’’شہباز شریف کے گھر کے اس کونے میں۔۔۔۔۔‘‘خبر لیک ہوتی ہی نیب ٹیم کا کل شہباز شریف کے گھر ریڈ کرنے کا فیصلہ

لاہور (ویب ڈیسک) لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کرپشن اور آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس میں نیب کی کمبائن انویسٹی گیشن ٹیم نے کل شہباز شریف کے گھر جانے کا فیصلہ کرلیا۔ دنیا نیوز کے مطابق ن لیگ کے مطابق شہباز شریف کو نیب ٹیم کی جانب سے آگاہ کر دیا گیا۔نیب نے شہباز شریف سے تحقیقات کے لئے

سوالنامہ تیار کرلیا۔ نیب ذرائع کے مطابق شہبازشریف بتائیں محکمہ خزانہ اور قانون کی مخالفت کے باوجود کمپنی بنانے کی منظوری کیوں دی، سالڈ ویسٹ مینجمنٹ کا پی ایم یو فعال ہونے کے باوجود کمپنی کیوں بنائی، صفائی کمپنی بنانے سے قبل اس کے منافع کی تحقیق کروائی گئی تھی، کمپنی کے استحکام اور اس کے کم خرچ ہونے کی تحقیق کرائی گئی تھی یا نہیں۔نیب سوالنامنے کے مطابق کیا یہ بات درست ہے کہ کمپنی آئی سٹیک کو قانونی طریقہ استعمال کئے بغیر ٹھیکہ دیا گیا، غیر ملکی کمپنیوں کو 320 ملین ڈالر کا ٹھیکہ آئوٹ سورس کرنے کا اختیار کس نے دیا تھا، صفائی کمپنی کو بغیر کسی جامع منصوبے کے بغیر بڑی تعداد میں قرضہ اور امداد دینے کا فیصلہ کیوں دیا گیا، ایل ڈبلیو ایم سی کی جانب سے قرض واپس کرنے اور سرمایہ پیدا کرنے کے منصوبے کو کیوں مسترد کیا گیا، جو غیر قانونی اقدامات اٹھائے گئے اس سے پنجاب حکومت کو اربوں روپے کا نقصان پہنچا، بیرون ملک سے شہباز شریف اکاونٹ میں مشتبہ ٹرانزیکشن کے شواہد بھی ملے ہیں اس رقوم کے ذرائع کیا ہیں؟جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں العزیزیہ ریفرنس میں نوازشریف کی اپیل پر سماعت ہوئی، رجسٹرار آفس نے ناصر بٹ کی شواہد جمع کرانے کی متفرق درخواست پر اعتراض لگایا جس کو دور کرنے کی استدعا پر سماعت 2 ہفتے کیلئے ملتوی کر دی گئی۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں جسٹس عامر فاروق، جسٹس محسن اختر کیانی پرمشتمل بنچ العزیزیہ ریفرنس میں سابق وزیراعظم نوازشریف کی اپیل پر سماعت کی۔ دوران سماعت عدالت نے ریمارکس دیئے کہ درخواست پر رجسٹرار آفس کا اعتراض ہے، پہلے اس پردلائل دیں، جس پر رجسٹرار آفس کا اعتراض ہے، آپ کوحق دعویٰ حاصل نہیں۔عدالت نے اعتراضات دور کرنے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔