’’ آصفہ بھٹو کے ساتھ سیلفی کیوں لی۔۔۔؟؟؟‘‘ جیالہ سیکورٹی اہلکار کے ہتھے چڑھ گیا، سر عام شرمناک سلوک

کراچی (نیوز ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو زرداری کے گارڈ نے آصفہ بھٹو کے ساتھ سیلفی لینے والے جیالے کا گریبان پکڑ لیا۔تفصیلات کے مطابق سیاسی جماعتوں سے لگاؤ رکھنے والے ہر کارکن کی خواہش ہوتی ہے کہ وہ اپنی پارٹی کی سیاسی قیادت کے قریب رہیں، چونکہ زمانہ اب جدید ہے

اس لیے کارکن کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ کم از کم سیاسی لیڈر کے ساتھ ایک سیلفی تو ضرور لے لے۔تاہم کبھی یہ سیاسی لیڈران کے ساتھ سیلفی لینا مہنگا بھی پڑ سکتا ہے ایسا ہی کچھ پیپلز پارٹی کے جیالے کے ساتھ ہوا۔جو پاکستان پیپلز پارٹی کی رہنما آصفہ بھٹو کے ساتھ سیلفی لینے کی کوشش کر رہا تھا کہ اتنے میں ان کے گارڈ نے جیالے کا گریبان پکڑ کر اسے پیچھے دھکیلا۔اس موقع پر اور بھی کئی کارکنان موجود تھے جو نعرے بازی بھی کر رہے تھے۔گارڈ نے جیالے کارکن کو کہا کہ تمہیں نظر نہیں آتا یہاں لیڈیز کھڑی ہیں۔یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہو گئی ہے جس پر صارفین مختلف قسم کی آراء کا اظہار کیا۔کسی نے گارڈ کے اس اقدام کو درست قرار دے دیا جب کہ کچھ صارفین نے کہا کہ یہی وہ کارکن ہیں جن کی بنیاد پرسیاسی رہنما اسمبلیوں کے اندر بیٹھتے ہیں۔اس واقعے کی ویڈیو آپ بھی ملاحظہ کیجئے:

واضح رہے اس سے قبل احتساب عدالت پیشی کے موقع پر سابق صدر آصف علی زرداری غصے میں آ گئے تھے ۔فریال تالپور کو راستہ نہ دینے پر آصف زرداری نے پولیس اہلکار کو چھڑی سے پیچھے ہٹا دیا جب کہ کچھ میڈیا رپورٹس میں یہ بھی بتایا گیا تھا کہ آصف علی زرداری نے پولیس اہلکار کو چھڑی دے ماری تھی۔اس واقعے کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی تھی۔اور آج پھر ایسا ہی واقعہ پیش آیا ہے جہاں آصفہ بھٹو کے ساتھ سیلفی لینے والے جیالے کی شامت آ گئی۔ آصفہ بھٹو کے ساتھ سیلفی بنانے پر بلاول بھٹو کے گارڈ نے جیالے کارکن کا گریبان پکڑ لیا۔