جمائما گولڈ سمتھ نے ایسا پیغام جاری کر دیا کہ پوری دُنیا افسردہ ہوگئی

برطانیہ (نیوز ڈیسک) چین کے شہر ووہان سے پھیلنے والا وائرس اب سینکڑوں لوگوں کی موت کا سبب بن چکا ہے۔ عالمی ادارہ صحت نے خبردار کیا ہے کہ کروناوائرس عالمی وبا بن سکتا ہے جس کے لیے دنیا کو تیار رہنا چاہیے۔کرونا وائرس سے اب تک چین کے علاوہ دیگر کئی

ممالک میں بھی ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔معروف شخصیات بھی کرونا وائرس سے متعلق اپنے ردم عمل کا اظہار کر رہے ہیں،کچھ شخصیات کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے گھبرانے کی بجائے احتیاطی تدابیر اپنانی چاہئیے۔اسی حوالے سے وزیراعظم عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائما گولڈ اسمتھ نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں کرونا وائرس سے اس حد تک لاپرواہ ہوں کہ اپنے دوستوں کے گروپ میں اس بیماری سے سب سے پہلے مرنے والی میں ہوں گی۔

خیال رہے کہ برطانیہ میں طبی ماہرین نے کرونا وائرس بڑے پیمانے پر پھیلنے کا خدشہ ظاہر کردیا ہے، برطانیہ میں کرونا وائرس سے متاثرہ نو مریضوں میں سے آٹھ کو علاج کے بعد ڈسچارج کر دیا گیا، جبکہ ایک خاتون مریض کا علاج بدستور جاری ہے۔برطانوی طبی ماہرین نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ برطانوی آبادی کا ساٹھ فیصد حصہ کرونا وائرس کا شکار ہو سکتا ہے۔جس میں سے ایک فیصد کی موت بھی واقع ہو سکتی ہے جو کہ تقریباً چار لاکھ بنتی ہے۔ دوسری جانب ایک سروے میں این ایچ ایس سٹاف کی جانب سے یہ انکشاف بھی کیا گیا ہے کہ برطانیہ کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے تیار نہیں ہے اور وائرس کی روک تھام کے لیے کوئی خاص حفاظتی اقدامات بھی نہیں کیے گئے ہیں، اُن کا یہ بھی کہنا تھا لوگوں میں اس وائرس کی آگاہی اور احتیاطی تدابیر کے حوالے سے بھی کوئی باقاعدہ مہم نہیں چلائی گئی ہے جسکی وجہ سے اس وائرس کا برطانیہ میں تیزی سے پھیلنے کا خدشہ ہے۔