بریکنگ نیوز: اگلے ہفتے میں سردی کی شدت کس قدر بڑھنےوالی ہے ؟محکمہ موسمیات نے خطرے کی گھنٹی بجا دی

کراچی (ویب ڈیسک) محکمہ موسمیات نے کراچی والوں کو خبردار کیا ہے کہ 15سے17جنوری تک کم ازکم درجہ حرارت 5سے 6 ڈگری جاسکتاہے، سردی کی نئی لہر 22 جنوری تک برقراررہے گی۔تفصیلات کے مطابق کراچی میں یخ بستہ ہواں سے شہری ٹھٹھرنے لگے، شہرمیں گزشتہ روز ہونے والی بارش کے بعد سردی میں مزید اضافہ ہوگیا ہے، محکمہ

موسمیات کا کہنا ہے کہ بارش برسانے والا مغربی سسٹم کراچی سے نکل گیا، شہر کا موجودہ درجہ حرارت 18 ڈگری سینٹی گریڈ اور ہوا میں نمی کا تناسب 48 فیصد ہے۔محکمہ موسمیات کا کہنا تھا کہ کراچی میں سردی کی نئی لہر 22 جنوری تک جاری رہے گی اور 15سے 17 جنوری تک کم ازکم درجہ حرارت 5 سے 6 ڈگری تک جا سکتا ہے۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد نے کہاہے کہ پاکستان ڈیجیٹائزیش کی جانب جارہا ہے تو ہمیں ای کامرس پہ فوکس کرنے کی ضرورت ہے، ای کامرس پالیسی نوجوانوں کو معیشت میں کردار ادا کرنے کے مواقع فراہم کریگی،ای کامرس پالیسی سے روزگار کے مواقع فراہم کریگا، پاکستان کی سروسز سیکٹر کی برآمدات سالانہ 5 ارب ڈالر ہیں جو انتہائی کم ہیں،سروسز سیکٹر کی پیداوار بڑھانے کیلئے اقدامات کرنا ہونگے۔ ای کامرس پالیسی پر اسٹیک ہولڈر کی ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے مشیر تجارت نے کہاکہ پاکستان ڈیجیٹائزیش کی جانب جارہا ہے تو ہمیں ای کامرس پہ فوکس کرنے کی ضرورت ہے۔رزاق داؤد نے کہاکہ ہمارا سب سے زیادہ پوٹنشنل یوتھ ہے جو ای کامرس کے ذریعے برآمدات بڑھانے میں کلیدی کردار ادا کریگا۔ انہوں نے کہاکہ ای کامرس پالیسی نوجوانوں کو معیشت میں کردار ادا کرنے کے مواقع فراہم کریگی،ای کامرس پالیسی سے روزگار کے مواقع فراہم کریگا۔انہوں نے کہاکہ ای کامرس ڈومیسٹک اور اوورسیز پالیسیز سے ملکی سرمایہ کاری میں اضافہ ہوگا،ای کامرس پالیسی کو فروغ دینے کیلئے فون کالز کے ریٹ کم کئے جائیں گے۔رزاق داؤد نے کہاکہ ملک میں فور جی فائیو جی سپورٹڈ موبائل فونز مینوفیکچرنگ کرنے کیلئے مراعات فراہم کی جائیں گے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان کی سروسز سیکٹر کی برآمدات سالانہ 5 ارب ڈالر ہیں جو انتہائی کم ہیں،سروسز سیکٹر کی پیداوار بڑھانے کیلئے اقدامات کرنا ہونگے۔