You are here
Home > خبریں > الیکشن 2018 : پنجاب کا وہ حلقہ جہاں تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ن) نہ صرف ایک دوسرے کے ساتھ مقابلے پر ہیں بلکہ تحریک لبیک بھی دونوں کو ٹف ٹائم دینے والی ہے ۔۔۔۔ تازہ ترین سیاسی تبصرہ ملاحظہ کیجیے

الیکشن 2018 : پنجاب کا وہ حلقہ جہاں تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ن) نہ صرف ایک دوسرے کے ساتھ مقابلے پر ہیں بلکہ تحریک لبیک بھی دونوں کو ٹف ٹائم دینے والی ہے ۔۔۔۔ تازہ ترین سیاسی تبصرہ ملاحظہ کیجیے

پنڈی گھیپ( ویب ڈیسک )ملک بھر میں عام انتخابات کے اعلان کے بعد جس طرح دن قریب آرہے ہیں ہر طرف سیاسی جماعتوں کی جانب سے سیاسی گہمی گہمی جاری ہے۔ پنڈی گھیب میں اگر سیاسی صورتحا ل کا جائزہ لیا جائے تو موجودہ حالات میں حلقہ کے عوام میں

چہ مہ گوئیاں چل رہی ہیں اور کسی بھی سیاسی پارٹی کی پوزیشن واضح نظر نہیں آرہی ہے۔ مسلم لیگ (ن) ، تحریک انصاف ، پیپلز پارٹی، تحریک لبیک کے امیدواروں کے درمیان سخت مقابلہ ہو سکتا ہے۔۔ حلقہ این اے 56پنڈی گھیب ، جنڈ اور فتح جنگ پر مشتمل ہے۔ اس وقت حلقہ این اے 56اٹک ٹو میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے امیدوار ملک سہیل خان ہیں۔ ملک سہیل خان 2013کے عام انتخابا ت میں اس حلقے سے پی ٹی آئی کے ٹکٹ پر الیکشن لڑئے تھے لیکن ہار گئے تھے۔ پیپلز پارٹی کی طرف سے امیدوار سردار سلیم حیدر ہیں۔ سردار سلیم حیدر پیپلز پارٹی کے دور حکومت میں فتح جنگ کے حلقے سے ایک بار ممبر قومی اسمبلی منتخب ہو چکے ہیں اور وزیر مملکت بھی رہ چکے ہیں۔ تحریک انصاف کی جانب سے طاہر صادق امیدوار ہیں۔ طاہر صادق سابق ضلع ناظم بھی رہ چکے ہیں۔ تحریک لبیک کے امیدوار محمد فیصل محمود شاہ گیلانی ہیں جبکہ آزاد امیدوار ملک شہر یار خان ہیں۔حلقہ این اے 56میں تحریک انصاف، مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی کے امیدواروں کے درمیان کانٹے کا مقابلہ متوقع ہے۔حلقہ پی پی 04 پنڈی گھیب اور فتح جنگ پر مشتمل ہے۔اب اگر حلقہ پی پی 4 میں موجودہ سیاسی صورتحال پر نظر ڈالیں تو مسلم لیگ (ن) کے امیدوار شیر علی خان ہیں۔ شیر علی خان 2013سے لیکر 31مئی 2018تک پاکستان مسلم لیگ (ن) کیطرف سے پانچ سال اس حلقہ میں ممبرصوبائی اسمبلی اور صوبائی وزیر معدنیات بھی رہے ہیں۔ تحریک انصاف کی جانب سے ملک محمد انور امیدوار ہیں۔ ملک محمد انور خان اس حلقے میں سابق ممبر صوبائی اسمبلی اور صوبائی وزیر بھی رہ چکے ہیں۔ پی پی پی کے ملک اختر امیدوار ہیں۔ ملک امانت خان تحریک لبیک کے پلیٹ فارم سے الیکشن لڑ رہے ہیں جبکہ ملک ریاست خان سدھریال آزاد امیدوار کے طور پر لڑ رہے ہیں۔تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ن) کے امیدواروں کے درمیان سخت مقابلہ ہے۔(ش۔ز۔م)


Top