’’حکومت جاتی ہے تو چلی جائے لیکن اپوزیشن کو۔۔‘‘ وفاقی وزیر شبلی فراز نے مخالفین کو ہری جھنڈی دکھا دی

لاہور (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات شبلی فراز کا کہنا ہے کہ ایف اے ٹی ایف اور نیب قوانین پر اپوزیشن کو کسی صورت این آر او نہیں دیں گے، عمران خان مائنس ہے تو پھر پوری پی ٹی آئی بھی مائنس ہے ، حکومت جاتی ہے تو جائے مگر اصولوں

پر سمجھوتہ نہیں کریں گے۔ لاہور سندس فاؤنڈیشن میں تھیلیسیمیا کے زیر علاج بچوں میں عید گفٹ تقسیم کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر شبلی فرازنے کہا کہ مجرمان انہیں ڈکٹیٹ نہ کریں ایف اے ٹی ایف کو جواز بنا کر نیب سے ریلیف کی کوششیں ناکام ہوں گی۔ شبلی فراز کا کہنا تھا کہ اپوزیشن جتنی مرضی اے پی سی بلا لیں ان کی بلیک میلنگ میں نہیں آئین گے،مائنس ون کے سوال پر انہوں نے کہا کہ خان نہیں تو کوئی بھی نہیں ۔ وفاقی وزیر اطلاعات نے مزید کہا کہ پارلیمنٹ میں وطن سے محبت کرنے والوں کی اکثریت ایف اے ٹی ایف کا بل ہر صورت پاس کرائیں گے، سیاسی یتیم پاکستان کی سیاست سے آؤٹ ہو چکے ہیں، پاکستان تحریک انصاف کی ٹیم وزیر اعظم عمران خان کی قیادت میں متحد ہے۔ شبلی فراز نے کہا کہ اپوزین ذاتی مفاد کیلئے سودے بازی کرنا چاہتی ہے،اے پی سی بیروزگاروں کا اتحاد ہے ،پچھلی حکومتوں کا کیا دھراموجودہ حکومت بھگت رہی ہے،ایف اے ٹی ایف ملک کیلئے ہے،اپوزینو کو ملک سے کوئی دلچسپی نہیں ہے۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شبلی فراز نے کہا کہ کہ تحریک انصاف کی حکومت کا فوکس عوام کے حقیقی مسائل پر ہے اور میرٹ کی حکمرانی تحریک انصاف کی حکومت کا طرہ امتیاز ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی ٹیم وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں متحد ہے، اگر پی ٹی آئی کے پاس عمران خان نہیں توپی ٹی آئی کچھ نہیں۔ وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ نئے پاکستان میں صرف دیانتداری اورایمانداری کی سیاست ہوگی، ہماری کارکردگی کے سب سے بہترین جج پاکستان کے عوام ہیں۔