You are here
Home > خبریں > شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو سہولیات نہ دی جائیں ورنہ ۔۔۔ عمران خان نے کس سرکاری عہدیدار کو بلا کر دھمکی دی ؟ جان کر آپ یقین نہیں کریں گے

شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو سہولیات نہ دی جائیں ورنہ ۔۔۔ عمران خان نے کس سرکاری عہدیدار کو بلا کر دھمکی دی ؟ جان کر آپ یقین نہیں کریں گے

لاہور(ویب ڈیسک) مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثنا نے دعویٰ کیا کہ وزیراعظم نے آئی جی کو بلا کر وارننگ دی ہے کہ شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو کوئی سہولت نہ دی جائے، اگر انہیں کوئی سہولت دی تو آپ کو نہیں چھوڑوں گا۔ رانا ثنا نے مزید کہا کہ انتقام کی

مہم جوئی نااہل اور نالائق حکمران ٹولہ چلارہا ہے، یہ آگ ابھی عدالتوں اور ایوانوں میں ہے اگر یہ آگ گلی محلوں تک پھیلی تو حالات کسی کے بس میں نہیں رہیں گے، چیف جسٹس پاکستان، آرمی چیف، چیئرمین نیب سے اپیل کرتا ہوں کہ صورتحال کو دیکھیں ۔رانا ثنا اللہ نے کہا ہے حکومت کو اپوزیشن کے بیانات بھارتی بیانیے سے منسوب کرنے کے سواکوئی کام نہیں ۔لاہور میں عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا کہ ملک پر نالائق اورنااہل ٹولہ مسلط ہے۔ مہنگائی بڑھ گئی ہے، معیشت کی تباہ حالی بھی سب کے سامنے ہے، بجلی، چینی اور آٹے کی قیمتوں کا بوجھ عوام پرڈالا گیا۔ ملک میں کوئی عوامی فلاح کاکام نہیں ہورہا، کوئی گورننس نہیں ،جس کا جو دل کر تا ہے وہی کررہا ہے۔حکومتی فیصلے بروقت نہ ہوئے جس کی وجہ سے بوجھ عوام پر پڑا، کابینہ ارکان خود بتارہے ہیں کہ پانچ پانچ گھنٹے کی میٹنگ ہوتی ہے، ایجنڈا کچھ ہوتا ہے اور وزیراعظم کہتے ہیں کسی کو نہیں چھوڑوں گا۔ ۔ رانا ثنا اللہ کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت صرف مخالفین کیخلاف انتقامی کارروائی کررہی ہے، حکومت نے جھوٹے مقدمات میں اپوزیشن اراکین کو پھنسایا ہے، اپوزیشن کے خلاف انتقامی کارروائی افسوسناک ہے، شہباز شریف کے خلاف بے بنیاد کیسز کا پروپیگنڈا کیا جارہا ہے۔ وزیراعظم اپوزیشن کو گالیاں دینے والوں کی تعریف کرتے ہیں ۔مریم نواز اور شہباز شریف کے درمیان اختلاف سے متعلق (ن) لیگی رہنما کا کہنا تھا کہ مریم نواز شہباز شریف کی بیٹی ہیں، ان کے درمیان کوئی اختلاف نہیں، حکومتی ترجمانوں کا کام اپوزیشن کے خلاف بیانیہ بناناہے۔


Top