You are here
Home > خبریں > ہم امریکہ سے مذاکرات کے لیے تیار ہیں ۔۔۔طالبان نے اعلان کر دیا

ہم امریکہ سے مذاکرات کے لیے تیار ہیں ۔۔۔طالبان نے اعلان کر دیا

کابل (ویب ڈیسک )افغان طالبان نے کہا ہے کہ امریکا کے ساتھ مذاکرات کے دوسرے مرحلے کے لیے تیار ہیں، مذاکرات میں قیدیوں کے تبادلے، باہمی اعتماد سے متعلق اقدامات اور بند کمرہ ملاقاتوں کے بجائے باقاعدہ مذاکرات کی طرف بڑھنے کے طریقوں کو زیرِ غور لایا جائے گا، آئی سی آر سی افغانستان کی

پْل چرغی جیل میں ان قیدیوں کی مدد کرنے میں ناکام ہوگئی تھی جو قید کے حالات کی وجہ سے احتجاجاً بھوک ہڑتال پر تھے۔میڈیارپورٹس کے مطابق قطر سے بات کرنے والے طالبان عہدیدار کا کہنا تھا کہ وہ امریکا کی جانب سے مذاکرات کے لیے دوسرے اجلاس کی تاریخ بتائے جانے کے منتظر ہیں۔ شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر افغان طالبان کے عہدیداران نے امریکا کی قائم مقام معاون وزیر خارجہ برائے جنوبی اور وسطی ایشیا ایلس ویلز سے رواں سال جولائی میں کی گئی ملاقات کی تفصیلات بھی بتائیں۔ ادھر افغان آرمی نے صوبہ بغلان میں زمینی و فضائی آپریشن کے نتیجے میںکئی اہم اور سینئرکمانڈروں سمیت 36 طالبان کو ہلاک اور 12 دیگر کو زخمی کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ افغان میڈیا نے افغان ملٹری کے شاہین کور کے جاری بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ شمالی صوبہ بغلان کے علاقوںشش کاپی‘ لار خابی اورڈھنڈ شہاب الدین میں طالبان کے خلاف افغان فوج نے زمینی وفضائی آپریشن کیا جس کے نتیجے میں کئی اہم کمانڈروں سمیت36 طالبان جنگجوہلاک اور 12 دیگر زخمی ہوئے۔ رپورٹ کے مطابق ہلاک کئے جانے والے سینئر طالبان کمانڈروں میں قادر‘ قاری خالد‘ ملا ابراہیم‘ قاری ظاہر‘ غازی ملنگ اور ملا حدیفہ جلال آبادی شامل ہیں۔ ادھر اطلاعات کے مطابق طالبان نے اس ضمن میں کوئی بیان جاری نہیں کیا ہے۔(ز،ط)


Top