’’میں نے مصباح سے مل کر اپنا نمبر سیٹ کرلیا ہے اور اب ۔۔۔‘‘کپتان سرفراز احمد نے اپنی بیٹنگ کے حوالے سے قوم کو بڑا سرپرائز دے ڈالا

کراچی (ویب ڈیسک) قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کا کہنا ہے کہ ان کی مصباح الحق کے ساتھ اچھی ذہنی ہم آہنگی ہے اور مستقبل میں دونوں مل کر اچھی ٹیم منتخب کیا کریں گے۔ میں نے مصباح سے مل کر اپنا نمبر سیٹ کرلیا ہے اور اب اسی نمبر پر کھیلا کروں گا۔نیوز کانفرنس

سے خطاب کرتے ہوئے کپتان سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ سلیکشن میں پہلے بھی کپتان کی رائے شامل ہوتی تھی مصباح کے ساتھ مل کر بہترین فائنل الیون منتخب کیا کروں گا، مصباح سے مل کر اپنا نمبر سیٹ کرلیا ہے اور اب اسی نمبر پر کھیلوں گا، ان کے ساتھ ہم آہنگی ہے جو مستقبل میں کام آئے گی۔ورلڈ کپ کے نتائج کے باوجود ان پر کپتانی سے متعلق دباﺅ نہیں تھا اور وہ جانتے تھے کہ جو بھی ہوگا اچھا ہی ہوگا، کپتان کتنے عرصے کیلئے ہونا چاہیے یہ فیصلہ بورڈ کا ہوتا ہے، بورڈ اور میرے درمیان رابطے ہیں، کپتان اور بورڈ کے درمیان رابطے رہیں تو بہت سی چیزیں کلیئر ہوجاتی ہیں ۔ٹیسٹ ٹیم کی کپتانی کے حوالے سے پوچھے گئے سوال پر سرفراز احمد کا کہنا تھا پی سی بی بہتر سمجھتا ہے کہ ٹیسٹ ٹیم کا کپتان کس کو بنایا جائے۔بابر اعظم کو نائب کپتان بنائے جانے کے فیصلے پر اظہار خیال کرتے ہوئے کپتان سرفراز احمد نے کہا کہ بابر اعظم سلپ میں فیلڈنگ کرتے ہیں اس لیے اسے گروم کرنے میں آسانی ہوگی۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر اور چیف سلیکٹر محسن خان اب قومی ٹیم کے منیجر کی پوسٹ کیلئے مضبوط امیدوار بن گئے ہیں۔سابق ٹیسٹ کرکٹر نے ہیڈ کوچ کیلئے بھی درخواست دی تھی اور پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے انہیں انٹرویو کیلئے بھی بلایا لیکن مصباح الحق کو چیف سلیکٹر اور ہیڈ کوچ مقرر کر دیا گیا جس پر محسن خان کی ناراضی بھی سامنے آئی، ذرائع کا کہنا ہے کہ چیئرمین پی سی بی احسان مانی نے چند روز قبل محسن حان سے بات کی اور امکان ہے کہ انہیں بورڈ میں اہم ذمہ داری دی جائے گی۔ذرائع کے مطابق سابق ٹیسٹ کرکٹر قومی ٹیم کا منیجر بننے کیلئے مضبوط امیدوار ہیں تاہم اس عہدے کے بارے میں اعلان چند روز میں ہونا ہے۔ ماضی میں محسن خان کے مصباح الحق سے تعلقات اچھے رہے تھے۔ پاکستان نے 2012ءمیں ٹیسٹ کی نمبر ون ٹیم انگلینڈ کو 3 میچز کی سیریز میں کلین سویپ کیا تو محسن خان کوچ اور مصباح الحق کپتان تھے۔