ورلڈکپ میں میچ سے قبل شعیب ملک اپنی اہلیہ اور وینا ملک کے ساتھ کیا شرمناک کام کرتے رہے ؟ سندھ ہائیکورٹ میں اہم قدم اُٹھا لیا گیا

کراچی (ویب ڈیسک) سندھ ہائیکورٹ نے ورلڈ کپ میں بھارت کیخلاف میچ سے پہلے شعیب ملک کی اہل خانہ کے ساتھ شیشہ کیفے جانے کے خلاف درخواست پر پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کو نوٹس جاری کردیا ہے۔تفصیلات کے مطابق پاکستان اور بھارت کے میچ سے پہلے شعیب ملک کے اپنے اہل خانہ اور دیگر کھلاڑیوں

کے ساتھ شیشہ کیفے جانے کے خلاف درخواست کی سماعت سندھ ہائیکورٹ میں ہوئی۔ درخواست میں قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد، پی سی بی، آئی سی سی اور ٹینس فیڈریشن شعیب ملک، ثانیہ مرزا، وینا ملک، امام الحق اور وہاب ریاض کو فریق بنایا گیا ہے۔درخواست گزار نے موقف اختیار کیا ہے کہ بھارت کے خلاف اہم ترین میچ سے پہلے رات کو شعیب ملک اور دیگر کرکٹر شیشہ بار میں انجوائے کرتے رہے اور اگلے دن اہم میچ ہار گئے۔ ان کرکٹرز کی عدم دلچسپی کی وجہ سے پاکستان ورلڈ کپ سیمی فائنل میں نہیں جاسکا،دنیا بھر میں سوشل میڈیا پر قومی ٹیم کا مذاق اڑایا گیا۔ ورلڈ کپ کے اہم میچزمیں ہارنے کی وجہ معلوم کرنا ہوگی، فریقین سے جواب طلب کیا جائے۔سندھ ہائی کورٹ نے درخواست پر پی سی بی سمیت تمام فریقین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 8 اکتوبر تک جواب طلب کرلیا۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پاکستان کیلئے متعدد کارنامہ سرانجام دینے والے باکسر محمد وسیم کی شایان شان پذیرائی نہ ہونے پر قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان وسیم اکرم بھی دلبرداشتہ ہو گئے۔باکسر محمد وسیم نے فلپائنی حریف کو پہلے ہی راﺅنڈ میں ناک آﺅٹ کر تے ہوئے جیت کشمیریوں کے نام کی تھی، اس حوالے سے چند حکومتی ارباب اختیار کے سوشل میڈیا پر پیغامات تو آئے لیکن ایئرپورٹ پر استقبال کیلئے کوئی نہیں آیا جس پر سوئنگ کے سلطان وسیم اکرم بھی خاصے دلبرداشتہ ہوئے۔باکسر محمد وسیم نے اس حوالے سے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر جاری اپنے پیغام میں کہا کہ ائیرپورٹ پر استقبال کیلئے مقابلوں میں شریک نہیں ہوتا بلکہ میرا مقصد یہ ہوتا ہے کہ عالمی سطح پر پاکستان کا استقبال ہو، ہر تربیتی کیمپ، مقابلہ اور ٹور میرے لئے یہ ثابت کرنے کا موقع ہوتا ہے کہ پاکستان میں باکسنگ کا کتنا ٹیلنٹ موجود ہے۔اس معاملے پر اپنے ردعمل میں وسیم اکرم نے کہا کہ پورے پاکستان کی طرف سے معذرت کرتا ہوں، کبھی کبھار قومی ہیروز کی قدر نہ کرنے پر ہمیں تھپڑ مار کر جگانے کی ضرورت ہوتی ہے، محمد وسیم آئندہ فتح کا جھنڈا گاڑ کر واپس آئے تو خود ان کو لینے ائیرپورٹ جاو¿ں گا، شاندار کامیابی پر ان کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔