بعدازاں ایس بی سی اے انتظامیہ نے پولیس طلب جس کے بعد پولیس کی بھاری نفری نے بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کو گھیرے میں لے لیا جس پر احتجاج کرنے والے افراد موقع سے غائب ہوگئے تھے۔